گوری لنکیش قتل معاملے میں سری رام سینا کارکن پروشورام گرفتار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th June 2018, 11:21 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 13؍جون ( ایس او نیوز) سینئر خاتون صحافی گوری لنکیش قتل کی جانچ کررہی خصوصی جانچ ٹیم نے اس قتل کے معاملے  میں ایک اور ملزم کو گرفتار کر لیا  ہے گرفتار  شدہ ملزم کی شناخت سنگی کا رہنے  والا سری رام سینا کارکن پروشورام (26) کے طور پر کی گئی ہے ملزم کو بنگلورو کی تھرڈ اے سی ایم ایم عدالت کے سامنے پیش کر کے خصوصی جانچ ٹیم نے 14 دنوں تک پولیس تحویل میں دینے کی گذارش کی ہے۔ منوہر یادو کی اطلاع پر ملزم پروشورام کو ایس اآئی ٹی ٹیم نے گرفتار کیا ہے۔ ملزم پروشورام اس قتل کے معاملے میں اہم رول ادا کئے جانے کی بات سامنے آئی ہے۔ اس سلسلہ میں پولیس مزید پوچھ گچھ کررہی ہے۔ عدالت میں پیشی کے بعد کورٹ نے ملزم کو 14دنوں تک ایس آئی ٹی ٹی کی تحویل میں  دے دیا ہے۔ شبہ ہے کہ پروشورام نے ہی گوری لنکیش پر گولیاں چلائی ہیں۔ اس کو مہاراشٹرسے گرفتار کیا گیا ، اس کاچہر مہرہ گوری کے قاتل کے اسکیچ سے ملتا جلتا ہے۔ گرفتاری کے وقت اس کے پا س کوئی  ہتھیار نہیں تھی۔ یہ بھی خبر کہ 10جون کو سنیل اگسر کو بھی گرفتار کیا تھا۔ ایس آئی ٹی کے چیف بی کے سنگھ نے کہا کہ ہماری تحقیقات میں یہ پتہ نہیں چلا کہ گولیاں کس نے چلائیں، گوری قتل معاملے میں  پروشورام واگھہ مرے چھٹا  گرفتار ملزم ہے۔ اس سے قبل کے ٹی نوین کمار عرف ہوٹے منجا ، امول کلے ، منوہر اچڈدے ، سجیت کمار عرف پروین اور امیت ڈگویکر کو گرفتار کیا گیا ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی وزارت سے مہیش کا استعفیٰ منظور

پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات میں کانگریس اور بی ایس پی کے درمیان مفاہمت کی کوشش ناکام ہوجانے کے نتیجے میں ریاستی کابینہ سے استعفیٰ دینے والے بی ایس پی کے وزیر این مہیش کو استعفیٰ واپس لینے کے لئے منانے میں جے ڈی ایس قیادت کی کوشش ناکام ہوجانے کے بعد آج وزیراعلیٰ نے مہیش کا ...

ای اسٹامپ پیپر اب آن لائن دستیاب ہوگا

کسی طرح کے دستاویزات تیار کرنے کے لئے درکار ای اسٹامپ کاغذ کی دستیابی اب تک ایک بہت بڑا مسئلہ ہوا کرتی تھی، 100 روپے کے اسٹامپ پیپر کے لئے بھی بھاری رقم ادا کرکے اسے حاصل کرنا پڑتا تھا،

دیوے گوڈا سدرامیا اور ڈی کے شیوکمار ایک ساتھ انتخابی مہم چلائیں گے

سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڈا نے طے کیا ہے کہ تین لوک سبھا اور دو اسمبلی حلقوں کے ضمنی انتخابات کے مرحلے میں وہ اپنے دو کٹر سیاسی حریفوں سابق وزیراعلیٰ سدرامیا اور ریاستی وزیر آبی وسائل ڈی کے شیوکمار کے ہمراہ ایک ساتھ انتخابی مہم میں حصہ لیں گے۔