پھر کھل جائے گا بوفورس کا جن، سی بی آئی دوبارہ کھول سکتی ہے فائل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th August 2017, 12:17 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،11/اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ملک کی سیاست میں ایک بار پھر زلزلہ آ سکتا ہے۔ سی بی آئی نے بوفورس گھوٹالے کی فائل کو دوبارہ کھولنے کی اپیل کی ہے۔ سی بی آئی نے پارلیمنٹری کمیٹی کو کہا ہے کہ یہ معاملہ سپریم کورٹ جائے اس سے پہلے وہ اس کیس کو دوبارہ کھول سکتی ہے۔بتا دیں کہ بوفورس معاملہ 64 کروڑ روپے کی دلالی سے منسلک ہے، اس کو لے کر بی جے پی رکن اور وکیل اجے اگروال نے حال ہی میں سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی تھی۔ اگروال نے اس معاملے میں خصوصی رخصت پیٹشن پر جلد سماعت کی مانگ کی تھی، یہ معاملہ ستمبر 2005 سے زیر التوا ہے۔ غور طلب ہے کہ بوفورس کیس کے ملزمان کو دہلی ہائی کورٹ نے مئی 2005 میں بری کر دیا تھا۔بوفورس کیس 1987 میں سامنے آیا تھا۔ اس میں سویڈن سے جہاز خریدنے کے سودے میں رشوت کے لین دین کے الزامات میں وقت کے وزیر اعظم آنجہانی راجیو گاندھی اور آنجہانی اطالوی کاروباری کے نام گھر گئے تھے۔آپ کو بتا دیں کہ حکومت ہند اور سویڈن حکومت کے طور پر اے بی بوفورس کمپنی سے توپ کو لے کر 1437 کروڑ روپے کی ڈیل ہوئی تھی۔ہندوستانی فوج کو اس کی پہلی قسط 24 مارچ، 1986 کو ملی تھی، وہیں 16 اپریل، 1987 میں سویڈن کے ایک ریڈیو میں اس میں دلالی کی بات کی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

سنیمامیں لوگ تفریح کے لیے جاتے ہیں،قومی گیت کولازمی نہیں کیاجاسکتا؛قومی ترانہ پرسپریم کورٹ نے کہا، ہمیں اپنے ہاتھوں میں حب الوطنی نہیں رکھنی چاہیے

سنیماگھروں میں قومی گیت لازمی بنانے کے فیصلہ کے ایک سال بعد ایک موڑ آیاہے۔اب سپریم کورٹ نے سینٹرکوبتایاہے کہ وہ اس معاملے میں خودفیصلہ کرتے ہیں، ہر کام کو عدالت میں داخل نہیں کیاجاسکتاہے۔