اے سی بی کے آنے سے لوک ایوکتہ کمزور نہیں ہوئی:چنتامنی میں ڈی وائی ایس پی اشوک کا بیان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 20th April 2017, 2:30 PM | ریاستی خبریں |

چنتامنی:20 /اپریل(محمد اسلم /ایس او نیوز)ریاست میں اے سی بی کے قیام کے بعد لوک ایوکتہ کمزور نہیں ہوئی بلکہ پہلے جس طرح لوک ایوکتہ میں طاقت ہے وہی طاقت آج بھی برقرار ہے اے سی بی اپنے طور پر کام کرنے میں دن رات مصروف ہے تو لوک ایوکتہ اپنے طور پر کام کررہی ہے ان خیالات کااظہار لوک ایوکتہ کے ڈی وائی ایس پی اشوک نے کیا ۔

آج یہاں کے ٹروالرس بنگلہ میں منعقد عوامی شکایت اور عوامی مسائل کے حل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ضلع بھر کے ہر تعلقہ میں لوک ایوکتہ عوامی شکایتوں کو سننے اور انھیں اپنے مطابق حل کرنے کے لئے اے سی بی کے تعاون سے لوک ایوکتہ بھی کوشش کررہی ہے اے سی بی اور لوک ایوکتہ ایک سکّے کے دو رُخ ہے ۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں اکثر شکایتیں موصول ہوتی ہیں سرکاری دفاتر میں عوام کے کسی کام کے لئے رشوت کی مانگ کی جارہی ہے اگر کوئی سرکاری افسر رنگے ہاتھ پکڑا گیا تو لوک ایوکتہ اُس کو ہر گیز نہیں بخشے  گی عوام کسی بھی سرکاری افسر کو کسی بھی کام کے لئے رشوت نہ دیں اگر رشوت کا مطالبہ کریں تو اس کی اطلاع ہمیں دی جائے ہم لوگ کارروائی کریں گے کیونکہ حکومت سرکاری افسران کو ہر ماہ تنخواہ دیتی ہے ان سے مفت میں ملازمت نہیں کراتی ۔

انہوں نے عوام سے اپیل کرتے ہوئے کہا عوام لوک ایوکتہ کو کمزور نہ سمجھیں ابھی بھی اگر لوک ایوکتہ کو عوام شکایت کرے تو ان کے شکایتیوں کالمحوں میں حل کیا جائے گا انہوں نے مزید کہا کہ حکومتیں عوام کی فلاح بہبودی  کے لئے مختلف اسکیمیں جاری کرچکی ہے متعلقہ افسران کو چاہئے ایمانداری سے ملازمت کرکے سرکاری اسکیموں کے متعلق عوام میں بیداری لائی جائے اگر عوام کو اسکیموں کے متعلق جانکاری نہیں ہوسکی تو انہیں جانکاری دی جائے خواہ مخواہ عوام کو پریشان نہ کریں عوام کی فلاح بہبود کیلئے بنائے گئے اسکیموں کو غبن کرنے کی ہر گیز کوشش نہ کریں ۔

انہوں نے اور کہا چکبالاپور ضلع کے چھ تعلقہ جات میں ہر ماہ  ایک دن کسی ایک جگہ پر اجلاس منعقد کرکے عوام کی شکایتیں سننے کا موقع فراہم کیا جائے گا عوام اگر کسی سرکاری افسر کے متعلق شکایت کرنے چاہتے ہیں تو وہ ضرور کاغذپر لکھ کر لائے زبان سے شکایت نہ کرے ۔

اشوک نے کہا کہ آر ٹی ای داخلوں میں کثیر دھاندلیوں کا الزام عوام نے لگایا ہے آر ٹی ای میں سیٹ حاصل کرنے کے لئے عوام کسی محکمہ تعلیمات عامہ کے افسرکو رشوت نہ دے کیونکہ یہ آر ٹی ای اسکیم بالکل مفت ہے چند پرائیویٹ اسکولوں کے ذمہ دارن بھی آر ٹی ای میں سیٹ دلانے کا جھوٹا بھروسہ دلاکر عوام سے  دن دہاڑے پیسے لوٹ رہے ہیں ۔

