بی جے پی کی نیند حرام18؍پارٹیوں کی حمایت سے کانگریس کا بھارت بند

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th September 2018, 10:17 AM | ملکی خبریں |

پٹرول، ڈیزل اور اشیاء کی بڑھتی مہنگائی کے خلاف عوام شدید غصے میں، بھارت بند کی حمایت میں سماجی تنظیمیں بھی میدان میں
نئی دہلی،9؍ستمبر(ایس او نیوز؍ایجنسی)  پٹرول اور ڈیزل کی لگاتار بڑھ رہی قیمتوں کے خلاف 10 ستمبر یعنی پیر کے روز کانگریس نے جس ’بھارت بند‘ کا اعلان کیا ہے، اس کو تقریباً 18 اپوزیشن پارٹیوں کی جانب سے حمایتیں مل گئی ہیں۔ جس طرح سے سیاسی پارٹیاں اور سماجی تنظیمیں پورے ملک میں کانگریس کے ’بھارت بند‘ کی حمایت میں کھڑی ہوتی ہوئی نظر آ رہی ہیں اس سے بی جے پی کی نیندیں حرام ہو چکی ہیں۔ کانگریس نے بی جے پی کے خلاف زبردست مظاہرے اور اس کی عوام مخالف پالیسیوں کو منظر عام پر لانے کی پرزور تیاریاں بھی کر رہی ہے۔ اس کے علاوہ سوشل میڈیا پر بھی کانگریس لگاتار مودی حکومت پر حملہ آور ہے اور مہنگائی کے خلاف آواز اٹھا رہی ہے۔

کانگریس کے ٹوئٹر ہینڈل سے 7 ستمبر کو ایک ویڈیو بھی پوسٹ کی گئی ہے جس میں مہنگائی سے متعلق میڈیا میں چل رہی خبروں کے چھوٹے چھوٹے حصے ڈال کر یہ ظاہر کرنے کی کوشش گئی ہے کہ عوام کس حد تک پریشان ہے۔ کانگریسی لیڈر رندیپ سرجے والا نے ایک پریس کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئے کہاکہ پٹرول ڈیزل کی قیمتوں میں ریکارڈ توڑ بڑھوتری ہورہی ہے، کسانوں کی کمر ٹوٹ چکی ہے، لیکن حکومت کسی بھی قیمت پر بڑھی ایکسائز ڈیوٹی کم کرنے کو تیار نہیں ہے۔ انہوں نے کہاکہ بی جے پی کی مرکزی سرکار اور اس کی ریاستی حکومتیں اپنے ٹیکس میں ہی کمی کردے تو پٹرول کے دام آدھے کیے جاسکتے ہیں ،  لیکن حکومت کا ایسا کرنے کا کوئی ارادہ نہیں ہے جس کی وجہ سے عام آدمی پریشان ہورہا ہے۔ بہر حال، گزشتہ روز جب کانگریس نے ’بھارت بند‘ کا اعلان کیا تو ساتھ ہی اس نے اپوزیشن پارٹیوں، سماجی تنظیموں اور سماجی کارکنان سے گزارش کی تھی کہ وہ اس بند کی حمایت میں کھڑے ہوں، اور اس کا نتیجہ یہ ہے کہ آر جے ڈی، این سی پی اور سی پی آئی جیسی 18؍ پارٹیوں نے اس بند میں پورے زور و شور کے ساتھ کھڑے ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔ ملک کے مختلف حصوں سے کانگریس کو حمایت دیے جانے کی خبریں مل رہی ہیں جو اشارہ کر رہا ہے کہ پیر کی صبح 9 بجے سے دوپہر 3 بجے تک سارا کام ٹھپ رہے گا اور مودی حکومت کے خلاف ایک جم غفیر سڑکوں پر نظر آئے گی۔

