کنداپور:بی جے پی پریورتن یاترا اجلاس میں ہنگامہ آرائی۔پولیس کا لاٹھی چارج

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th November 2017, 8:21 PM | ساحلی خبریں |

کنداپور13؍نومبر(ایس او نیوز) سابق وزیر اعلیٰ یڈی یورپا کی قیادت میں بی جے پی کی پریورتن یاترا جب کنداپور پہنچی تو نہرو میدان میں بھاری بھیڑ جمع ہوگئی تھی ۔ مگر اس دوران یہاں اجلاس میں آزاد ایم ایل اے ہالاڈی شرینواس شیٹی کی موجودگی کی وجہ سے بڑی دیر تک شور شرابہ،نعرے بازیاں اور ہنگامہ آرائی دیکھنے کو ملی۔ہالاڈی شرینواس شیٹی کے حامیوں اور مخالفین کے درمیان تکرار اتنی بڑھ گئی کہ اس پر قابو پانے کے لئے پولیس کو لاٹھی چارج کا سہارا لینا پڑا۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی وزیر مملکت اننت کمار ہیگڈے نے ریاستی حکومت پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ" کانگریسی حکومت کو ریاست کی ثقافت کے بارے میں کوئی جانکاری نہیں ہے ،اور وہ سخت مخالفت کے باوجودٹیپو جینتی منارہی ہے۔ آگے چل کر یہ لوگ قصاب(ممبئی دہشت گردحملے کا مجرم اجمل قصاب ) جیسے غداروں کی بھی جینتی منائیں گے۔اس لیے یہاں ریاستی عوام کے جذبات اور خودداری کی قدر کرنے والی حکومت کی فوری ضرورت ہے۔ مرکزی حکومت سے ریاست کو دیاگیا فنڈ پوری طرح استعمال کرنے کے لئے یہاں بی جے پی حکومت کی ضرورت ہے۔"

اجلاس کا افتتاح کرتے ہوئے یڈی یورپا نے کہا کہ" پریورتن یاترا ریاست کے تمام 224اسمبلی حلقوں تک پہنچے گی اورسدا رامیا کو گدی سے اتارتے ہوئے کانگریس سے پاک کرناٹکا حکومت کی تشکیل کے لئے جد وجہدکرے گی۔"یڈی یورپانے کہا کہ 78دنوں تک چلنے والی اس یاترا کا اختتام 28جنوری کو ہوگا اور اس دن پارٹی کی طرف سے عوام دوست پروگرام اور منصوبے کا اعلان کیاجائے گا۔انہوں نے کہا کہ" میں نے وزیر اعلیٰ بننے کے لئے اس یاترا کا اہتمام نہیں کیا ہے ، بلکہ میں کرناٹکا کو ایک ماڈل اسٹیٹ بنانا چاہتا ہوں۔موجودہ حکومت عوامی مسائل حل کرنے کی توجہ نہیں دے رہی ہے۔ہم غیر منقسم جنوبی کینرا میں بدلتے ہوئے حالات کودیکھ کر خاموش نہیں بیٹھ سکتے ۔ ہم ہمارے اضلاع کو دوسرا ملاپورم(کیرالہ میں مسلم اکثریت اور غلبے والا علاقہ) اور کنّور(جہاں سی پی آئی ایم کا زور ہے اور سیاسی قتل کی وارداتیں ہورہی ہیں)بننے نہیں دیں گے۔"

اس کے علاوہ یڈی یورپا نے کانگریسی وزرا اور حکومت پر بہت سارے الزامات کی جھڑی لگاتے ہوئے بی جے پی کے اوصاف اور خوبیاں گنائیں اور کہا کہ عوام دشمن حکومت کوالیکشن میں ہرانا ہی اس پریورتن یاترا کا مقصد ہے۔سابق وزیر اعلیٰ اور موجودہ مرکزی وزیر سدانند گوڈانے بھی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے بی جے پی کے گن گاتے ہوئے کہا کہ مرکز اور ریاست میں اگر ایک ہی پارٹی کی حکومت ہوگی تو پھر ریاست کی ترقی کی رفتار تیز ہوجائے گی۔

اجلاس کے دوران رکن پارلیمان شوبھا کرندلاجے کے علاوہ بی جے پی کے اہم لیڈران اسٹیج پر موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

بے کار پڑا ہے بھٹکل بندر پر پینے کے صاف پانی کا مرکز۔ 12لاکھ روپے کا تخمینہ۔ ادھورا پڑا ہے منصوبہ

بھٹکل تعلقہ کے ماوین کوروے علاقے میں واقع بندرگاہ پر پینے کے صاف پانی کا ایک مرکز 12لاکھ روپے کی لاگت سے تعمیر کرنے کا منصوبہ شروع ہوئے دو سال کا عرصہ گزرچکا ہے۔ ٹھیکے دار کی غفلت اور افسران کے کاہلی کی وجہ سے ابھی تک یہ منصوبہ پورا نہیں ہوا ہے اور عوامی استعمال کے لئے دستیاب ...

ہائی اسکول او رکالجوں کے امتحانات مقررہ وقت پر ہوں۔سرسی میں اے بی وی پی نے دیا میمورنڈم

ریاستی سرکار کی طرف سے ابھی تک وزیر تعلیم کا قلمدان کسی کو نہ دینے اور طلبہ کی تعلیمی زندگی کے ساتھ کھلواڑ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد کے اراکین نے تحصیلدار کی معرفت میمورنڈم دیا اورمطالبہ کیا ریاست کے پرائمری اور سیکنڈری محکمہ تعلیمات کو تباہ ہونے سے ...

کاروار: کائیگا اٹامک اینرجی پلانٹ توسیعی منصوبہ۔ عوامی اجلاس ملتوی کرنے کے لئے دیا گیا میمورنڈم

کائیگا میں واقع جوہری توانائی کے مرکز میں مزید دو نئے یونٹس قائم کرنے کا جو منصوبہ زیرغور ہے اس کے سلسلے میں عوامی شکایات اور احوال جاننے کے لئے 15دسمبر کو عوامی اجلاس منعقد ہوناطے تھا۔ لیکن سابق رکن اسمبلی ستیش سائیل کی قیادت میں عوام کی طرف سے ایڈیشنل ڈی سی ڈاکٹر سریش ایٹنال ...

کاروار میں 22اور23دسمبر کومنعقد ہوگا روزگار میلہ

کاروار رکن اسمبلی روپالی ایس نائک کی قیادت میں 22اور23دسمبر کو ایک زبردست روزگار میلہ منعقد کیا جائے گا، جس میں ملک کے مختلف علاقوں سے 106کمپنیوں کے نمائندے حصہ لیں گے۔توقع کی جارہی ہے کہ تقریباً5300بے روزگار نوجوان اس میلے سے فائدہ اٹھائیں گے ۔