بنگلہ دیش: راشن کی تقسیم کے دوران بد نظمی، 10 افراد جاں بحق، 51 سے زائد زخمی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th May 2018, 1:11 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ڈھاکہ،15 مئی ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) بنگلہ دیش میں رمضان المبارک کی مناسبت سے راشن کی تقسیم کے دوران بھگدڑ مچ گئی جس کے نتیجے میں 10 افراد جاں بحق اور 51 سے زائد زخمی ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق بنگلہ دیش کے شہر چٹاگانگ کے ایک نواحی گاؤں میں مخیر شخصیت کی جانب سے غربا کے درمیان راشن اور دیگر اشیاء تقسیم کیے جارہے تھے کہ اسی دوران بدنظمی دیکھنے میں آئی اور بھگدڑ مچنے سے دس افراد جاں بحق جبکہ پچاس سے زائد زخمی ہوگئے۔مقامی میڈیا کا کہنا ہے کہ یہ انتہائی افسوس ناک وقعہ اس وقت پیش آیا کہ جب مقدس مہینے رمضان کے آغاز سے قبل مقامی اسٹیل مل کا ایک مالک غریب دیہاتیوں میں راشن، کپڑے اور دیگر اشیاء تقسیم کر رہا تھا، اس حادثے میں کئی کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے۔واقعے سے متعلق پولیس حکام کا کہنا تھا کہ راشن اور دیگر اشیاء وصول کرنے میں خواتین سمیت تقریباً دس ہزار لوگ موجود تھے، جلد بازی اور اشیاء پہلے وصول کرنے کے چکر میں بھگدڑ مچکی جس کے باعث ہلاکتیں سامنے آئیں، تاہم زخمیوں کو مقامی اسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کینرا میں کچھ لمحوں کے لئے بادلوں کی گرج کے ساتھ بارش؛ کمٹہ میں بجلی گرنے سے ایک مکان منہدم؛ تین شدید زخمی

کل شام کو کچھ دیر کے لئے ہوئی بادلوں کی گرج کے درمیان زوردار بارش سے ساحلی کینرا میں گرمی کا زور ٹوٹ گیا ہے اور لوگوں نے گرمی سے نجات ملنے پر راحت کی سانس لی ہے، البتہ  کمٹہ تعلقہ کے  برگی دیہات میں بجلی گرنے سے ایک مکان  کو شدید نقصان پہنچا ہے اور دیواریں گرنے سے گھر کے اندر ...

کیرالا میں نیپاہ وائرس پر قابو پالیا گیا

کیرالا کی وزیر صحت کے کے شیلجہ نے آج کہا کہ ریاست میں نیپاہ وائرس پر قابو پالیا گیا ہے، جس نے 10 افراد کی جان لی ہے اور دہشت زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ کوزی کوڈ میڈیکل کالج ہاسپٹل میں 17 افراد زیرعلاج ہیں۔

مینگلوراسپتال میں ایڈمٹ بھٹکل کے ایک مریض کے لئے مالی تعائون کی درخواست

رکشہ چلا کر اپنا اور اپنے خاندان کو سنبھالنے والا ساجد احمد ابن شریف اس وقت مینگلور کے ایک پرائیویٹ اسپتال کے انتہائی نگہداشت والے کمرے میں  ایڈمٹ ہے، جہاں اُس کے جسم کا ایک حصہ ناکارہ ہوگیا ہے۔ ڈاکٹروں کی صلاح پر ایک آپریشن ہوچکا ہے، مزید علاج درکار ہے۔ آپریشن کا خرچ قریب ...