برانڈیڈ کمپنیوں کے سامان والا پلاسٹک ٹھکانے لگانے کا نہیں ہے انتظام

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 2nd September 2018, 7:34 PM | ساحلی خبریں |

کاروار2؍ستمبر(ایس او نیوز) بلدیاتی اداروں کی جانب سے وقتاً فوقتاً پلاسٹک پر روک لگانے اور دکانوں پر چھاپہ ماری کرکے پلاسٹک کی تھیلیاں ضبط کرنے کی کارروائیاں چلتی رہتی ہیں۔ لیکن گھروں سے نکلنے والے کچرے کمپنیوں سے پیاک ہوکر آنے والے کپڑوں ، غذائی اجناس اور دیگر سامان کی جو پلاسٹک پیکنگ ہوتی ہے اس کو کچرا نکاسی مرکز پر ٹھکانے لگانے کا کوئی انتظام نہیں ہے۔

ایک اندازے کے مطابق کچرا نکاسی کے دوران 40تا 50فیصد پلاسٹک کچرا وہ ہوتا ہے جو کہ برانڈیڈ کمپنیوں کے سامان سے نکلا ہوا ہوتا ہے۔ حالانکہ پلاسٹک ٹھکانے کاجو2016کاایکٹ ہے اس کے مطابق اس میں برانڈیڈ پیکنگ والے پلاسٹک کو ٹھکانے کے سلسلے میں واضح ہدایات دی گئی ہیں۔جس میں کہا گیا ہے کہ ایسے پلاسٹک کو ٹھکانے لگانے کے لئے خصوصی نگراں کمیٹی تشکیل دی جائے جس میں ان کمپنیوں کے نمائندے بھی ہوں جن کے سامان کی نکلی ہوئی پیکنگ کچرے میں شامل رہتی ہے۔ اور برانڈیڈ سامان فروخت کرنے والوں میں سے جو لوگ اس میں تعاون نہیں کرتے ان کے خلاف کارروائی کی جانی چاہیے۔ 

مگر معلوم ہوا ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں ابھی تک کسی بھی شہر میں اس سلسلے میں بلدی ادارے نے کوئی اقدام نہیں کیا ہے۔برانڈیڈ آئٹمس تیار کرنے والوں کے نمائندوں سے کوئی رابطہ بھی نہیں کیا ہے۔ اس لئے پولیوشن کنٹرول بورڈ نے بلدی اداروں کو کچرا ٹھکانے لگانے کے سلسلے میں قانون پر پوری طرح عمل درآمد کرنے کے احکامات کے ساتھ نوٹس جاری کیا ہے اور پندرہ دن کے اندر جواب دینے کے لئے کہا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل :شرالی تٹی ہکل پرائمری اسکول کی پلاٹنیم جوبلی : ابنائے قدیم کے لئے کھیل مقابلوں کا انعقاد

تعلقہ کی شرالی تٹی ہکل سرکاری ہائر پرائمری اسکول کی پلاٹنیم جوبلی کے موقع پر اسکول کے ابنائے قدیم کے لئے کھیل مقابلوں کا انعقادکیا گیا ۔پلاٹنیم  جوبلی کمیٹی کے صدر وکیل سنتوش نائک نے تٹی ہکل میدان میں کھیل کی مشعل کو روشن کرتے ہوئے کھیل مقابلوں کا افتتاح کیا۔

گوا میں بیرونی مچھلیوں کی درآمد پر لگی پابندی سے کاروار، ملپے میں مچھلیاں سستی تو منگلورو میں ہوگئیں مہنگی !

جب سے گوا کی حکومت نے فارمولین کے مسئلے پر بیرونی ریاستوں سے مچھلیوں کی درآمد پر پابندی رکھی ہے اور کچھ قانونی شرائط لاگو کی ہیں، تب سے ساحلی کرناٹکا کے شہروں میں اس کا کچھ ملا جلا اثر دکھائی دے رہا ہے۔

ساحلی کرناٹکا پر طوفان’گجا‘ کی دستک۔ جنوبی کینرا میں بارش۔ منڈگوڈ میں بجلی گرنے سے ایک ہلاک۔مزید دو دنوں تک بارش ہونے کی پیش گوئی

تملناڈو میں تباہی مچانے کے بعد طوفان ’گجا‘ نے ساحلی کرناٹک پر دستک دی ہے۔ضلع جنوبی کینرا اور اڈپی کے کئی مقامات پر اتوار کی شام سے بھاری برسات ہونے کی اطلاع ملی ہے

بجلی گرنے سے منڈگوڈ میں ایک خاتون ہلاک؛ دو دیگر شدید زخمی

تعلقہ کے ارشینگری میں بادلوں کی گرجدار آواز کے ساتھ گرنے والی ایک بجلی کی زد میں آکر ایک خاتون کی موقع پر ہی موت واقع ہوگئی جس کی شناخت ہیمنپّا لمانی (52) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ واقعے میں دو دیگر زخمی ہوئے ہیں جنہیں  منڈگوڈ تعلقہ اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