بی بی ایم پی کی طرف سےبنگلورو میں ایک اور نیا ٹیکس ،دو فیصد ٹرانسپورٹ سیس لاگو کرنے کی تیاری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 27th August 2018, 11:47 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،27؍اگست(ایس او نیوز) برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی طرف سے شہر میں ہمہ قسم کے ٹیکس پہلے ہی وصول کئے جارہے ہیں۔ ان ٹیکسوں کے بعد اب عوام کے جیب کے وزن کو اور کم کرنے کے مقصد سے برہت بنگلور مہانگر پالیکے ٹرانسپورٹ سیس کے نام پر ایک نیا ٹیکس لاگو کرنے کی تیاری میں لگ گئی ہے۔ یہ ٹیکس بی بی ایم پی کے لئے بجلی اور پانی کے بلوں اور دیگر ذرائع سے وصول کیا جائے گا۔

بتایاجاتاہے کہ اس نئے ٹیکس کی شرح کو دو فیصلہ مقرر کیا گیا ہے بی بی ایم پی کونسل کی میٹنگ میں جلد ہی اسے منظوری ملنے کی امید ظاہر کی گئی ہے۔ حالانکہ 2014میں اس طرح کا ٹیکس وضع کرنے کی پہل کی گئی تھی، لیکن مخالفت کی وجہ سے اسے واپس لے لیا گیا۔اب 2018-19 میں اس ٹیکس کو دوبارہ واپس لانے کی کوشش کی جارہی ہے، اس میں وصول کی جانے والی رقم کا استعمال شہر کے ٹرانسپورٹ انفرااسٹرکچر کو بہتر بنانے کے لئے کیا جائے گا۔ بتایاجاتاہے کہ کل میئر کی صدارت میں منعقد بی بی ایم پی کونسل میٹنگ میں اس ٹیکس کے نفاد کا مرحلہ زیر بحث آئے گا۔ پہلے ہی ٹیکس اور مہنگائی کے بوجھ سے پریشانی شہریان بنگلور پر اس دو فیصد ٹرانسپورٹ سیس کے نفاذ کے لئے بی بی ایم پی کی پہل پر سخت اعتراضات کئے جارہے ہیں تاہم بی بی ایم پی کمشنر منجوناتھ پرساد نے اس نئے ٹیکس کے نفاذ کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اقدام مرکزی اور ریاستی حکومتوں کی ہدایت پر کیا جارہاہے۔ نائب وزیراعلیٰ اور بنگلور ضلع کے انچارج وزیر ڈاکٹر جی پرمیشور سے جب اس سلسلے میں بات چیت کی گئی تو انہوں نے واضح جواب دینے سے انکار کردیا اور کہاکہ بی بی ایم پی اس سلسلے میں کارروائی کرے گی۔ اس سلسلے میں بذات خود وہ اپنی رائے ظاہر نہیں کرسکیں گے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:آر ایس ایس پرچارک تربیتی کیمپ میں امیت شاہ کی شرکت۔ سرخ دہشت گردی ، رام مندر، سبریملا اور انتخابات پر ہوئی خاص بات چیت

ملک کی مختلف ریاستوں میں اسمبلی انتخابات کی مصروفیت کے باوجود بی جے پی کے صدر امیت شاہ نے منگلورو میں آر ایس ایس ’ پرچارکوں‘ کے لئے منعقدہ 6 روزہ تربیتی کیمپ کے اختتام سے ایک دن پہلے ’سنگھ نکیتن‘ میں پہنچ نے کے لئے وقت نکالااور تربیتی کیمپ کے شرکاء سے خطاب کیا۔

مشاعروں کو با مقصد بنا کر نفرت کے ماحول کو پیار اور محبت میں بدلا جاسکتا ہے : سید شفیع اللہ

مشاعرے اردو زبان اور ادب کی تہذیب کے ساتھ ساتھ امن اور اتحاد کو فروغ دینے کا ذریعہ بھی ہیں۔ ملک اور سماج کے موجودہ حالات کو بہتر بنانے کیلئے زیادہ سے زیادہ مشاعروں کا انعقاد کیا جائے۔ بنگلورو میں بزم شاہین کے کل ہند مشاعرے میں ان خیالات کا اظہار کیا گیا۔

ٹیپوجینتی منسوخ کرنے کی کوئی تجویز نہیں ہے جواہر لال نہروکی جنم دن تقریب سے وزیراعلیٰ کااظہار خیال

کسانوں کی طرف سے حاصل کردہ زرعی قرضہ معاف کئے جانے کے سلسلہ میں شکوک وشبہات کا شکار نہ ہوں۔ قرضہ وصولی کیلئے کسانو ں کوغیر ضروری طور پر اذیت دی گئی تو بینک منیجرکو بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے ۔