بہار کے سابق نائب وزیر اعلیٰ اور آر جے ڈی لیڈر تیجسوی یادو نے کانگریس کے ’بھارت بند‘ کی حمایت میں کھڑتے ہوئے اسے ’مہاگٹھ بندھن‘ کی طرف سے بھرپور ساتھ دیے جانے کا اعلان کر دیا۔ انھوں نے اس سلسلے میں یہاں تک کہہ دیا کہ ’’10 ستمبر کو ہونے والے مہاگٹھ بندھن کی حمایت میں ہو رہے ’بھارت بند‘ میں ہم پرجوش انداز میں حصہ لے کر، سبھی معاون پارٹیوں کے ساتھ مل کر بند کو مکمل طور پر کامیاب بنائیں گے۔ ہم بہار کے باشندوں سے اپیل کرتے ہیں کہ غریب مخالف سرمایہ داروں کی حکومت کو اکھاڑ پھینکنے کے لیے بند کی پرزور حمایت کریں۔‘‘ وہیں معروف عالم دین و رکن پارلیمنٹ مولانا بد رالدین اجمل قاسمی کی سر براہی والی آل انڈیا یونائیٹیڈ ڈیموکریٹک فرنٹ نے کانگریس سمیت اپوزیشن پارٹیوں کی طرف سے 10 ،ستمبر کو پٹرول و ڈیژل وغیرہ کی بڑھتی ہوئی قیمت اور ملک کے موجودہ تشویشناک صورت حال کے خلاف “بھارت بند” کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔

مولانا اجمل نے کہا کہ ہماری پارٹی یو پی اے کا حصہ شروع سے ہی رہی ہے اسلئے متحدہ اپوزیشن کی آواز پر ہونے والے بھارت بند کی ہم حمایت کرتے ہیں اور ہمارے ورکرس اس ‘بند کو امن و شانتی کے ساتھ کامیاب کرنے میں اپنا رول ادا کریں گے۔ مولانا نے کہا کہ موجودہ بی جے پی کی قیادت والی حکومت میں عام لوگوں کا برا حال ہے کیونکہ اس کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے ملک میں بے شمار مسائل پیدا ہو گئے ہیں اور حکومت ان مسائل کو حل کرنے میں بری طرح ناکام ہو چکی ہے، اسلئے جمہوری طریقہ سے احتجاج کے ذریعہ حکومت کی غفلت اور غلطیوں کو اجاگر کرنا نیز عوام کو ملک کے موجودہ حالات سے واقف کرانا ہم سب کی ذمہ داری ہے تاکہ حکومے ہوش کے ناخن لے اور ملک کو بر بادی سے بچایا جا سکے۔

راشٹریہ جنتادل (آر جے ڈی) کے قومی نائب صدر رگھونش پرساد سنگھ نے کہاکہ نریندر مودی حکومت کے ہرمحاذ پر ناکام رہنے کی وجہ ملک میں مہنگائی اور بے روزگاری میں اضافہ ہوا ہے۔ جس کے خلاف ان کی پارٹی 10 ستمبر کو ہونے والے بھارت بند کو کامیاب بنانے میں پوری طاقت لگا دے گی۔ انہوں نے اپنے مخصوص انداز میں کہاکہ پٹرول کی قیمت تو اب سینکڑا بنانے کی جانب گامزن ہے۔اسی طرح روپے کی قیمت میں بھی گراوٹ جاری ہے۔ اور اب ایک ڈالر کی قیمت 72 روپے کے قریب ہو گئی ہے۔پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کی وجہ سے سبھی اشیاء ضروری کی قیمتیں آسمان چھو رہی ہیں۔ اور لوگوں کا جینا مشکل ہوگیاہے۔ مسٹر سنگھ نے کہاکہ پٹرول کی قیمت بڑھنے میں حکومت پوری طرح ذمہ دار ہے۔ انہوں نے کہاکہ حالیہ پٹرول کی کل قیمت کا 50 فیصد صرف حکومت کی جانب سے ٹیکس لگایاجاتاہے جس کا بوجھ لوگوں پر پڑرہاہے۔ نریندر مودی حکومت کے اقتدار میںآنے کے بعد پٹرولیم مصنوعات پر ایکسائز ڈیوٹی میں اضافہ کیا گیا تھا جس کا نتیجہ عوام بھگت رہی ہے۔ سابق مرکزی وزیر نے کہاکہ ان مسائل پر آر جے ڈی 10 ستمبر کو اپوزیشن کی جانب سے منعقد بھار ت بند کو کامیاب بناے کیلئے اپنی پوری طاقت صرف کر دے گا۔ انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہاکہ اعلیٰ طبقات کے ریزرویشن کی بات اصل مسئلے سے لوگوں کی توجہ ہٹانے کے لئے کی جارہی ہے۔ نوکریاں ہی نہیں ہیں تو ریزرویشن دینے کی بات کہاں سے آئی۔

