سی بی آئی معاملہ :عدالت نے کہا،حکومت کوغیرجانب دارہوناہوگا،بغیرمشاورت کے کارروائی پرسوال، سی وی سی نے عدالت کو بتایا،غیر معمولی حالات کے لیے غیر معمولی اقدامات لازمی ہیں

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th December 2018, 10:16 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،6دسمبر(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) جمعرات کو مرکزی نگرانی کمیشن نے سپریم کورٹ سے مطالبہ کیا کہ غیر معمولی صورتحال کے لئے غیر معمولی اقدامات لازمی ہیں۔ویجلنس کمیشن نے آلوک ورما کو مرکزی تفتیشی بیورو کے ڈائریکٹر کے حقوق سے محروم کرکے چھٹی پر بھیجنے کے مرکز کے فیصلے کے خلاف ان کی عرضی پر سماعت کے دوران یہ دلیل دی۔چیف جسٹس رنجن گوگوئی، جسٹس سنجے کشن کول اور جسٹس کے ایم جوزف کی بنچ کے سامنے سی وی سی کی جانب سے ایڈیشنل سالیسٹر جنرل تشار مہتا نے یہ دلیل دی۔انہوں نے عدالت کے فیصلوں اور سی بی آئی کو کام کرنے والے قوانین کا ذکر کیا اور کہا کہ (سی بی آئی پر)کمیشن کی نگرانی کے دائرے میں ایسے حیرت انگیز اور غیر معمولی حالات بھی آتے ہیں۔اس پر بنچ نے کہا کہ اٹارنی جنرل کے وینوگوپال نے انہیں بتایا تھا کہ حالات کے تحت یہ حالات پیدا ہوئے، یہ جولائی میں شروع ہواتھا،بنچ نے کہاکہ حکومت کی کارروائی کے پیچھے جذبات کوادارے کے مفادمیں ہوناچاہیے ۔عدالت نے کہاہے کہ ایسانہیں ہے کہ سی بی آئی ڈائریکٹر اور خصوصی ڈائریکٹر راکیش استھانہ کے درمیان جھگڑا راتوں رات سامنے آیا جس کی وجہ سے حکومت کوسلیکشن کمیٹی سے مشاورت کے بغیر ہی ڈائریکٹر کے حقوق واپس لینے کے لیے مجبورہوناپڑاہو۔انہوں نے کہاہے کہ حکومت کوغیرجانبدارہوناہوگا ۔

ایک نظر اس پر بھی

وزیراعظم مودی نے کابینہ سمیت سونپا صدرجمہوریہ کو استعفیٰ، 30 مئی کو دوبارہ حلف لینےکا امکان

لوک سبھا الیکشن کے نتائج کے بعد جمعہ کی شام نریندرمودی نے وزیراعظم عہدہ سے استعفیٰ دے دیا۔ ان کے ساتھ  ہی سبھی وزرا نے بھی صدرجمہوریہ کواپنا استعفیٰ سونپا۔ صدر جمہوریہ نےاستعفیٰ منظورکرتےہوئےسبھی سے نئی حکومت کی تشکیل تک کام کاج سنبھالنےکی اپیل کی، جسے وزیراعظم نےقبول ...

نوجوت سنگھ سدھوکی مشکلوں میں اضافہ، امریندر سنگھ نے کابینہ سے باہرکرنے کے لئے راہل گاندھی سے کیا مطالبہ

لوک سبھا الیکشن میں زبردست شکست کا سامنا کرنے والی کانگریس میں اب اندرونی انتشار کھل کرباہرآنے لگی ہے۔ پہلےسے الزام جھیل رہے نوجوت سنگھ سدھو کی مشکلوں میں اضافہ ہونےلگا ہے۔ اب نوجوت سنگھ کوکابینہ سےہٹانےکی قواعد نے زورپکڑلیا ہے۔

اعظم گڑھ میں ہارنے کے بعد نروہوا نے اکھلیش یادو پر کسا طنز، لکھا، آئے تو مودی ہی

بھوجپوری سپر اسٹار نروہوا (دنیش لال یادو) نے لوک سبھا انتخابات کے دوران سیاست میں ڈبیو کیا تھا،وہ بی جے پی کے ٹکٹ پر یوپی کی ہائی پروفائل سیٹ اعظم گڑھ سے انتخابی میدان میں اترے تھے لیکن اترپردیش کے سابق وزیر اعلی اکھلیش یادو کے سامنے نروہا ٹک نہیں پائے۔