صحافیوں پر بڑھتے حملوں پرسخت تشویش؛ نئی دہلی میں منعقدہ دو روزہ کانفرنس میں تیس سے زائدتنظیموں کی شرکت

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 23rd September 2018, 12:10 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی22ستمبر(آئی این ایس انڈیا؍ ایس او نیوز) صحافت اور انسانی حقوق سے وابستہ 30سے زائد تنظیموں نے مودی حکومت کے دور اقتدار میں صحافیوں پر بڑھتے ہوئے حملوں اور ان کے قتل کے واقعات پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اور اسے جمہوریت اور اظہار کی آزادی کے لئے خطرناک قرار دیا ہے۔

کمیٹی اگینسٹ اسالٹ آن جرنلسٹ اور پریس کلب آف انڈیا کی طرف سے سنیچر کو یہاں منعقدہ دو روزہ کانفرنس میں اس تشویش کا اظہار کیا گیا۔

کانفرنس میں مقررین نے کہاکہ صحافت جمہوریت کا چوتھا ستون ہے لیکن حکومت اپنے خلاف لکھنے والے صحافیوں کو نہ صرف دھمکا رہی ہے بلکہ جھوٹے معاملات میں پھنسا بھی رہی ہے اور انکا قتل کیا جارہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

تلنگانہ میں 19فروری کو کابینہ کی توسیع

تلنگانہ کے وزیر اعلی کے چندرشیکھر راؤ دوبارہ اقتدار میں آنے کے دو ماہ کے بعد اپنی کابینہ میں توسیع کرنے کی تیاری میں ہے اور ساری بحث اب اس بات پر ٹک گئی ہے کہ اس میں کن لوگوں کو شامل کیا جائے گا۔

بھٹکل میں مجلس اصلاح وتنظیم کی جانب سے پلوامہ دہشت گردانہ حملہ کی کڑی مذمت: تحصیلدار کی معرفت وزیراعظم کو میمورنڈم ؛کڑی کارروائی کا مطالبہ

کشمیر کے پلوامہ میں دہشت گردانہ حملے کی کڑی مذمت کرتے ہوئے مجلس اصلاح وتنظیم بھٹکل نے تحصیلدار کی معرفت وزیر اعظم نریندر مودی کو اپیل سونپتے ہوئے دہشت گردی کا کرار ا جواب دینے کا مطالبہ کیا۔

بھٹکل: شرالی میں ہائی وے کی توسیع کے دوران ہنگامہ؛ پولس کی لی گئی مدد؛ عوامی مخالفت نظرانداز؛ 30میٹرکی ہی توسیع کے ساتھ کام شروع

شرالی میں قومی شاہراہ کی تعمیر 45میٹر کی توسیع کے ساتھ ہی کی جائے ، کسی حال میں بھی توسیع کو 30میٹر تک کم کرنے نہیں دیں گے۔  مقامی  عوام کی سخت مخالفت کے باوجود ضلع انتطامیہ بدھ کو 30 میٹر کی توسیع کے ساتھ شاہراہ تعمیری کام کی شروعات کی۔