شہید انسپکٹر کی بیوی نے کہا پہلے بھی دو بار گولی سے زخمی ہوئے، بہن بولی ،اخلاق کیس کی تحقیقات اور پولیس کی سازش بنی وجہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th December 2018, 1:43 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،04؍ دسمبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) بلند شہر تشدد میں شہید ہوئے پولیس انسپکٹر سبودھ سنگھ کی بیوی نے کہا ہے کہ ان کے شوہر انتہائی خلوص سے کام کرتے اور ساری ذمہ داری لے لیتے تھے۔ایسا واقعہ ان کے ساتھ پہلی بار نہیں ہوا ہے۔اس سے پہلے بھی ان پر دو بار گولی چلائی جا چکی ہے۔ لیکن کسی نے بھی ان کو انصاف نہیں دیا۔اب انصاف تبھی مانا جائے گا جب قاتلوں کو مارا جائے گا۔سبودھ کی بہن کا کہنا ہے کہ وہ اخلاق کیس کی تحقیقات کر رہے تھے اسی لیے انہیں مارا گیا ہے۔یہ پولیس کی ہی سازش ہے۔شہید انسپکٹر کی بہن نے کہاکہ ہمیں پیسہ نہیں چاہئے، وزیر اعلی ہمیشہ گائے،گائے کہتے رہتے ہیں۔سبودھ کے بیٹے نے کہاکہ میرے والد چاہتے تھے کہ میں اچھا شہری بنوں، وہ معاشرے میں مذہب کے نام پر تشدد کبھی نہیں چاہتے تھے۔آج میرے والد نے ہندو مسلم کی لڑائی میں اپنی جان گنوا دی۔کل کس کے والد کواپنی جان گنوانی پڑے گی۔ وہیں خفیہ محکمہ کے اے ڈی جی ایس پی شرودھکر نے کہا ہے کہ بدھ کی شام تک رپورٹ دینے کے لئے کہا ہے۔آپ کو بتا دیں کہ پیر کو بلند شہر میں گؤکشی کے شک میں ہوئے تشدد میں انسپکٹر سبودھ کمار سنگھ اور ایک سمت نام کے شخص کی گولی لگنے سے موت ہو گئی تھی۔پولیس اس معاملے کی تحقیقات کر رہی ہے کہ انسپکٹر اور سمت کو گولی کس نے ماری ہے۔فی الحال پولیس نے اس معاملے میں 4 افراد کو گرفتار کیا ہے اور 27 کے خلاف نامزد اور 50 نامعلوم مقدمہ درج کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

جے پی سی سے جانچ کرانے کا راستہ ا بھی کھلا ہے، عام آدمی پارٹی نے کہا،عوام کی عدالت اورپارلیمنٹ میں جواب دیناہوگا،بدعنوانی کے الزام پرقائم

آپ کے راجیہ سبھا رکن سنجے سنگھ نے کہا ہے کہ رافیل معاملے میں جمعہ کو آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود متحدہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی) سے اس معاملے کی جانچ پڑتال کرنے کا اراستہ اب بھی کھلا ہے۔

رافیل پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ، راہل گاندھی معافی مانگیں: بی جے پی

فرانس سے 36 لڑاکا طیارے کی خریداری کے معاملے میں بدعنوانی کے الزامات پر سپریم کورٹ کی کلین چٹ ملنے کے بعد کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے بی جے پی نے جمعہ کو کہا کہ کانگریس پارٹی اور اس کے چیئرمین راہل گاندھی ملک کو گمراہ کرنے کیلئے معافی مانگیں۔