لوک آیوکتہ جسٹس وشواناتھ کے قتل کی کوشش کا معاملہ سی سی بی پولیس نے عدالت میں چارج شیٹ پیش

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th June 2018, 11:14 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو 10 جون (ایس او  نیوز) لوک آیوکتہ جسٹس پی وشواناتھ شٹی کو لوک آیوکتہ دفتر میں ہی چاقو گھونپنے کی واقعہ کی تحقیقات مکمل کرکے سی سی بی پولیس نے 8ویں اے پی ایم ایم عدالت کو چارج شیٹ پیش کی ہے ۔ جس میں کہا گیا ہے کہ سرکاری افسران کے خلاف پیش کردہ جھوٹی شکایت کو مسترد کردینے پر برہم ہوکر ملزم تیج راج نے لوک آیوکتہ جسٹس پی وشواناتھ شٹی کو ہی چاقو گھونپ دیا تھا ۔ معاملہ کے ملزم تیج راج شرما اور لوک آیوکتہ وشواناتھ شٹی کے بیانات ، 58 ثبوتوں اور 145 دستاویزات سمیت 230 صفحات پر مشتمل چارج شیٹ کم جون کو ہی عدالت میں پیش کیا گیا ہے ۔ چارج شیٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ملزم نے لوک آیوکتہ کے قتل کا منصوبہ بنایا تھا ۔ اس کے لئے خود اس نے 7مارچ کو سنڈے بازار میں 60 روپیوں میں چاقو خریدی تھی لیکن یہ چاقو تیز دھاری نہ ہونے کی وجہ سے اس کا منصوبہ کامیاب نہیں ہوسکا ۔ ملزم نے انکشاف کیا ہے کہ اس نے مختلف سرکاری محکموں کے خلاف لوک آیوکتہ میں شکایت درج کرائی تھی لیکن 3 معاملات کا خلاصہ کرکے دو معاملات پر کوئی کارروائی نہیں کی اور نہ ہی لوک آیوکتہ نے اس سلسلہ میں کوئی تفصیلات فراہم کی اس سے برہم ہوکر ملزم نے لوک آیوکتہ کو ہی قتل کرنے کی کوشش کی ۔ سی سی بی پولیس کے مطابق جسٹس وشواناتھ شٹی پر حملہ کرنے والے تیج راج کاکیس لڑنے کے لئے جب کوئی بھی وکیل تیار نہیں ہوا تو ملزم نے خود دعویٰ پیش کرنے کی بات کہی ۔ اس موقع پر اس نے عدالت کو بتایا کہ جب تک اسے انصاف نہیں ملے گا اس وقت تک وہ اپنی جدوجہد جاری رکھے گا ۔ دوسری طرف لوک آیوکتہ نے تحقیقات میں تیزی لانے کیلئے کہا ہے ۔ انہوں نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ اس معاملہ کے پیچھے کسی اور کا ہاتھ ہوسکتا ہے اس لئے اس معاملہ کی تحقیقات میں مزید تیزی لائی جائے ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کانگریس تشہیری کمیٹی کے نئے صدر ایچ کے پاٹل نے عہدہ کا جائزہ لے لیا ملک کواچھے دن کا وعدہ کرکے اقتدار پرآئی بی جے پی کے لیڈروں نے ملک کوبے روزگاروں کا مرکز بنا دیاہے:وینو گوپال

سابق ریاستی وزیر ایچ کے پاٹل نے آج کرناٹک پردیش کانگریس تشہیری کمیٹی کے صدر کی حیثیت سے عہدہ کاجائزہ لے لیا ۔

بی جے پی کوابھیشک منوسنگھوی نے کہا ، کرناٹک میں کھلواڑہوتاتوقانونی منصوبہ تیارتھا

کرناٹک کے تازہ سیاسی واقعات کے پس منظر میں کانگریس کے سینئر لیڈر ابھیشیک منو سنگھوی نے جمعرات کو کہا کہ اگر بی جے پی ریاست کی مخلوط حکومت کو غیر مستحکم کرنے کے لیے اپنے ’آپریشن لوٹس‘پر آگے بڑھتی تو اس کومنہ توڑجواب دینے کے لیے کانگریس نے منصوبہ تیار کر رکھا تھا۔