روہنگیا معاملے میں ہندوستان کی شبیہ بگاڑنے کی کوشش:کرین رججو

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th September 2017, 9:56 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،13؍ستمبر(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)مرکزی وزیرمملکت برائے امور داخلہ کرین رججو نے روہنگیا معاملے میں ہندوستان کی’’کھلنایک‘‘جیسی تصویر بنانے کی کوششوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ملک کی شبیہ خراب کرنے کی سوچی سمجھی کوشش ہے۔رججو کا یہ بیان اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے صدرزیڈراد الحسین کی طرف سے ہندوستان کے روہنگیا پناہ گزینوں کو واپس بھیجنے پر تنقید کرنے کے2دن بعدآیاہے ۔رججو نے کہا کہ غیر قانونی طور پر ہندوستان میں داخل ہونے والے روہنگیاکے لوگوں کے معاملے میں ہندوستان کی تنقیدمیں ملک کی سلامتی کونظراندازکیاگیاہے۔انہوں نے ٹویٹ کیا کہ اس معاملے میں ہندوستان کوکھلنایک کہناہندوستان کی تصویر کو خراب کرنے کی منظم کوشش ہے۔ان تنقیدوں میں ہندوستان کی سلامتی کو نظر انداز کیا گیا ہے۔مرکزی حکومت میانمار میں نسل کشی کرنے کی وجہ سے روہنگیا مسلمانوں کوغیر قانونی تارکین وطن مانتے ہوئے ہندوستان سے بھیجنے کی منصوبہ بندی کر رہی ہے۔رججو نے پہلے ہی کہا ہے کہ روہنگیا کمیونٹی کے لوگ جو غیر قانونی طورپرہندوستان آئے ہیں انہیں واپس بھیجا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ ہندوستان میں موجود پناہ گزینوں کی تعداد دنیا میں سب سے زیادہ ہے۔حکومت نے گزشتہ 9اگست کو پارلیمنٹ میں بتایا تھا کہ موجودہ اعدادوشمار کے مطابق ہندوستان میں رہ رہے روہنگیا پناہ گزینوں کی تعداد 14ہزار سے زیادہ ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بہارمیں مورتی وسرجن پربی جے پی ،جدیومیں ٹھنی

محرم کے دن مجسمہ کابھسان نہیں کیا جانا چاہئے، مغربی بنگال حکومت کے اس حکم پروزیراعلیٰ ممتا بنرجی کی طرف سے تنقیدکی گئی ہے۔ اب اسی طرح کا حکم بہار کے وزیراعلیٰ نیتش کمار نے دیاہے۔

جتندر سنگھ نے کی جموں و کشمیر کے طلباء سے ملاقات

شمال مشرقی خطے کی ترقی کے وزیر جتیندر سنگھ نے دارالحکومت کے دورے پر آئے جموں و کشمیر کے طلبہ کے ایک گروپ کے ساتھ آج بات چیت کی اور نوجوانوں پر مرکوز مرکزی حکومت کے بہت سے اقدامات کے بارے میں تفصیل سے بتایا۔