بھٹکل: دی نیو انگلش پی یو کالج کے زیر اہتما م طلبا کے لئے انوکھے ملن پروگرام کاانعقاد

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 17th July 2017, 7:28 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:17/جولائی (ایس اؤنیوز)دی نیو انگلش پی یو کالج میں نئے طورپر داخلہ لئے طلبا و طالبات کے لئے استقبالیہ اور پی یو دوم میں زائد نمبرات کے ساتھ کامیاب ہوئے طلبا کی تہنیت کے لئے سماگم نامی پروگرام کا کونٹوانی سرکاری ہائی اسکول کے صدر مدرس ایس ایم ہیگڈے نے افتتاح کیا ۔

افتتاح کے بعد انہوں نے طلبا سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ طلبا صرف نمبرات کو دھیان میں رکھ کر پڑھائی نہ کریں بلکہ زندگی جینے کا طریقہ اور فن سیکھنے کی کوشش کریں اور اسی مقصد کے لئے تعلیم حاصل کریں۔ انسان کے لئے بھلی اور سچی بات اور آپسی تال میل کی خصوصیات اشد ضروری ہونےکی بات کہی۔ پی یو دوم میں زائد مارکس حاصل کئے طلبا کو انعامات عطاکرنے کے ساتھ ساتھ انہیں ایک ایک درخت تحفہ دے کر ماحولیاتی فکر کو اجاگر کیا گیا ۔ بھٹکل ایجوکیشن ٹرسٹ کے صدر ڈاکٹر سریش نایک نے پروگرام کی صدارت کی ۔ کالج کے پرنسپال وریند ر شانبھاگ ، تعلیمی صلاح کار بی آر کے مورتی موجود تھے۔ پرتیکشااور دیگر طالبات نے پرارتھنا کی۔ میگھنا نے استقبال کیا۔ مہامائی نے نظامت کی۔ گورو نامی طالب علم نے شکریہ اداکیا۔ اس کے بعد طلبا کی طرف سے مختلف ثقافتی پروگرام پیش کئے گئے۔

ایک نظر اس پر بھی

کمٹہ بلاک کانگریس دفتر کا ضلعی صدر بھیمنانائک کے ہاتھوں افتتاح

مورور کے قریب اُڈپی ہوٹل سےمتصل کمٹہ بلاک کانگریس کے دفتر کا ضلع کانگریس کمیٹی صدر بھیمنا نائک نے افتتاح کرنے کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کی سہولت کے لئے دفتر کا افتتاح کیاگیا ہے عوام اپنی شکایات اور مسائل کو یہاں پیش کرکے حل حاصل کرسکتےہیں۔ عوامی مسائل کے سلسلے میں ہی اس ...

بھٹکل کے اتی کرم داروں کو اراضی دستاویزات میں تاخیر کرنے پرراما موگیر برہم؛ ہزاروں آتی کرم داروں کی طرف سے احتجاج کا انتباہ

بیرونی ملک سے ضلع کو آئے تبتی(ٹبیٹین)عوام کو رہائش کے لئے ضلعی انتطامیہ نے مواقع فراہم کیا ہے۔ ضلع میں ہی پیدا ہوکر پرورش پانے والوں کو زمینی دستاویز(حق پترا) دینے کے لئے افسران ہی اہم وجہ سبب ہونے کا تعلقہ اتی کرم دارر ہوراٹ سمیتی کے صدر راما موگیر نے سخت برہمی  کااظہارکیا۔

بھٹکل اسمبلی حلقے میں کھیلا جارہا ہے ایک نیا سیاسی کھیل! کون بنے گا کانگریسی اُمیدوار ؟

یہ کوئی ہنسی مذاق کی بات ہرگز نہیں ہے۔بھٹکل کی موجودہ جو صورتحال ہے اس میں ایک بڑا سیاسی گیم دکھائی دے رہاہے۔ کیونکہ 2018کے اسمبلی انتخابات کی تیاریوں میں لگی ہوئی سیاسی پارٹیاں اپنا امیدوار کون ہوگا اس پر توجہ دینے کے ساتھ ساتھ مخالف پارٹیوں سے کون امیدوار بننے پر ان کی جیت کے ...