بھٹکل انجمن کی تعلیمی خدمات سے ہی علاقائی جہالت کافور ہوئی : انجمن صدسالہ جشن پروگرام برائے مستورات

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th January 2019, 7:26 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل:11؍جنوری (ایس او نیوز) پچھلے سوبرسوں سے انجمن حامئی مسلمین بھٹکل تعلیمی میدان میں سرگرم عمل رہتے ہوئے  علوم و فنون کے دریا بہائےاور نہ صرف بھٹکل بلکہ پاس پڑوس علاقے کی عمومی جہالت کو کافور کرنے میں کامیاب  ہوئی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انجمن کی بانی میر معلمہ محترمہ رابعہ عثمان حسن جوباپو نےکیا۔

وہ یہاں انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے صدسالہ جشن کے تیسرے دن مستورات کے لئے مختص6جنوری بروز اتوار کو انجمن آباد میدان میں منعقدہ  جلسہ میں صدارتی خطاب کررہی تھیں۔ محترمہ نے  بالکل ابتداء میں لڑکیوں کی تعلیم کے لئے انجمن کی طرف سے  کی گئی کاوشوں کاتذکرہ کرتے ہوئے تعلیمی سہولیات بہم پہنچانے میں انجمن کے خدمات کی ستائش کی۔

مہمان خصوصی فاطمہ مظفر نے طالبات سے خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بحیثیت عورت حضرت خدیجہ ؓ نے اللہ کے نبی ﷺ کی جس طرح مدد کی بالکل اسی طرح ہم مسلمان عورتوں کو بھی آگے بڑھنا چاہئے۔ اسی طرح خدادا صلاحیت کی مالک، تعلیم سمیت کئی ایک میدانوں کی ماہر ام المومنین حضرت عائشہ ؓ جیسی عظیم خواتین ہماری ماڈل ہونی چاہئے۔ ہمیں ان کی طرح ہر میدان میں ترقی کرتے ہوئے انسانیت کی خدمت کرنی چاہئے۔ موصوفہ نے طالبات کو خاص کر تلقین کی کہ وہ صحابیاتؓ کی سیرت کا مطالعہ کریں  ان کی طرح اپنے آپ کی تربیت کرتے ہوئے ہماری آنے والی نسل کے لئے ایک نمونہ بننے کی بات کہی۔  انہوں نے کہاکہ تعلیم ایک چیلنج ہے،  طالبات کو صرف بھٹکل کی حد تک نہیں رہنا ہے بلکہ تعلیم حاصل کرنے کے بعد اس کا فائدہ پورے ملک کو ہونا چاہئے۔محترمہ نسرین ظہیرنے اعزازی مہمان کے طورپر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ایک تعلیم یافتہ لڑکی، طالبہ نہ صرف اپنی بلکہ والدین، خاندان سمیت پورے ملک کی ترقی میں تعاون کرتی ہے اس کے ساتھ ساتھ وہ اپنے بچوں کے لئے ایک نمونہ بن کر ان کی بہتر تربیت کرتے ہوئے ملک کا بہترین شہری بنا سکتی ہے۔

انجمن الومنی ،بھٹکل سرکاری اسپتال کی میڈیکل آفیسر ڈاکٹر سویتا کامت نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ خود میں اورمیرے خاندان کے کئی افراد اسی انجمن کے تعلیم یافتہ ہیں ، کئی ایک انجمن کے اساتذہ ہیں جنہوں نے مجھے بہتر تعلیم دے کر آج اس مقام پر لا کھڑا کیا ہے جس کے لئے میں انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کا شکریہ ادا کرتی ہوں۔ انہوں نے انجمن الومنی کو مستحکم کرتے ہوئے تعلیمی ادارے کو مزید ترقی کی راہوں پر لے جانے کی  درخواست کی۔

جلسہ کا آغاز تلاوت قرآن سے ہوا جس کا اردو، انگریزی اور کنڑا ترجمہ پیش کیا گیا۔ اس کے بعد طالبات نے  حمد، نعت  اور ترانۂ انجمن پیش کرتے ہوئے جلسے کو خوبصورتی بخشی۔ انجمن صدسالہ جشن کی کنونیر برائے مستورات محترمہ سیما قاسمجی نے انجمن کے وزن اور مشن پر روشنی ڈالی تو کوآرڈنیٹر ،ڈگری کالج پرنسپال رئیسہ شیخ نے انجمن حامئی مسلمین کی تعلیمی خدمات کو پیش کیا۔ انجمن کالج آف ایجوکیشن کی پرنسپال ڈاکٹر زکیہ زرزری نے استقبال کرتے ہوئے مہمانوں کا تعارف پیش کیا۔ لکچرر مینوٹی بھٹ نے شکریہ اداکیا۔ ڈائس پر انجمن پی یوکالج فارویمن ڈاکٹر فرزانہ محتشم سمیت کئی ایک موجود تھے۔

