بنگلورو:صرف دس روپے کے معاملے پر جھگڑے میں تکنیکی ماہرنوجوان کی جان گئی !

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th September 2018, 9:45 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو 12؍ستمبر(ایس او نیوز) صرف دس روپے کے معاملے پر شروع ہونے والی تکرار میں ویپرو کمپنی میں تکنیکی ماہر (ٹیکی) کی خدمات انجام دینے والے ایک نوجوان کو اپنی جان سے ہاتھ دھونا پڑا۔

موصولہ رپورٹ کے مطابق ہلاک ہونے والے نوجوان کا نام گروپرشانت (31سال) تھا۔جو گِری نگر میں اپنے والدین اور بیوی کے ساتھ مقیم تھااور بیلاندور میں واقع ویپرو لمیٹیڈ میں ملازمت کررہا تھا۔ 6ستمبر کی شام کو اس نے اپنے گھر کے قریب واقع سائبر کیفے میں اپنے ریسیوم کا کلر پرنٹ آؤٹ نکالنے کے لئے گیا ہواتھا۔ سائبر کیفے میں موجود کارتھک نے کلر پرنٹ آؤٹ کے بجائے بلیک اینڈ وہائٹ پرنٹ آؤٹ نکالااور اس کے لئے دس روپے چارج مانگا۔ گر و پرشانت نے جب سوال اٹھایا کہ کلر پرنٹ آؤٹ کی قیمت جب دس روپے ہے تو بلیک اینڈ وہائٹ کی قیمت بھی دس روپے کیوں طلب کی جارہی ہے۔ کارتھک نے جواب میں گروپرشانت کو گالیاں دیں۔اس سے مشتعل ہوکر جب گروپرشانت نے کارتھک کا کالر پکڑ لیاتو کارتھک نے پاس میں پڑا ہوا اسکریو ڈرائیور اٹھایا اور گرو پرشانت کے بائیں کان کے اندر پوری طاقت سے گھسیڑ دیا۔ اس کے ساتھ ہی گروپرشانت کے کان سے خون جاری ہوا اور وہ بے ہوش ہوکر گرپڑا۔

دکان کے پاس موجود لوگوں نے گروپرشانت کو فوری طور پررادھا کرشنا اسپتال میں منتقل کیا۔معائنہ کرنے پر پتہ چلا کہ اسکریو ڈرائیور کی نوک سے گرو پرشانت کے دماغ کو نقصان پہنچا ہے اور وہ کوما میں چلاگیا ہے۔مزید علاج کے لئے اس کو بی جی ایس اسپتال میں منتقل کیاگیا مگر علاج کارگر نہ ہونے سے اس نے 11ستمبرکومنگل کے دن دم توڑ دیا۔ گری نگر پولیس نے قتل کا کیس درج کرنے کے بعد سائبر کیفے کے کارتھک کو گرفتار کرلیا ہے۔

اتفاق کی بات ہے کہ جس دن گروپرشانت کی موت واقع ہوئی ، اسی دن اس کی بیوی مامتا نے ایک بیٹے کو جنم دیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلورو میں گڈھوں کو بند کرنے میں بی بی ایم پی کی سست روی پر ہائی کورٹ برہم

شہر میں مسلسل بارش کی وجہ سے سڑکوں پر گڈھوں کی تعداد میں دن بدن اضافے پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے ریاستی ہائی کورٹ نے بی بی ایم پی کی طرف سے گڈھوں کو بند کرنے میں اپنائی جارہی سست روی پر برہمی کا اظہار کیا ہے

ریاستی لیجسلیٹیو کونسل کے لئے نصیر احمد اور وینو گوپال کی نامزدگی 

ریاستی لیجسلیٹیو کونسل سے خالی ہونے والی تین سیٹوں کو پر کرنے کے لئے 4؍ اکتوبر کو ہونے والے انتخاب کے لئے دو کانگریس امیدواروں نصیر احمد اور ایم سی وینو گوپال نے آج ریٹرننگ افسر کے دفتر میں اپنے کاغذات نامزدگی جمع کروائے۔