بی جے پی لیڈر بھگوان کے نام پر ماحول مکدر کررہے ہیں قانون شکنوں کے خلاف سخت کارروائی کرنے وزیرداخلہ رام لنگا ریڈی کا انتباہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th December 2017, 11:22 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،4/دسمبر (ایس او نیوز) وزیرداخلہ رام لنگا ریڈی نے بی جے پی لیڈر پر سخت نکتہ چینی کرتے ہوئے کہاکہ وہ سری رام ہنومان جینتی اور دتا پیٹھا کے نام پر بھکتی سے زیادہ سیاست کرتے ہوئے ریاست میں امن وامان اور نظم وضبط میں خلل پیدا کرنے کی کوشش کرنے لگے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ سری رام ۔ ہنومان اور دتاپیٹھا کے لئے بی جے پی سے زیادہ کانگریس لیڈران کے دلوں میں بھکتی ہے۔ بی جے پی لیڈر بھگوان کے نام پر ریاست کی پرامن فضا میں خلل ڈالنے کے حربے استعمال کررہے ہیں انہیں اس معاملہ میں ہرگز کامیاب ہونے نہیں دیا جائے گا۔ پردیش کانگریس کمیٹی دفتر میں اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے وزیر داخلہ نے کہاکہ قانون کو اپنے ہاتھ میں لینے کی کوشش کی گئی تو ایسے افراد کے خلاف سخت کارروائی کی تنبیہ کی گئی ہے۔ وزیر داخلہ نے کہاکہ سری رام کے نام پر ایودھیا میں رام مندر تعمیرکرنے کے مقصد سے جو اینٹیں اکٹھا کی گئی تھیں وہ کہاں گئیں ابھی تک اس کا پتا نہیں ہے۔ مرکز اور اترپردیش میں بی جے پی برسراقتدار ہے۔ رام مندر تعمیرکرنے کے لئے انہیں کسی بھی طرح کی کوئی رکاوٹ نہیں۔ اس کے باوجود مندر تعمیرکیوں نہیں کی جارہی ہے؟ یہ سنجیدگی سے سوچنے کی بات ہے۔ انہوں نے کہاکہ بی جے پی اس تنازعہ کو برقرار رکھ کر سیاست کرنا چاہتی ہے اورو ہ 30؍سے 40؍سال تک رام مندر کو تعمیر نہیں کرے گی۔ مسٹر ریڈی نے کہاکہ بی جے پی لیڈر ریاست میں ا قتدار پر آنے کے جو خواب دیکھنے لگے ہیں اس میں انہیں کامیابی نہیں ملے گی۔ اس فرقہ پرست پارٹی کے لیڈر کیسے ہیں اس کے متعلق ریاستی عوام اچھی طرح واقف ہے۔ انہوں نے کہاکہ قوانین کے خلاف ورزی کرنے والے بی جے پی لیڈروں کے خلاف کارروائی کے لئے حکومت اپنے قدم پیچھے نہیں ہٹائے گی اور قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے ہر فرد کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے گی۔ اس معاملہ میں کسی سے بھی کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔ وزیر داخلہ نے کہاکہ بی جے پی ریاستی صدر بی ایس ایڈی یورپا مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے ، میسور کے رکن پارلیمان پرتاپ سمہا سمیت بی جے پی کے کئی لیڈر جو جی میں آیا بول رہے ہیں ۔ انہیں قانون کے متعلق کوئی جانکاری نہیں ہے۔ بی جے پی سینئر لیڈران کو چاہئے کہ وہ مذکورہ لیڈروں کو قوانین کے متعلق جانکاری کے لئے ایک تربیت گاہ کا اہتمام کریں۔ انہوں نے سخت کہاکہ قانون کے آگے بی جے پی لیڈران ہو یا کوئی سبھی یکساں ہیں اگر قانون ہاتھ میں لینے کی کوشش کی گئی تو ایسے افراد کو بخشا نہیں جائے گا۔ وزیرداخلہ نے ہنومان جینتی کے موقع پر ہنسور میں ہوئے تشدد کے لئے رکن پارلیمان پرتاپ سمہا کو راست قصور وار ٹھہراتے ہوئے کہاکہ وہ قانون کی خلاف ورزی کرنے کے بجائے جلوس کے لئے پولیس کی جانب سے جس سڑک کی منظوری دی گئی تھی اس کے مطابق جانے کے بجائے اپنی مرضی کے مطابق جلوس نکالنے کی کوشش کرتے ہوئے قانون کی خلاف ورزی کی تھی۔ انہوں نے کہاکہ نظم وضبط کو برقرار رکھنے کے لئے جب پویس اہلکار کارروائی کے دوران پرتاپ سمہا سمیت دیگر بی جے پی لیڈروں نے کارروائی میں رکاوٹیں پیدا کی تھی۔ وزیرداخلہ نے بتایا کہ بنگلور شہر میں جرائم کی وارداتوں میں کمی آئی ہے۔ لیکن ٹریفک پولیس تھانوں میں قوانین کی خلاف ورزی کے معاملات میں اضافہ ضرور ہوا ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

مہادائی ٹریبونل کے فیصلے کا چیلنج کرنے ریاستی حکومت تیار

ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ڈی کے شیوکمار نے کہاکہ شمالی کرناٹک کے بعض اضلاع کو پینے کے پانی کی فراہمی کا واحد ذریعہ مہادائی کے پانی کی تقسیم کے سلسلے میں حال ہی میں ٹریبونل نے جو فیصلہ صادر کیا ہے ریاستی حکومت اس کا سپریم کورٹ میں چیلنج کرے گی۔

جشن یوم آزادی کے موقع پر مدرسہ صفہ میں مولانا سید انظر شاہ قاسمی نے لہرایا ترنگا

یوم آزادی کے موقع پر مدرسہ صفہ، بیٹاداسنپورا مین روڈ، بنگلور میں پرچم کشائی کی تقریب منعقد کی گئی۔ جس میں مہمان خصوصی کی حیثیت مدرسہ ہذا کے سرپرست اعلیٰ شاہ ملت حضرت مولانا سید انظر شاہ قاسمی دامت برکاتہم نے شرکت کی۔