جلسے میں طویل تدریسی خدمات انجام دینےو الی معلمات اور رینک ہولڈر طالبات کی شال پوشی کرتے ہوئے تہنیت کی گئی ۔ اس کے بعد طالبات کی طرف بہت ہی دلچسپ ثقافتی پروگرام پیش کئے گئے۔جلسے میں ہزارو ں خواتین شریک تھیں۔  اس موقع پر انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کی طرف سے شرکاء کے لئے تواضع کا اہتمام کیاگیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل: عوامی مطالبات پر شرالی میں30 میٹر کے بجائے 45 میٹرپر ہائی وے تعمیر ہوگی، مرکزی وزیر ہیگڈے کی یقین دہانی

شرالی میں عوامی مطالبات کے مطابق ہی 45میٹر کی توسیع کے ساتھ قومی شاہراہ ،فلائی اوور کی تعمیر کے لئے ضروری اقدامات اٹھائے جانے کی مرکزی وزیر اننت کمارہیگڈے نے جانکاری دی۔

بھٹکل میں 24جنوری کو اتی کرم داروں کی اہم میٹنگ

فاریسٹ اتی کرم داروں کے مسائل ابھی جوں کے توں باقی رکھتے ہوئے کوئی حل نکل نہیں آنے پر 24جنوری کی صبح 30-10 بجے بھٹکل تعلقہ اتی کرم داروں کی میٹنگ انعقاد کئے جانے کی بھٹکل تعلقہ فاریسٹ اتی کرم ہوراٹ سمیتی کے صدر راما موگیر نے پریس ریلیز کے ذریعے جانکاری دی ہے۔

بھٹکل تعلقہ کے استاد ریاستی سطح کے برجستہ تقریری مقابلے میں اول

کرناٹکا حکومت تعلیمات عامہ کے زیرا ہتمام بنگلورو میں اساتذہ کے لئے منعقدہ ریاستی سطح کے برجستہ تقریری مقابلے میں تعلقہ کے سرکاری ہائر پرائمری اسکول کوڈسولو کے استاد پرمیشور نائک مرڈیشور اسٹیٹ لیول پر اول انعام کے حق دار بنے ہیں۔

ہم بے قصور تھے، مگر وہ ہماری زبان سمجھنے سے قاصر تھے، ایرانی حراست سے رہا ہونے کے بعد ماہی گیروں کا بھٹکل میں والہانہ استقبال

دبئی سمندر میں ماہی گیر ی کے دوران ایرانی پولیس کی تحویل میں رہنے کے بعد واپس لوٹنے والے کمٹہ اور بھٹکل کے ماہی گیروں کا کہنا ہے کہ ان کے لئے سب سے بڑا مسئلہ زبان کا تھا۔ ایرانی افسران ان کی زبان سمجھ نہیں رہے تھے ۔ اور ایرانی سمندری سرحد پار نہ کرنے کا یقین دلانے کے باوجود وہ لوگ ...

منڈگوڈ کی تبّتی کالونی میں فلمی انداز کا ڈاکہ۔ لاکھوں روپے نقد اورزیورات اڑا لے گئے لٹیرے

منڈگوڈ تعلقہ کی تبّتی کالونی میں سنیچر کے دن رات کے وقت فلمی انداز میں ڈاکہ ڈالا گیا جس میں گھر کے مالکان کو رسی سے باندھنے کے بعدلٹیروں نے گھر میں موجود 7لاکھ روپے نقد اور 4لاکھ روپے مالیت کے سونے کے زیورات پر ہاتھ صاف کردیا گیا۔

شیرور میں کار کی ٹکر سے بائک سوار کی موت

پڑوسی علاقہ شیرور نیشنل ہائی وے پر ایک کار کی ٹکر میں بائک سوار کی موقع پر ہی موت واقع ہوگئی جس کی شناخت محمد راشد ابن محمد مشتاق (21) کی حیثیت سے کی گئی ہے جو شیرور  بخاری کالونی کا رہنے والا تھا۔

ہائی کمان کہے تو وزارت چھوڑ نے کیلئے بھی تیار : ڈی کے شیو کمار

ریاست میں سیاسی گہما گہمی کا فی تیز ہونے لگی ہے ۔ ایک طرف جہاں کانگریس اور جنتادل( سکیولر) اپنی مخلوط حکومت کو بچانے میں لگے ہیں وہیں بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی ) نے آپریشن کنول کے ذریعہ دیگر پارٹیوں کے اراکین اسمبلی کو خریدکر برسر اقتدار آنے کے حربے جاری رکھے ہیں۔

ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار اسوامی کا مرکزی حکومت سے تقاضہ

شیموگہ، شرنگیری، منگلورو جیسے علاقوں سے گزرنے والی ملیناڈو کراولی ریلوے لائن منصوبے پر جلد عمل درآمد کے لئے ریاستی وزیر اعلیٰ کمار ا سوامی نے مرکزی حکومت سے تقاضہ کیا ہے۔