بابری مسجد شہادت کیس، کھرگے نے مرکزی وزیر اوما بھارتی کا استعفیٰ طلب کیا

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 21st April 2017, 1:56 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:20/اپریل(ایس او نیوز) کانگریس پالیمانی پارٹی لیڈر ملیکارجن کھرگے نے بابری مسجد کی شہادت کے کیس میں مجرم قرار دی گئی، مرکزی وزیر برائے آبی وسائل اوما بھارتی کو مستعفی ہوجانے کا مشورہ دیا۔اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر کھرگے نے کہاکہ دوسری پارٹیوں پر جب بھی الزامات آئے تو بی جے پی متعلقہ لیڈروں کے استعفے پر ضد کرتی رہی اور ایوانوں کی کارروائی چلنے نہیں دی، بابری مسجد کی شہادت جیسے سنگین معاملے میں عدالت عظمیٰ نے او ما بھارتی کو دیگر ملزمین کے ساتھ برابر ذمہ دارقرار دیتے ہوئے ان کے خلاف مقدمہ چلانے کا فیصلہ کیا ہے، اس معاملے میں بی جے پی خاموش کیوں ہے؟۔ انہوں نے کہاکہ اس کیس میں دیگر ملزمین ایل کے اڈوانی یا مرلی منوہر جوشی فی الوقت کسی سرکاری عہدہ پر فائز نہیں ہیں، البتہ اوما بھارتی، مودی کابینہ کی ایک اہم وزیر ہوتے ہوئے اس کیس کا سامنا کریں گی، اخلاقی اصول اس بات کا تقاضہ کرتے ہیں کہ ایسے الزامات کا سامنا کرنے والی اوما بھارتی کو فوراً وزارت چھوڑ دینی چاہئے۔ انہوں نے کہاکہ اس معاملے میں وزیر اعظم مودی کی خاموشی بھی افسوسناک ہے۔ موجودہ صورتحال میں بابری مسجد کا معاملہ سامنے لانے اور اڈوانی جیسے بی جے پی لیڈرکو ملزم قرار دیتے ہوئے ان پر قانونی چارہ جوئی کرنے کی پہل کو مسٹر کھرگے نے ایک منظم سیاسی سازش کا حصہ قرار دیا اور کہاکہ اس مقدمہ کو تیزی سے آگے بڑھانے کے پیچھے وزیراعظم مودی کا مقصد بابری مسجد کی شہادت کے ساتھ انصاف کرنا قطعاً نہیں ہے، بلکہ اس کیس کے ذریعہ وہ اپنے سیاسی گرو اڈوانی کو اپنے راستے سے ہٹادینا چاہتے ہیں، تاکہ صدارتی انتخابات کی دوڑ میں اڈوانی شامل نہ ہوسکیں۔ یوبی گروپ کے سربراہ وجئے ملیا کی لندن میں گرفتاری اور چند ہی گھنٹوں میں رہائی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ مودی حکومت کی یہ سب سے بڑی کامیابی ہے کہ ملک کے بینکوں سے 17/ ہزار کروڑ روپیوں کا غبن کرکے فرار ہونے والے شخص کو چند ہی گھنٹوں میں رہا کردیاگیا۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ فوری طور پر حکومت برطانیہ سے رابطہ کرکے وجئے ملیا کو ہندوستان لایا جائے اور ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

نتن گڈکری 500کلومیٹر شاہراہ سے متعلق پروجیکٹوں کا سنگ بنیادرکھیں گے

سڑک ٹرانسپورٹ اور شاہراہوں، جہاز رانی، آبی وسائل، ندیوں کی ترقی اور گنگا کی صفائی کے وزیرنتن گڈکری آج کرناک کے شموگہ ضلع میں 873.5 کروڑ روپے مالیت کے 138.5 کلومیٹر شاہراہوں کے پروجیکٹوں سے متعلق سنگِ بنیادرکھا۔

کسان لیڈر پٹنیا چل بسے۔21؍فروری کو آخری رسومات بشمول وزیراعلیٰ کئی قائدین نے آخری دیدار کیا۔ کسان برادری کا ناقابل تلافی نقصان

کبڈی کا کھیل دیکھنے کے دوران دل پر شدید دورہ پڑنے سے کل فوت ہوجانے والے کسان لیڈر و رکن اسمبلی کے ایس پٹنیا کی آخری رسومات چہارشنبہ 21فروری کو ان کے آبائی گاؤں کیتناہلی میں ادا کی جائیں گی۔

22فروری ووٹر لسٹ میں نام داخل کرنے کی آخری تاریخ؛ کرناٹکا کے عوام توجہ دیں

اگلے دوایک مہینوں میں منعقد ہونے والے اسمبلی انتخابات میں حق رائے دہی استعمال کرنے کے لئے فہرست رائے دہندگان (ووٹرلسٹ) میں نام شامل کرنے کا سلسلہ جاری ہے۔ اس سلسلے میں الیکشن کمشنر  کی طرف سے جاری بیان کے مطابق 22فروری نام درج کروانے کی آخری تاریخ ہوگی۔

بنگلور میں 12 مارچ سے ہوگی ،کے اے ایس اور آئی اے ایس امتحانات کیلئے مفت کوچنگ؛ مسلمانوں کے لئے سنہرا موقع

اگلے ماہ 12 مارچ سے طہ ایجوکیشنل ٹرسٹ بنگلور کی جانب سے کے اے ایس اور آئی اے ایس امتحانات میں حصہ لینے والوں کے  لئے  مفت کوچنگ کا انتظام کیا گیا ہے، جس میں شریک ہوکر امتحانات میں حصہ لینے والے خواہش مند طلبہ و طالبات  فائدہ اُٹھاسکتے ہیں۔

بنگلور میں جے ڈی ایس کا شاندار اجلاس؛ مایاوتی کی شرکت؛ کہا مودی حکومت اب آخری سانس لے رہی ہے؛ کمارسوامی نے جاری کی 126 اُمیدواروں کی پہلی فہرست

شہر کے یلہنکا میں جنتادل (ایس) کا  شاندار جلسہ کمارا پرو یاترا کنونشن کے نام پر سنیچر شام کو منعقد ہوا ، جس میں ریاست کے مختلف گائوں اور دیہاتوں سے کثیر تعداد میں لوگوں نے   شرکت کی۔ اس موقع پر سابق وزیراعلیٰ  کماراسوامی نے  ریاست کرناٹک میں آئندہ دو  تین ماہ بعد ہونے والے ...

سدارامیا اور دیش پانڈے کے ہاتھوں ای وہیکلس کاآغاز فضائی و صوتی آلودگی پر قابو پانے بجلی سے چلنے والی سواریاں ناگزیر

ایوان سیاست ودھان سودھا کے اطراف ہمیشہ سیاسی ہماہمی اور قائدین کی گہما گہمی رہتی ہے۔ لیکن ہفتہ کے دن یہاں کا منظر کچھ بدلا ہوا تھا۔ ودھان سودھا کے سامنے آج نیلی رنگ کی کاروں، دوپہیہ گاڑیوں اور آٹو رکشاؤں کی قطاریں دیکھی گئیں ۔