کرناٹکا بند کو کامیاب بنانے بھٹکل بی جے پی نے کی عوام سے اپیل؛ کیا کل پیر کو ہوگا کرناٹک بند ؟

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 27th May 2018, 4:54 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 27/مئی (ایس او نیوز) ایک طرف بی جے پی رہنما اور سابق وزیراعلیٰ یڈی یورپا نے کل پیر کو بند نہ ہونے کی بات کہی تھی اور کہا تھا کہ اگر کسانوں کی تنظیموں کی طرف سے بند منایا  جاتا ہے تو بی جے پی اُن تنظیموں کی مکمل حمایت کرے گی، مگر دوسری طرف بی جے پی کی جانب سے مختلف علاقوں میں پریس کانفرنس کا انعقاد کرتے ہوئے کل پیر کو کرناٹک بند کو  مکمل حمایت دینے عوام الناس سے اپیل کی جارہی ہے۔

اسی طرح کی ایک پریس کانفرنس بھٹکل میں بھی کی گئی ہے اور عوام الناس سے اپیل کی گئی ہے کہ کل پیر کو کرناٹک بند کو کامیاب بنانے عوام الناس بھرپور تعائون کریں۔

بھٹکل بی جے پی لیڈران نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ  کسانوں کا قرضہ معاف کرنے کا وعدہ کرنے والے کماراسوامی اب اقتدار حاصل کرنے کے بعد کسانوں کا قرضہ معاف کرنے والی بات سے مکرگئے ہیں۔ لیڈران کے مطابق کماراسوامی کو 24 گھنٹوں کی مہلت دی گئی تھی کہ وہ اس عرصہ میں کسانوں کا قرضہ معاف کرنے کا اعلان کریں، مگر ابھی تک وزیراعلیٰ کماراسوامی نے کسانوں کا قرضہ معاف کرنے کا اعلان نہیں کیا  ہے، جس کو دیکھتے ہوئے کل پیر کو کرناٹک بند منایا جائے گا اور حکومت کے خلاف سخت احتجاج  کیا جائے گا۔

بی جے پی نے کسانوں، دکانداروں اور عام لوگوں سے درخواست کی کہ وہ کل کرناٹکا بند کے موقع پر اپنی بھرپور حمایت دیں  اور کاروباری اداروں کو بند رکھیں۔ پریس کانفرنس میں بتایا گیا کہ پیر کو بند کے دوران سے بی جے پی سے منتخب ہونے والے بھٹکل کے رکن اسمبلی سُنیل نائک  کی قیادت میں  بھٹکل بی جے  پی آفس سے اسسٹنٹ کمشنر  دفتر تک احتجاجی ریلی نکالی جائے گی اور اے سی کو میمورنڈم پیش کیا جائے گا۔

پریس کانفرنس میں  بی جے پی کے ریاستی پریشد ممبر پرمیشور دیواڑیگا،  ک جنرل سکریٹری سبرایا دیواڑیگا، بھاسکر دائی منے، کرشنا نائک،  گوردھن نائک، موہن نائک، دنیش نائک، داس نائک تلگوڈ سمیت کافی لیڈران موجود تھے۔

اُدھر پڑوسی تعلقہ ہوناور، کمٹہ، انکولہ اور سداپور میں بھی بی جےپی کی طرف سے پریس کانفرنس کا انعقاد کرکے کل پیر کو کرناٹک بند کے دوران اپنے اپنے علاقوں میں احتجاجی بند منانے کا اعلان کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا سے چھٹی مرتبہ جیت درج کرنے والے اننت کمار ہیگڑے کی جیت کا فرق ریاست میں سب سے زیادہ؛ اسنوٹیکر کو سب سے زیادہ ووٹ بھٹکل میں حاصل ہوئے

پارلیمانی انتخابات میں شمالی کینرا کے بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے نے پوری ریاست کرناٹک میں سب سے زیادہ ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ہے۔ انہوں نے 479649 ووٹوں کی اکثریت سے کانگریس  جے ڈی ایس مشترکہ اُمیدور  آنند اسنوٹیکر  کو شکست دی ۔

ریاست میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے سیاسی لیڈروں کی ذلت بھری شکست

ریاست کرناٹکا میں انتخابی میدان میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے چند نامورسیاسی لیڈران جیسے ملیکا ارجن کھرگے، دیوے گوڈا، ویرپا موئیلی اورکے ایچ منی اَپا وغیرہ کو اس مرتبہ پارلیمانی انتخاب میں انتہائی ذلت آمیز شکست سے دوچار ہونا پڑا ہے۔ 

منگلورو:کلاس میں اسکارف پہننے پر سینٹ ایگنیس کالج نے طالبہ کو دیا ٹرانسفر سرٹفکیٹ۔طالبہ نے ظاہر کیاہائی کورٹ سے رجوع ہونے اور احتجاجی مظاہرے کاارادہ

کلاس روم میں اسکارف پہن کر حاضر رہنے کی پاداش میں منگلورومیں واقع سینٹ ایگنیس کالج نے پی یو سی سال دوم کی طالبہ فاطمہ فضیلا کو ٹرانسفر سرٹفکیٹ دیتے ہوئے کالج سے باہر کا راستہ دکھا دیا ہے۔

بھٹکل میں رمضان باکڑہ کی نیلامی؛ 40 باکڑوں کے لئے میونسپالٹی کو 1126 درخواستیں

رمضان کے آخری عشرہ کے لئے بھٹکل  میں لگنے والے رمضان باکڑہ کی آج میونسپالٹی کی جانب سے  نیلامی کی گئی۔ بتایا گیاہے کہ 40 باکڑوں کی نیلامی کے لئے  میونسپالٹی کے جملہ 1126 درخواست فارمس فروخت ہوئے تھے۔ 

مسلمانوں کے خلاف اشتعال انگیز بیانات دینے والوں کی بھاری اکثریت کے ساتھ جیت

مسلمانوں کے خلاف ہمیشہ اشتعال انگیز بیانات دینے والوں کو اس مرتبہ لوک سبھا انتخابات میں بھاری اکثریت کے ساتھ کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ اترکنڑا لوک سبھا حلقے کے بی جے پی اُمیدوار اننت کمار ہیگڈے جنہوں نے کہا تھا کہ جب تک اسلام رہے گا دہشت گردی رہے گی،اسی طرح انہوں نے  دستور کی ...

ایچ کے پاٹل نے راہل گاندھی کو بھیجا استعفیٰ

ریاست میں کانگریس کے تشہیری مہم کمیٹی کے صدر ایچ کے پاٹل نے لوک سبھا انتخابات میں ریاست میں پارٹی کی شکست کی اخلاقی ذمہ داری لیتے ہوئے اپنے عہدے سے استعفی دینے کی پیشکش کی ہے۔