بھٹکل کی مختلف زمینات کے نقشہ جات فراہم کرنے تنظیم وفد کی بنگلور میں ریاستی سروے کمشنر سے مطالبہ

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 4th October 2018, 10:27 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے | ریاستی خبریں |

بھٹکل:4/ اکتوبر(ایس اؤ نیوز) بھٹکل کے عوام کو اپنی ہی زمین پر سرچھپانے کےلئےعمارت کی تعمیر کرنا جوئے شیر لانے کے برابر ہے۔ جب کبھی اس سلسلے میں عمارت تعمیرکرنے  کی منظوری کے لئے متعلقہ محکمہ سے رجوع کیا جاتا ہے  تو جواب ملتاہے کہ آپ کے زمین کا نقشہ ہی نہیں ہے۔اس سنگین مسئلے کو لے کر مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کا ایک وفد بنگلورو میں محکمہ رینیوو کے ریاستی کمشنر منیش مڈگل سے ملاقات کی اور اُنہیں میمورنڈم پیش کرتے ہوئے   مسئلہ کے حل کی درخواست کی۔

ملاقات کے دوران وفد نے کمشنر کو باور کرایا کہ برسوں پرانی زمینات کے نقشے اگر محکمہ میں نہیں ہیں تو عوام کہاں جائیں؟ اس سلسلے میں متعلقہ افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے سروے کرائے جانے کی درخواست کی۔

اس تعلق سے   نائب  کمشنر رمیش   نے  افسوس ظاہر کرتے  ہوئے کہاکہ مقامی اور ضلعی افسران کے ہوتے ہوئے  یہاں تک آپ کا آنا افسوس ناک ہے۔ انہوں نے  یقین دلایا کہ آپ بھی ضلع کے ڈپٹی کمشنر سے اس سلسلے میں ملاقات کریں ، میں بھی اپنی طرف سے انہیں ہدایات دوں گا۔

تنظیم کی طرف سے دئیے گئے میمورنڈم میں کہا گیا ہے کہ بھٹکل شہر کے کئی علاقوں کے نقشہ جات ناپید ہیں، متعلقہ محکمہ سے رجوع کرتے ہیں تو وہاں  نقشہ جات میسر نہیں ہونے کا پتہ چلتاہے۔ مثال کے طورپر بھٹکل تعلقہ سوسگڑی دیہات کے نوائط کالونی ، عثمان نگر، پرانا بھٹکل ، سروے نمبر 9999، 351،اے1/351،اے1اے2، 510،بھٹکل گلمی کے سروے نمبر 267اے کے علاقوں کی زمین کے نقشہ جات ہی نہیں ہیں۔ اس کے علاوہ  جالی دیہات میں سرکارکی طرف سے منظور کردہ سروے نمبر 66پر واقع 120پلاٹ، وینکٹاپور دیہات کے سروے نمبر 88پر موجود 150پلاٹ کے نقشے ہی نہیں ہیں۔ جن علاقوں کا یہاں تذکرہ کیاگیا ہے وہ شہر کے قدیم علاقوں میں شمار ہوتے ہیں، تعجب کی بات ہے کہ متعلقہ محکمہ میں ابھی تک ان علاقوں کی زمینات کے نقشے نہیں ہیں۔

میمورنڈم کے مطابق عوام  ان علاقوں میں رہائش کے لئے گھروں اور مکانوں کی تعمیر نہیں کرپارہے ہیں، کافی پریشانی جھیلنی پڑرہی ہے۔ جب کبھی متعلقہ محکمہ کو گھر یا عمارت کی تعمیر کے لئے عرضی دی جاتی ہے توافسران اسی عرضی کے پیچھے ’’ہمارے محکمہ میں اس زمین کا کوئی نقشہ نہیں ہے‘‘  لکھ کر ہاتھ میں تھما دیتے ہیں۔ اور بھٹکل کے نوائط کالونی اور دیگر علاقوں میں سرکار کی طرف سے قریب 50سال پہلے منظور شدہ کئی پلاٹوں کے نقشے محکمہ میں ہی نہیں ہیں۔ جس سے عوام کو" کے جی پی"  بنانے اور عمارت کی تعمیر کرنا ممکن نہیں ہوپارہاہے۔ کل ملا کر بھٹکل کی ترقی رک سی گئی ہے۔ میمورنڈم میں تنظیم کی جانب سے کمشنر صاحب سے اپیل کی گئی ہے کہ فوری طورپر سٹی سروے کے ذریعے کارروائی کی جائے تنظیم نے  شہر کی تمام زمینات کے نقشہ جات کو فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے  اور زور دیا ہے کہ اس سلسلے میں متعلقہ افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کام مکمل کرنے کی ہدایات دیں۔ اس موقع پر تنظیم کے جنرل سکریٹری محی الدین الطاف کھروری ، نائب صدر عنایت اللہ شاہ بندری ، جناب محتشم برنی جعفر، جناب کے ایم اشفاق وغیرہ موجود تھے۔

میمورنڈم کو وصول کرتے ہوئے ایک طرف نائب کمشنر رمیش نے اپنی جانب سے کاروائی کا یقین دلایا  وہیں ریاستی کمشنر منیش مڈگل نے  بھی  نقشہ جات  جاری کرنے کے لئے متعلقہ آفسران کو ہدایات دینے کا یقین دلایا۔