اس موقع پر کئی لوگوں نے لوگ ایوکتہ ڈی وائی ایس پی کو کئی  شکایتیں کیں، اُن کی شکایتیوں کو سننے بعد ڈی وائی ایس پی نے جائے مقام پر ہی ان کی شکایتیوں کا حل پیش کیا اس موقع پر ٹاون پولیس تھانہ کے سرکل انسپکٹر ہنومنتپا بلاک ایجوکیشن افسر محمد خلیل سمیت کئی افسران وغیرہ موجود رہے ۔

ایک نظر اس پر بھی

ڈی کے شیوکمار پہلے وزارت سے استعفی دیں اور تحقیقات کاسامنا کریں۔کاروار میں اپوزیشن لیڈر ایشورپا کا مطالبہ

پچھلے دنوں وزیر توانائی ڈی کے شیو کمار کے مختلف ٹھکانوں پر آئی ٹی کے چھاپے اور غیر محسوب دولت کے سلسلے میں چل رہی تحقیقات کے پس منظر میں اپوزیشن لیڈر ایشورپا نے مانگ کی ہے کہ ڈی کے شیوکمار سب سے پہلے اپنے قلمدان سے مستعفی ہوجائیں اور پھر تحقیقات کریں۔

نیشنل ہائی ویزکو ڈی نوٹیفائی کرنے کا معاملہ: ریاستی حکومت شراب لابی کو راحت پہنچانا چاہتی ہے جبکہ مرکزی حکومت دامن بچارہی ہے

سپریم کورٹ کے حکم پر نیشنل اور اسٹیٹ ہائی ویز سے قریب واقع شراب خانوں کو بند کروانے کے بعد ریاستی حکومت کو بڑاخسارہ ہوا ہے جس کی بھرپائی اور شراب لابی کو راحت پہنچانے کے لئے حکومت نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ نیشنل ہائی ویز کے کچھ حصے کو ڈی نوٹیفائی کرکے اسے ریاستی ہائی ...

اسکولوں میں عوام اور والدین کے داخلے پر پابندی، لیجسلیچر کمیٹی ریاستی حکومت سے سفارش کرے گی: اگرپا

رکن کونسل وریاستی محکمۂ بہبود خواتین واطفال کی لیجسلیچر کمیٹی کے چیرمین وی ایس اگرپا نے کہا کہ اسکولوں میں عوام کے داخلے پر پابندی لگنی چاہئے۔ اسکول کے پرنسپل کی اجازت کے بغیر اسکول کے احاطہ میں والدین کے داخلے کو بھی ممنوع قرار دینے کی سفارش پر ان کی کمیٹی سنجیدگی سے غور ...

شہر سے عازمین حج کی 13 پروازیں روانہ، مکہ مکرمہ میں تمام عازمین سکون کے ساتھ مقیم

شہر بنگلور سے عازمین حج کی روانگی کا سلسلہ تکمیل کی طرح رواں دواں ہے۔ اب تک روزانہ 340 عازمین پر مشتمل بارہ پروازیں کیمپے گوڈا انٹر نیشنل ایرپورٹ سے جدہ کے شاہ عبدالعزیز ایرپورٹ پہنچ چکی ہیں۔ یہاں سے پہنچنے والے عازمین حج مکہ مکرمہ کے گرین اور عزیزیہ زمروں میں آرام سے مقیم ہیں ...

جی ایس ٹی نظام معاشی حالات کو بہتر بنانے کیلئے ہے

الگ الگ زمروں کے ٹیکس نظام کو یکجا کرتے ہوئے مرکزی حکومت کی طرف سے جی ایس ٹی کی شکل میں رائج یکساں ٹیکس نظام کا مقصد ٹیکس کی ادائیگی کو سہل بنانا ہے۔ یہ بات آج معروف ماہر معاشیات اور آئی ٹی آر اے ایف کے چیرمین ڈاکٹر پارتھا سارتھی نے کہی۔ آج یہاں ایف کے سی سی آئی ممبران سے خطاب ...