بابری مسجد کی شہادت کیلئے بی جے پی ذمہ دار: اگرپا

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 21st April 2017, 2:03 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:20/اپریل(ایس او نیوز) سینئر کانگریس لیڈر اور رکن کونسل وی ایس اگرپا نے بی جے پی کی قومی قیادت بشمول وزیر اعظم نریندر مودی اور بی جے پی کے قومی صدر امیت شا سے مطالبہ کیا کہ بابری مسجد کی شہادت کیلئے وہ ملک کے عوام سے معافی مانگیں۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ عدالت میں اب یہ بات ثابت ہوچکی ہے کہ بابری مسجد بی جے پی کی ایک منظم سازش کے تحت گرادی گئی۔ بی جے پی کے 13قومی قائدین کے خلاف مقدمہ چلانے کی عدالت عظمیٰ نے اجازت دیتے ہوئے تیزی سے اس کارروائی کو مکمل کرنے کا حکم سنایا ہے۔ عدالت کے اس فیصلے کی روشنی میں بی جے پی کو یہ واضح کردینا چاہئے کہ وہ اس سازش کا حصہ کیوں بنی اور ملک کے عوام کے تئیں اپنی ذمہ داری ادا کرتے ہوئے اپنی کوتاہی کیلئے معذرت خواہی کرے۔انہوں نے کہاکہ ملک کے قانون اور آئین پر اگر بی جے پی کو بھروسہ ہے تو اسے فوراً ملک کے عوام سے معافی مانگنی چاہئے۔ انہوں نے کہاکہ سپریم کورٹ کی طرف سے یہ فیصلہ خوش آئند ہے کہ اس کیس کی سماعت کو دو سال کے اندر مکمل کیا جائے۔عدالت کے اس فیصلے نے عوام کے اس یقین کو پختہ کردیا ہے کہ اس ملک میں اب بھی انصاف کی جڑیں مضبوط ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ملک کے عوام سے معافی مانگنے کا مطالبہ ان کا ذاتی ہے۔ انہیں یقین ہے کہ کانگریس پارٹی کا موقف بھی یہی ہوگا۔انہوں نے کہاکہ بابری مسجد کی شہادت کیلئے صرف اڈوانی یا 13ملزم نہیں بلکہ پوری بی جے پی ذمہ دار ہے۔اس کے علاوہ سنگھ پریوار اور وشواہندو پریشد کو بھی اس کیلئے ذمہ دار ٹھہرایا جانا چاہئے۔ بابری مسجد کے تنازعہ کو باہمی بات چیت یا عدالت کے ذریعہ سلجھانے کی بجائے متنازعہ ڈھانچے کو گراکر بی جے پی نے ملک کے امن وامان کو تار تار کردیا اور دو فرقوں کے درمیان اعتماد کی فضا کو مکدر کردیا۔ اس سنگین جرم کیلئے بی جے پی کو جس قدر بھی سزا دی جائے کم ہوگی۔

ایک نظر اس پر بھی

میسورو:سرکاری ہال میں سیمینارکے دوران بیف کھانے پر تنازعہ 

چارواک سوشیل اینڈ کلچرل ٹرسٹ کے زیر اہتمام کلامندر میسورو کے مانیانگلا ہال میں 145Food Habits and Freedom of Expression146 کے عنوان سے جو سیمینار منعقد کیا گیا تھااس کے دوران اسٹیج پر بیف کھانے اور کھلانے کی وجہ سے ہندتووادی تنظیموں کی طرف سے اعتراضات اور مذمت کے ساتھ ایک نیا تنازعہ کھڑا ہوگیا ...

ایس ڈی پی آئی کے علاقائی صدر اشرف کے قتل میں ملوث 5ملزمین گرفتار۔۔قاتلوں اور سنگھی لیڈرپربھاکربھٹ کے رابط !۔۔قتل کا مقصدفرقہ وارانہ فساد بھڑکانہ تھا!!

انسپکٹر جنرل آف پولیس پی ہری شیکھرن کے بیان کے مطابق بنٹوال کے بینجن پدوی میں گزشتہ حال ہی میں ہوئے ایس ڈی پی آئی کے علاقائی صدر محمداشرف کلائی کے قتل میں ملوث 5ملزمین گرفتارکیا گیا ہے۔

109؍ کروڑ کا دھوکہ، کلرک اور آڈٹ افسر ملزم

بروہت بنگلور مہانگر پالیکے(بی بی یم پی) کو جعلی بل ا ور دستاویزات منسلک کرکے 109؍ کروڑ روپیوں کا دھوکہ دینے پر انفراسٹرکچر ڈیولپمنٹ محکمہ کے فرسٹ ڈویژن کلرک ماینا اور محکمہ آڈٹ کے افسر ناگراج کارنت کے خلاف السور گیٹ پولیس تھانہ میں ایف آئی آر درج کی گئی ۔

کرناٹک کا دیرینہ خواب شرمندۂ تعبیر بنگلور شہر اسمارٹ سٹی کی فہرست میں شامل

بشمول راجدھانی بنگلور ملک کے 30؍شہروں کو مرکزی حکومت نے اسمارٹ سٹی کے طورپر ترقی دینے کے لئے منتخب کرلیاہے۔ مرکزی وزیر برائے شہری ترقیات وینکیا نائیڈونے آج اس کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ مرکزی اسمارٹ سٹی اسکیم کے تحت ان 30؍شہروں کو ترقی دی جائے گی۔