ایک نظر اس پر بھی

محکمہ جنگلات کی جانب سے ہونے والی ہراسانیوں کے خلاف 23فروری کو سرسی میں ہوگا سی سی ایف دفتر کا محاصرہ

جنگلاتی زمین پر رہائش پزیر افراد کے لئے حقوق فراہم کرنے والے قوانین کی خلاف ورزی کرنے اور بار بار جنگلاتی زمین پر مکانات یا باغاغبانی کرکے زندگی گزارنے والوں پر محکمہ جنگلات کے افسران کی ہراسانی کے خلاف 23فروری کو سرسی میں واقع چیف کنزرویٹر آف فاریسٹ (سی سی ایف) دفتر کا محاصرہ ...

منگلورو سٹی مال کے فوڈ شاپ میں معمولی آتشزدگی؛ فوری طور پر پایا گیا آگ پر قابو؛ معمولی نقصان

منگلورو سٹی مال کی ایک فوڈ شاپ میں آگ لگنے پر تھوڑی دیر کے لئے افراتفری کا ماحول پیدا ہوگیا۔ مگرپانڈیشور علاقے سے فائر بریگیڈ کے افسران نے موقع پر پہنچ کر جلد ہی آگ پر قابو پالیا ۔

مینگلور اور اُڈپی میں پولس افسران کے تبادلے؛ نیشا جیمس اب اُڈپی کی نئی ایس پی اور سندیپ پاٹل مینگلور کے نئے پولس کمشنر

پارلیمانی انتخابات کو لے کر ریاستی حکومت کی جانب سے بڑے پیمانے پر اعلیٰ آفسران کے تبادلے جاری ہیں، اسی مناسبت سے اب اُڈپی اور مینگلور میں اعلیٰ آفسران کے تبادلے کئے گئے ہیں۔

ہوناور: ہیسکام کے افسران راستہ بھٹک گئے۔ پوری رات جنگل میں گزارنے پر ہوئے مجبور

گیر سوپّا ڈیم کے علاقے میں گھنے جنگل سے گزرنے والی 33کے وی بجلی لائن کا معائنہ کرنے کے لئے نکلی ہوئی ہیسکام افسران اور عملے پر مشتمل ایک ٹیم میں شامل دوافسران جنگل میں راستہ بھٹک گئے جس کی وجہ سے انہیں پوری رات جنگل ہی میں گزارنی پڑی ۔

ہوناور: ہیسکام کے افسران راستہ بھٹک گئے۔ پوری رات جنگل میں گزارنے پر ہوئے مجبور

گیر سوپّا ڈیم کے علاقے میں گھنے جنگل سے گزرنے والی 33کے وی بجلی لائن کا معائنہ کرنے کے لئے نکلی ہوئی ہیسکام افسران اور عملے پر مشتمل ایک ٹیم میں شامل دوافسران جنگل میں راستہ بھٹک گئے جس کی وجہ سے انہیں پوری رات جنگل ہی میں گزارنی پڑی ۔

بھٹکل مجلس احیاء المدارس کے زیراہتمام انوکھی نوعیت کا  ’اجتماعی قرأت مقابلے ‘کا خوبصورت انعقاد : قرآن فیصلہ کن ، ممتاز ،مسلسل پڑھی جانی والی واحد کتاب ہے

مجلس احیاء المدارس بھٹکل کے زیر اہتمام مخدوم کالونی میں واقع مدرسہ دارالتعلیم و التربیہ میں 19فروری 2018بروز منگل کی رات منعقدہ اپنی نوعیت کے پہلے ’’اجتماعی قرأت مقابلہ ‘‘میں جامعہ اسلامیہ چوک بازار بھٹکل اول، جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے شعبہ ثانویہ دوم اور جامعہ اسلامیہ کارگدے ...

بھٹکل انجمن انجینئرنگ کالج کے فارغین کی دبئی میں نشست؛قائد قوم نے کہا؛ فارغین کا ساتھ ملا تو انجمن کی کامیابی یقینی

گذشتہ دنوں دبئی میں قائد قوم ڈاکٹر ایس ایم سید خلیل الرحمن صاحب کی رہائش گاہ پر بھٹکل انجمن انجنیرنگ کالج کے فارغین کی ایک خصوصی نشست منعقد ہوئی جس میں انجمن انجنیرنگ کالج کے اولین بیچBatch کے فارغین نے بھی شرکت کی ۔

دہشت گردانہ حملے ہندو مسلم اتحاد کو نہیں توڑ سکتے پلوامہ شہید جوانوں کو خراج عقیدت کے دوران شرکاء کا اظہار خیال

بنگلور وپیس آرگنائزیشن کے محمد رفیع دھارواڑکر، ترنگ میوزک اکیڈمی کی نکہت سلطانہ، نوا کرناٹک آٹو ڈرائیور یونین کے نوید خان کے مشترکہ اہتمام سے چہارشنبہ 20؍فروری کوٹاؤن ہال بنگلورکے سامنے پلوامہ میں ہوئے شہید فوجی جوانوں کو موم بتیاں جلا کر ان کے حق میں عقیدت پیش کی گئی ۔