ایران سے تیل کی درآمد میں تخفیف پر کانگریس نے مودی سرکارکوگھیرا؛ کہا، عام آدمی کو لوٹنے کی تیاری میں ہے حکومت

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 12th July 2018, 9:41 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی:12/جولائی(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) کانگریس نے وزیر اعظم نریندرمودی پر امریکہ کے دباؤمیں قومی مفاد سے سمجھوتہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے ان سے ملک کویہ بتانے کامطالبہ کیاہے کہ ایران سے تیل کی درآمدات میں بڑے پیمانے پر تخفیف کن اسباب پر  کی گئی ہے۔

کانگریس ترجمان جیویر شیر گل نے جمعرات کو یہاں صحافیوں سے کہاکہ پٹرول اور ڈیزل کی آسمان چھورہی قیمتوں سے ملک کے عوام پہلے  ہی پریشان ہیں اور اب ایران سے بڑے پیمانے پر تیل کی درآمدات میں تخفیف کرکے عام آدمی کو لوٹنے کی تیاری میں ہے۔تیل کی درآمدات میں تخفیف سے تیل کی قیمتیں بڑھیں گی اور اس کا براہ راست اثر مہنگائی پر پڑیگا۔

انھوں نے الزام لگایاکہ امریکہ اور ایران کے رشتوں میں پیداہوئی تلخی کی وجہ سے مودی حکومت نے امریکہ کے سامنے گھٹنے ٹیک دیئے ہیں اورملک کے مفاد سے سمجھوتہ کرلیا ہے۔انھوں نے کہاکہ ایران ملک کی 15فیصدتیل کی ضرورت پوری کرتاہے اور چین کے بعدہندستان کا دوسرا سب سے  بڑا گاہک ہے۔ہندستان ایران سے یومیہ 7لاکھ 70ہزار بیرل تیل درآمد کرتاہے لیکن امریکہ کے سامنے جھکتے ہوئے تیل کی درآمدات میں تخفیف کی گئی ہے اور یومیہ محض 5لاکھ 70ہزار بیرل کی درآمدات ہورہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پروٹوکول توڑنے میں مودی نے عمران سے مقابلہ کیا، سفارتی ناکامی پر جواب دیں: کانگریس

کانگریس نے سعودی عرب کے شہزادہ (ولی عہد) محمد بن سلمان کا پروٹوکول سے الگ جاکرخوش آمدید کئے جانے کو لے کر بدھ کو وزیر اعظم نریندر مودی پر حملہ بولا اور الزام لگایا کہ پروٹوکول توڑنے میں مودی تو گویا پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کے ساتھ، جیسے مقابلہ کر رہے ہیں۔

پلوامہ حملہ: اب آندھرا پردیش کے وزیراعلیٰ چندرا بابو نائیڈو نے مودی حکومت کو گھیرا، کہا، قومی سلامتی خطرے میں ہے

پلوامہ دہشت گردانہ حملے کو لے کر پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کے بیان پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے آندھرا پردیش کے وزیراعلیٰ این چندرا بابو نائیڈو نے مرکز کی مودی حکومت پر نشانہ لگایا ہے۔

این سی ڈی آرسی نے آپریشن کے دوران لاپرواہی برتنے والے ڈاکٹر متاثرہ خاندان کو 2.7 لاکھ روپے ادا کرنے کا حکم دیا

قومی صارفین تنازعہ سراغ رساں کمیشن(این سی ڈی آرسی) نے آپریشن کے دوران لاپرواہی کی وجہ سے ایک خاتون کی موت کے معاملے میں تین ڈاکٹروں کو متاثر خاندان کو پر 2.7 لاکھ روپے ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