بھٹکل : کونار گرام پنچایت کے صدر کا عہدہ پچھلے ایک ماہ سے یتیم : مالی دھاندلی کا الزام

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 14th February 2018, 9:10 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:14/ فروری (ایس اؤنیوز)بھٹکل تعلقہ کونار گرام پنچایت کے صدر اور نائب صدر کا عہدہ فی الحال یتیم ہے، صدر رادھا کرشنا اپادھیا نے 12جنوری کو اپنی مرضی سے استعفیٰ دیا تھا ، اس کے ایک ہفتہ کے اندر ہی نائب صدر کے عہدے پر فائز سومتی گونڈا نے بھی اسی راستے کے ذریعے باہر چلی گئیں۔ ایک مہینہ کا وقت گزرا ابھی تک نئے صدر و نائب صدر کے انتخاب کو لے کر کوئی کارروائی نہیں کی گئی ہے۔

بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر نے دونوں کا استعفیٰ قبول کرتے ہوئے آگے کی کارروائی کے لئے ڈی سی کو رپورٹ ارسال کی ہے۔ ابھی تک کوئی حکم نہیں ملاہے۔ اس دوران پنچایت کے کام اور کاموں کےمتعلق ضوابط کی خلاف ورزی کرتے ہوئے چک ادا کئے جانے کا مقامی عوام نے الزام عائد کیا ہے۔ اس کے برخلاف پنچایت ترقی افسر مہیش نے کہا ہے کہ یہ سب جھوٹے اور غیر ذمہ دارانہ الزامات ہیں ، عوام کا رخ بدلنے کی کوشش کی جارہی ہے، کوئی بھی آکر معائنہ کرنے کی بات کہی۔ ایسے شکوک و شبہات کو موقع نہ دیتے ہوئے الیکشن کمشنر، ڈی سی صاحب کو چاہئے کہ وہ ضروری جانچ پڑتال کرتے ہوئے نئے صدر ونائب صدر کے انتخاب کی کارروائی شروع کریں۔ پنچایت کے ترقی جات کاموں کی صحیح نگرانی کے لئے یہ ضروری ہونے کی بات مقامی عوام نے کہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی کیخلاف کانگریس کا جاری کردہ ٹیپ جعلی، کرناٹک کانگریس رکن اسمبلی کابیان، کانگریس پریشان 

بی جے پی کے خلاف کانگریس کے ایک جاری کردہ ٹیپ سے کانگریس کی ٹکٹ پر جیت درج کرنے والے یلاپور کے رکن اسمبلی شیورام ہیبار نے پارٹی کی جانب سے جاری کردہ ٹیپ کو جعلی قرار دیاہے۔ اور اس بات کو غلط قرار دیا ہے کہ بی جے پی کی طرف سے انہیں رقم کی پیشکش کی گئی تھی اور وزارتی عہدہ دینے کا بھی ...

فتح کے جشن میں پاکستان نواز نعرے بازی کا جھوٹا ویڈیو۔ مینگلور پولس اسٹیشن میں کانگریس کی طرف سے شکایت درج

بی جے پی کے وزیراعلیٰ ایڈی یورپا کے استعفیٰ دینے اور کانگریس جے ڈی ایس محاذ کے لئے حکومت سازی کی راہ ہموار ہونے کی خوشی میں منگلور و کے کانگریس دفتر میں جشن فتح منایاگیاتھا۔ لیکن اس تعلق سے ایک ویڈیو کلپ سوشیل میڈیا پر عام ہواتھا جس میں جشن کے دوران پاکستان نواز نعرے بازی ...

بھٹکل میں گائیوں سے بھری دو لاریوں پر حملے کے الزام میں گیارہ افراد گرفتار؛ کیاجانوروں کو بی جے پی لیڈر کے ڈیری فارم لےجایا جارہا تھا ؟

  تعلقہ کے مرڈیشور نیشنل ہائی وے پر کل رات ہوئی ہندو شدت پسند تنظیموں کے کارکنوں کی غنڈہ گردی کے واقعے کے بعد پولس متحرک ہوکر اب تک گیارہ لوگوں کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئی ہے، جبکہ دیگر حملہ آوروں کی تلاش جاری ہے۔