چھتیس گڑھ انتخابات: بی جے پی کو جھٹکا، ست نامی سماج کے گرو بل داس کانگریس میں شامل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 7th November 2018, 11:41 PM | ملکی خبریں |

رائے پور7نومبر ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا )چھتیس گڑھ میں اسمبلی انتخابات کے پہلے مرحلے کی پولنگ سے چند دن پہلے حکمراں بھارتیہ جنتا پارٹی کو بڑا جھٹکا لگا ہے۔ست نامی سماج کے گرو بل داس اپنے بیٹے خوشونت صاحب اور سینکڑوں حامیوں کے ساتھ کانگریس پارٹی میں شامل ہو گئے ہیں۔واضح ہو کہ ریاست میں پہلے مرحلے میں 12 نومبر کو ووٹنگ ہونی ہے۔ چھتیس گڑھ میں ست نامی سماج سیاسی جماعتوں کے لئے بڑا ووٹ بینک ہے۔ کل ووٹوں میں اس معاشرے کی 14 سے 16 فیصد کی حصہ داری ہے۔ بتا دیں کہ حال ہی میں بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ نے چھتیس گڑھ کا دورہ کیا تھا اور اس دوران انہوں نے گرو بل داس سے ملاقات کرتے ہوئے ست نامی سماج کی حمایت مانگی تھی۔ ایسے میں ان کے کانگریس کے خیمے میں جانے کو بڑے سیاسی واقعات کے طور پر دیکھا جا رہا ہے۔ اپنے فیصلے کے بارے میں اطلا ع دیتے ہوئے گرو بل داس نے کہا کہ بی جے پی نے سماج کے لوگوں کا احترام نہیں کیا، اس لیے انہوں نے کانگریس پارٹی جوائن کی ہے۔ انہوں نے ساتھ ہی کہا کہ آنے والے دنوں میں دوسرے لوگوں سے بھی وہ کانگریس کی حمایت کرنے کی اپیل کریں گے۔جہاں ایک طرف کانگریس نے اس فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے، وہیں دوسری طرف یہ بھی کہا کہ کسی مذہبی رہنما کے ان کی پارٹی میں شامل ہونے سے ان کے ووٹ بینک پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔ گرو بل داس کی کانگریس میں انٹری کے بعد پارٹی چھتیس گڑھ اسمبلی انتخابات میں الٹ پھیر کرتے ہوئے اہم انتخابات میں جیت کی امید کر رہی ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ کانگریس میں پہلے سے ہی ست نامی سماج کے ایک رہنما رودر گرو موجود ہیں۔ چھتیس گڑھ اسمبلی انتخابات میں دو مرحلے میں ووٹنگ ہونی ہے۔ پہلے مرحلے میں ماؤ متاثر ریاست کے جنوبی علاقے کی 18 سیٹوں پر 12 نومبر کو ووٹنگ ہوگی۔ دوسرے مرحلے میں باقی 78 سیٹوں پر پولنگ 20 نومبر کو ہوگی۔ تمام 90 سیٹوں پر ووٹوں کی گنتی 11 دسمبر کو ہو گی ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

پربھنی میں جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کی ورکنگ کمیٹی میں اہم امور طے ہوئے

جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کے اراکین عاملہ کا ایک اہم اجلاس مفتی مرزا کلیم بیگ ندوی صدر جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کی صدارت میں سٹی فنکشن ہال ،پربھنی میں منعقد ہوا ،جس میں حالات حاضرہ اور دیگر چند اہم امور پر تبادلہ خیال کے بعد فیصلہ لیا گیا ۔مجلس عاملہ جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کے اس اجلاس ...