نیم فوجی دستوں کے معذور جوانوں کو اب 20لاکھ روپے معاوضہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 19th June 2017, 11:20 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،18؍جون(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)کسی کارروائی میں زخمی ہونے کے بعد100فیصد تک معذور ہونے والے نیم فوجی دستوں کے جوانوں کے لئے امدادی رقم نو لاکھ روپے سے بڑھا کر 20لاکھ روپے کر دی گئی ہے۔وزارت داخلہ نے حال ہی میں ایک دفتری حکم میں کہا کہ یہ بڑھاہوامعاوضہ یکم جنوری 2016کویا اس کے بعدکی سروس میں رہتے معذور ہونے والے تمام مرکزی فورسز کے جوانوں پرلاگوہوگا۔اس میں کہا گیا ہے کہ ساتویں پے کمیشن کی سفارشات کی بنیاد پر یہ فیصلہ لیا گیا کہ آسام رائفلز کے جوان کی 100 فیصد معذوری کے لئے ایک جنوری 2016 سے یکمشت امدادی رقم کو 9لاکھ روپے سے بڑھا کر 20لاکھ روپے کیاجائے گا۔100فیصدسے کم معذوری کے معاملات میں معاوضہ کی رقم کومعذوری کی سطح کے تناسب میں کم کیا جا سکتا ہے۔وزارت داخلہ کے تحت آٹھ فورسز کے تقریباََ 10لاکھ نوجوان آتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

جی ایس ٹی کے سلسلے میں مودی پر چدمبرم کا حملہ

وزیر اعظم نریندر مودی کے اشیا اور سروس ٹیکس (جی ایس ٹی) کو ایمانداری کی جیت اور ایمانداری کا جشن بتائے جانے کے سلسلے میں سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم نے ان پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا ہے کہ توپھر بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کیوں اس کی مخالفت کی تھی اور کیوں پانچ سال تک اسے روکا؟

بی جے پی کے باغی رہنما گھنشیام تیواری نے استعفی دیا

راجستھان بھارتیہ جنتا پارٹی کے باغی لیڈر اور سانگانیر کے ممبر اسمبلی گھنشیام تیواری نے آج پارٹی سے استعفی دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی نو تشکیل شدہ بھارت واہنی سے آئندہ اسمبلی میں تمام 200 سیٹوں پر اپنے امیدوار کھڑا کریں گے۔