چنتامنی ملی کونسل کے زیراہتمام حضرت مفتی اشرف علیؒ صاحب کے انتقال پر اظہار تعزیت

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th September 2017, 12:43 AM | ریاستی خبریں |

چنتامنی: 12؍ستمبر(سید اسلم پاشاہ؍ایس اونیوز)چنتامنی میں آل انڈیا ملی کونسل کے زیراہتمام حکیم الملت امیر شریعت کرناٹک مہتمم دارلعلوم سبیل الرشاد بنگلورحضرت مولانا مفتی اشرف علی صاحب باقوی قاسمی ؒ کے انتقال پر تعزیتی پروگرام چنتامنی ملی کونسل کے صدر مولانا امتیازاللہ خان کاشفی کی صدارت میں منعقد کیاگیا جس میں مصلیان کرام اورملی کونسل کے نائب صدر محبوب خان عرف بابو، محبوب خان نائب سکریٹری سکندر عرفان ایس اے واجدمولانا عبد الرزاق مظاہری مولانا ارشاد احمد نعمانی امام مسجد عائشہ مولانا عمر رشادی امام مسجد آمنہ دیگر اراکین وغیرہ نے دعاؤں کا اہتمام کیا 

یاد رہے کہ مسجد آمنہ کی سنگ بنیاد امیر شریعت کرناٹک اول شاہ ابوسعود ؒ صاحب نے رکھی تھی اور اس موقع پرمفتی اشرف علی صاحب ؒ بھی شریک رہے تھے۔

تعزیتی جلسہ میں مولانا امتیازاللہ خان نے کہاکہ حضرت والا حسن اخلاق کے مالک تھے اورریاست کرناٹک کے ایک مخلص رہبر ورہنماتھے اور مختلف سماجی ملی خدمات انجام دینے میں  بے مثال تھے ہمیشہ قوم وملت کی فکر میں سرگرم رہتے تھے مسلکوں سے بالاتر ہوکر ملت کی اتحاد کے لئے آپ کی بڑی کوشش رہی اسی وجہ سے ہر خاص وعام آپ کی تعظیم تکریم کرتا ہے ۔

اس موقع پر مولانا عبدالرزاق نے کہاکہ علماء انبیاؑ کے وارثین ہیں ہمیں ان کے نقش قدم پر چلنا ہے مولانا عمر رشادی نے کہاکہ حضرت نے تمام زندگی مدرسہ میں دینی تعلیم علوم نبوی پڑھاتے ہوئے گزاردی، جب وہ  بخاری شریف پڑھاتے تو اسی وقت طلبہ کو ذہین نشین ہوجاتا تھا۔ 

ایس اے واجد نے کہاکہ حضرت مفتی صاحب کے چہرے کو جب بھی دیکھنے کا موقع ملا ا ن کے چہرے کو دیکھتے ہی اللہ کی یاد آجاتی تھی اس موقع پر محبوب نگر مکتب کاشف القرآن کی معلمہ اہلیہ امتیازاللہ خان اوردخترنے بھی مدرسہ سے تعزیت کا پیغام پیش کیااس موقع پر نوجوان ملی کونسل کے رکن صادق پاشاہ شعیب اللہ خان خزر تنویر وغیرہ نے شرکت کی۔

ایک نظر اس پر بھی

عوام صرف تعلیم یافتہ نہیں بلکہ باشعور بھی بنیں : بھٹکل میں منعقدہ سول سرویس پروگرام کی اختتامی تقریب میں راجیہ سبھا رکن ہری پرساد کااظہار خیال

موجودہ ذات پات کے نظام میں سرسوتی کی پوجا کرنےو الی 64فی صد خواتین ناخواندہ ہیں، جبکہ لکشمی کی پوجا کرنے والی 90فی صد خواتین جائیدادکے حق کے لئے کوشاں ہیں، عوام صرف تعلیم یافتہ ہی نہیں بلکہ  اُنہیں باشعور بھی ہونا چاہئے۔ ان خیالات کا اظہار  راجیہ سبھا ممبر بی کے ہری پرساد نے ...

ہبلی میں گھر کے باہر رکھی ہوئی تین بائک نذر آتش؛

یہاں شہر کے گنیش  پیٹ میں اپنے ہی گھر کے کمپائونڈ میں رکھی ہوئی تین موٹر بائکوں کو کچھ نامعلوم شرپسندوں کی طرف سے نذر آتش کئے جانے کی واردات پیش آئی ہے، بتایا گیا ہے کہ رات کے کسی پہر میں کسی نے ان بائکوں کو آگ لگادی، جس کے نتیجے میں تینوں بائک جل کر خاکستر ہوگئی ہیں۔

مودی حکومت میں اچھے دن صرف امیروں کے آئے: سدرامیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا نے مرکز میں برسر اقتدار مودی حکومت پر سخت حملہ کرتے ہوئے کہاکہ مودی نے ملک کو اچھے دن کے خواب دکھا کر اقتدار پر قبضہ کیا، لیکن ساڑھے تین سال گزرجانے کے باوجود بھی ملک کا ایک دن بھی اچھا نہیں گزرا ۔

روہنگیا مسلمانوں پر مظالم کے خلاف چامراج نگر میں ایس ڈی پی آئی کا احتجاجی مظاہرہ 

میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کی سخت مذمت کرتے ہوئے ایس ڈی پی آئی چامراج نگر ضلع کی جانب سے ضلعی صدر ابرار احمد کی قیادت میں ایک احتجاجی ریالی اور احتجاجی مظاہرے کا انعقاد کیا گیا۔