سرسی سرکل کی مرمت ایک ماہ میں کی جائے: پرمیشور

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th January 2019, 11:17 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،9؍جنوری(ایس او نیوز) شہر کے سرسی سرکل فلائی اوور کی تعمیر ومرمت کاکام ایک ماہ کے اندر مکمل ہوجانا چاہئے۔ یہ بات آج نائب وزیراعلیٰ اور وزیر برائے ترقیات بنگلور ڈاکٹر پرمیشور نے کہی۔

آج فلائی اوور کی مرمت کے کاموں کا رسمی طور پر آغاز کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ 30 دنوں کے اندر فلائی اوور کا ایک حصہ عوام کے لئے کھول دیا جائے۔ اس موقعے پر نائب وزیراعلیٰ کو فلائی اوور کی مرمت کے لئے کی گئی تیاریوں سے آگاہ کرایا گیا۔

فلائی اوور کا معائنہ کرنے کے بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ مرمت کے کاموں کو اس قدر تیزی سے کیا جائے کہ اس سڑک کااستعمال کرنے والوں کو زیادہ پریشانی اٹھانی نہ پڑے۔

انہوں نے کہاکہ 2.9 کلومیٹر طویل فلائی اوور کی مرمت پر 4.5کروڑ روپیوں کا خرچ آرہاہے، مرمت کے لئے جدید ترین ٹیکنالوجی کو استعمال میں لایا جارہاہے۔ تاکہ فلائی اوور کی اوپر کی سڑک پر بارش کے دنوں میں کوئی گڈھا بننے نہ پائے۔یہاں تک کہ گرمیوں میں بھی سڑک کو کوئی نقصان نہ پہنچے ، اسی لئے تار میں ایسا مواد استعمال کیا جارہا ہے جو 146 ڈگری کی گرمی میں بھی نہ پگل پائے۔ اس طرح کے مواد سے سڑک تعمیر کے نتیجے میں یہ یقینی بنایا جاسکتاہے کہ فلائی اوور سے پانی کا رساؤ بند ہوجائے اور سڑک پر جو گڈھے بن چکے ہیں انہیں ہمیشہ کے لئے ختم کردیا جائے۔

انہوں نے کہاکہ 30دنوں میں فلائی اوور کی ایک جانب مرمت کاکام پورا کرلیا جائے اور اس کے بعد دوسری جانب سے کام شروع کیا جائے۔ نائب وزیراعلیٰ کے ہمراہ میئر گنگامبیکے ، نائب میئر بھدرے گوڈا، بی بی ایم پی میں حکمران پارٹی کے لیڈر شیوراجو، بی بی ایم پی کمشنر منجوناتھ پرساد ، چیف انجینئرکے ٹی ناگراج اور دیگر موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

سابق ماہی گیر وزیر پرمود مادھوراج نےملپے سے سات ماہی گیروں کے ساتھ بوٹ کی گم شدگی کے لئے نیوی کو قرار دیا ذمہ دار

اڈپی اورچکمگلورو سیٹ سے جنتادل اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار اور سابق وزیر ماہی گیری پرمود مادھو راج نےسات ماہی گیروں کے ساتھ سوورنا تریبھوجا نامی کشتی کی گم شدگی کے لئے بحری فوج کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔

انتخابات کیلئے سرمایہ اکٹھا کرنے اولاٹیکسی پرپابندی عائد کی گئی تھی۔ گوڑا

مرکزی وزیر ڈی وی سداننداگوڑا نے الزام لگایا ہے کہ انتخابات کے لئے سرمایہ توقع کے مطابق جمع نہ ہونے کی وجہ سے کانگریس ۔ جنتادل (یس) مخلوط حکومت نے اولا ٹیکسی خدمات پر6؍ماہ کے لئے پابندی عائد کی تھی۔

دیوے گوڈا ٹمکورسے نامزدگی داخل کریں گے، کانگریس کے موجودہ ایم پی مدوہنومے گوڈا بھی اس حلقہ سے نامزدگی داخل کرنے پر بضد

اب تک بھی یہ خبریں ہیں کہ جے ڈی ایس کے سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڈا ٹمکورپارلیمانی حلقہ سے چناؤ لڑیں گے۔ کانگریس اور جے ڈی ایس کے درمیان سیٹوں کی تقسیم میں ٹمکور حلقہ جے ڈی ایس کے حصے میں گیاہے ،