ایک نظر اس پر بھی

اگلے لوک سبھا الیکشن میں سشما سوراج کا الیکشن نہ لڑنے کا اعلان

بھارتیہ جنتا پارٹی کی سینئر رہنما اور وزیر خارجہ سشما سوراج نے کہا ہے کہ وہ اگلا لوک سبھا الیکشن نہیں لڑیں گی۔ سشما سوراج نے اندور میں میڈیا کے ساتھ بات چیت کے دوران یہ اطلاع دی اور کہا کہ انہوں نے پارٹی کو اپنی منشا بتا دی ہے۔

گودھرا سانحہ؛ ملزمین کی سزاؤں کا تفصیلی خاکہ عدالت میں پیش؛ ۴؍ دسمبر کو ضمانت عرضداشت پر حتمی بحث متوقع، گلزار اعظمی کا بیان

سپریم کورٹ آف انڈیا میں آج گودھرا ٹرین سانحہ حادثہ میں سزا یافتہ ۲۹؍ مسلم نوجوانوں کی ضمانت پر رہائی کی عرضداشت پر سماعت عمل میںآئی جس کے دوران دو رکنی بینچ کے سامنے استغاثہ نے ملزمین کی سزاؤں کی تفصیلات کا خاکہ پیش کیا جس کے بعد عدالت نے معاملے کی سماعت ۴؍ دسمبر تک ملتوی کردی۔ ...

بی جے پی کے خلاف مل کر مقابلہ کرنے کی ضرورت، اپوزیشن کو ایک پلیٹ فارم پرلانے کے لئےنائیڈو۔ ممتا کی ملاقات

آندھرا پردیش کے وزیر اعلیٰ چندر ابابو نائیڈو نے آج ریاستی سیکریریٹ نو بنومیں وزیراعلیٰ ممتا بنرجی سے ملاقات کے بعد کہا ہے کہ وقت آگیا ہے کہ بی جے پی کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف اپوزیشن جماعتیں متحد ہوکرمقابلہ کریں اورملک کے مفادات اور جمہوریت کو بچانے کیلئے لوک سبھا ...

مٹھی بھر شر پسند عناصر ملک میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور قومی یکجہتی کی فضا کو خراب کرنا چاہتے ہیں : مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی

مرکزی جمعیت اہل حدیث( ہند) سے جاری ایک اخباری بیان کے مطابق مرکزی جمعیت اہلحدیث ہند کے امیر مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی نے امرتسر میں نرنکاری ست سنگ ڈیرہ پر ہوئے گرینیڈ حملہ جس میں تین افراد ہلاک اور پندرہ افراد زخمی ہوئے، کی پر زور مذمت کی ہے اور اسے بزدلانہ اورغیر انسانی ...

چھتیس گڑھ اسمبلی انتخابات : دوسرے مرحلہ کی 72 سیٹوں پر ووٹنگ شروع ، اجیت جوگی سمیت کئی سینئر لیڈران میدان میں

چھتیس گڑھ میں دوسرے مرحلہ میں 72 اسمبلی سیٹوں پر آج ووٹ ڈالےجارہے ہیں ۔ دوسرے مرحلے میں1079 امیدوار میدان میں ہیں۔ کانگریس اور بی جے پی نے سبھی 72 سیٹوں پر اپنے امیدوار اتارے ہیں۔