شہریت (ترمیمی) بل2016کو مشترکہ پارلیمانی کمیٹی کی منظوری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th January 2019, 12:40 PM | ملکی خبریں |

 

نئی دہلی،8؍جنوری (ایس او نیوز؍یواین آئی) شہریت (ترمیمی) بل2016پر قائم مشترکہ پارلیمانی کمیٹی نے اس بل کو کچھ ارکان کے اختلافی نوٹ کے ساتھ منظوری دے دی ۔بل میں شہریت قانون1955میں ترمیم کر کے پاکستان، بنگلہ دیش اور افغانستان سے آکر غیر قانونی طور پر ملک میں قیام پذیر ہندو، سکھ، بودھ ، جین، پارسی اور عیسائی فرقہ کے لوگوں کو شہریت کے قابل ماننے کا انتظام کیا گیا ہے ۔لوک سبھا میں بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما راجندر اگروال کی صدارت والی کمیٹی کی رپورٹ آج پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں پیش کی گئی۔یہ بل19جولائی کو 2016میں لوک سبھا میں پیش کیا گیا تھا اور وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے اسے مشترکہ پارلیمانی کمیٹی میں بھیجنے کی تجویز پیش کی تھی۔ راجیہ سبھا نے اس تجویز کو12اگست2016میں منظوری دے دی۔ کمیٹی کو اسی سال سرمائی اجلاس ختم ہونے سے ایک دن پہلے اپنی رپورٹ دینی تھی لیکن اس کی مدت پانچ بار بڑھائی گئی اور آخر میں یہ طے کیا گیا کہ کمیٹی2018میں سرمائی اجلاس ختم ہونے سے ایک دن پہلے اپنی رپورٹ دے گی۔کمیٹی نے گزشتہ4جنوری کو اس بل کو منظوری دے دی۔کمیٹی میں اکثریت سے منظور اس بل کی مخالفت میں کچھ ارکان نے اختلافی نوٹ لکھے ہیں۔ بل کو سیشن کے آخری دن یعنی منگل کو لوک سبھا میں پیش کیا جا سکتا ہے ۔

ایک نظر اس پر بھی

جماعت اسلامی نے عوامی منشور برائے پارلیمانی انتخابات جاری کیا

جماعت اسلامی ہندنے عوامی منشوربرائے پارلیمانی انتخابات 2019جاری کرتے ہوئے کہاہے کہ کسی بھی ملک میں صحت مند جمہوریت کی بقا کے لئے ضروری ہے کہ عوام اور سول سوسائیٹی اپنے لئے بہترین نمائندوں اور اچھی سیاسی جماعت کے انتخاب اور رائے وہی میں اقدامی اور فعال کردار ادا کریں۔ عوام سے ...

مودی کی ’چوکیدار مہم‘ پر پرینکا نے کہاراہل ٹھیک کہتے ہیں ’امیروں کا ہوتا ہے چوکیدار‘

وزیر اعظم نریندر مودی کی ’چوکیدار مہم‘ پر کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے زور دار حملہ کیا ہے۔پی ایم مودی کے پارلیمانی حلقہ وارانسی میں ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے پرینکا گاندھی نے کہا کہ غریب لوگوں کے چوکیدار نہیں ہوتے۔

مرکزی وزیر رام داس اٹھاؤلے کا بی جے پی۔شیوسینا کو انتباہ، کہا دلت ووٹ کو کم نہ گرداناجائے

مہاراشٹر میں بی جے پی، شیو سینا کو 23 نشستیں دے کر اپنے پالے میں رکھنے میں کامیاب ہو گئی ہے لیکن ریاست میں بی جے پی کی اتحادی پارٹی آر پی آئی کے لیڈر اور راجیہ سبھا ممبر پارلیمنٹ رام داس اٹھاولے کا بیان اس کی مشکلیں بڑھا سکتا ہے۔