وجرادیہی سوامی تفتیشی افسر کے سامنے حاضری کے لئے پولیس کا نوٹس جاری

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th July 2017, 2:56 PM | ساحلی خبریں |

بنٹوال، 16؍جولائی (ایس او نیوز)آر ایس ایس رضاکار شرتھ مڈیوال کے قتل کے سلسلے میں اپنے پاس بہت ہی اہم اورخاص سراغ ہونے کا دعویٰ کرنے والے وجرا دیہی مٹھ کے سوامی راج شیکھرانندا کو تفتیشی افسر کے سامنے حاضر ہونے کے لئے پولیس نے نوٹس جاری کردیا ہے۔

پولیس کے نوٹس میں سوامی کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ 17جولائی کو مذکورہ قتل کے سلسلے میں تفتیش کرنے والے افیسر کے روبروبنٹوال پولیس اسٹیشن میں حاضر ہوں۔خیال رہے کہ ہندو رکھشنا سمیتی کے اعزازی صدر مذکورہ سوامی جی نے 14جولائی کو ایک پریس کانفرنس کے دوران اعلان کیاتھا کہ ان کے پاس شرتھ کے قتل کے سلسلے میں موجود سراغ وہ اسی صورت میں ظاہر کریں گے جبکہ اس کی تحقیقات این آئی اے کو سونپی جائے گی۔

یہ بات یاد رکھنے کی ہے کہ انڈین پینل کوڈ کے مطابق کسی جرم کے بارے میں سراغ چھپانا بھی قابل سزا جرم ہوتا ہے۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ سوامی راج شیکھرانندا کے پاس موجود ثبوتوں کی بنیا دپر شرتھ کے قاتل گرفتار ہوتے ہیں یا اپنے ہی بیان کے جال میں خودسوامی جی قانونی شکنجے میں پھنس جاتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کمٹہ بلاک کانگریس دفتر کا ضلعی صدر بھیمنانائک کے ہاتھوں افتتاح

مورور کے قریب اُڈپی ہوٹل سےمتصل کمٹہ بلاک کانگریس کے دفتر کا ضلع کانگریس کمیٹی صدر بھیمنا نائک نے افتتاح کرنے کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کی سہولت کے لئے دفتر کا افتتاح کیاگیا ہے عوام اپنی شکایات اور مسائل کو یہاں پیش کرکے حل حاصل کرسکتےہیں۔ عوامی مسائل کے سلسلے میں ہی اس ...

بھٹکل کے اتی کرم داروں کو اراضی دستاویزات میں تاخیر کرنے پرراما موگیر برہم؛ ہزاروں آتی کرم داروں کی طرف سے احتجاج کا انتباہ

بیرونی ملک سے ضلع کو آئے تبتی(ٹبیٹین)عوام کو رہائش کے لئے ضلعی انتطامیہ نے مواقع فراہم کیا ہے۔ ضلع میں ہی پیدا ہوکر پرورش پانے والوں کو زمینی دستاویز(حق پترا) دینے کے لئے افسران ہی اہم وجہ سبب ہونے کا تعلقہ اتی کرم دارر ہوراٹ سمیتی کے صدر راما موگیر نے سخت برہمی  کااظہارکیا۔

بھٹکل اسمبلی حلقے میں کھیلا جارہا ہے ایک نیا سیاسی کھیل! کون بنے گا کانگریسی اُمیدوار ؟

یہ کوئی ہنسی مذاق کی بات ہرگز نہیں ہے۔بھٹکل کی موجودہ جو صورتحال ہے اس میں ایک بڑا سیاسی گیم دکھائی دے رہاہے۔ کیونکہ 2018کے اسمبلی انتخابات کی تیاریوں میں لگی ہوئی سیاسی پارٹیاں اپنا امیدوار کون ہوگا اس پر توجہ دینے کے ساتھ ساتھ مخالف پارٹیوں سے کون امیدوار بننے پر ان کی جیت کے ...