شری سنت پر لگی پابندی کو ہٹانے سے بورڈ کا انکار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 20th April 2017, 11:26 AM | اسپورٹس |

ممبئی،19؍اپریل(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) تیز گیند باز ایس شری سنت پر لگی تاحیات پابندی کو ہٹانے کی اپیل کو بی سی سی آئی نے مسترد کر دیا ہے۔ بورڈ کا کہنا ہے کہ وہ بدعنوانی کے تئیں صفر رواداری کی اپنی پالیسی سے کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گا۔ بی سی سی آئی نے شری سنت کو خط لکھ کر اپنے فیصلے کی اطلاع دی ہے۔ اس کرکٹر نے 2013 اسپاٹ فکسنگ کیس میں اپنے اوپر لگی پابندی ہٹانے کے لئے منتظمین کی کمیٹی (سی اواے) سے اپیل کی تھی جس کے بعد بی سی سی آئی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر راہل جوہری نے یہ خط بھیجا ہے۔بی سی سی آئی کے ایک سینئر افسر نے کہا کہ بی سی سی آئی نے معلومات دی ہے کہ اس کی تاحیات پابندی برقرار رہے گی اور اسے مسابقتی کرکٹ کے کسی فارمیٹ میں کھیلنے کی منظوری نہیں ہو گی۔ اس نے کیرل میں مقامی عدالت میں بھی اپیل کی ہے اور ہمارے وکیل کو جواب دیں گے۔

ذرائع نے کہا کہ بی سی سی آئی کی طرف سے خراب سرگرمیوں کے خلاف ہمیشہ صفر رواداری کی پالیسی اپنائی گئی ہے، کسی بھی عدالت نے سری سنت کو فکسنگ کے الزامات سے آزاد نہیں کیا۔ انڈرورلڈ کے ساتھ اس کے تعلقات کے الزامات ہی نچلی عدالت نے مسترد کئے ہیں۔ساتھ ہی یہ واضح کر دیا گیا ہے کہ برطانیہ میں کلب کرکٹ کھیلنے کے لئے شری سنت کو منظوری نہیں ملے گی اور بی سی سی آئی نے ان کے معاملے کو بند کر دیا ہے۔شری سنت کی عرضی کے جواب میں پیر (17 اپریل) کو بی سی سی آئی نے کیرالہ ہائی کورٹ کے سامنے حلف نامہ دائر کیا تھا جس میں انہوں نے دہلی کی عدالت کی طرف سے الزامات سے آزادکئے جانے کے باوجود بی سی سی آئی کی تاحیات پابندی نہیں ہٹانے کو چیلنج کیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی