ایران میں فوجی پریڈ پر حملہ، آٹھ فوجی اہلکار ہلاک مبینہ ’تکفیری گروہ ‘ کے ملوث ہونے کا شبہ

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 22nd September 2018, 11:53 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

تہران 22ستمبر ( آئی این ایس انڈیا؍ ایس او نیوز)  ایران کے  جنوب مغربی شہرا ہواز میں ایک فوجی پریڈ کے دوران نامعلوم افراد کی فائرنگ سے کم از کم آٹھ فوجی اہلکار ہلاک اور کئی افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق سالانہ پریڈ 1980سے 1988تک ہونے والی ایران عراق جنگ کے آغاز کی سالگرہ کی مناسبت سے منعقد  کی گئی تھی جس کے دوران نامعلوم افراد نے حملہ کیا۔ سرکاری ٹی وی کے مطابق حملہ آوروں نے اس چبوترے کو نشانہ بنانے کی کوشش کی جہاں اعلیٰ حکام فوجی پریڈ کے معائنے کے لیے موجود تھے۔غیر سرکاری خبر رساں ادارے 'مہر' کے مطابق حملہ آور فائرنگ کے بعد موقع سے فرار ہوگئے جن کا تعاقب میں آنے والے سکیورٹی اہلکاروں کے ساتھ بعض مقامات پر فائرنگ کا تبادلہ بھی ہوا۔

حکام نے تاحال ہلاک اور زخمی ہونے والوں کی درست تعداد نہیں بتائی ہے لیکن عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ جائے واقعہ سے کم از کم دو درجن زخمیوں کو اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ تاحال کسی تنظیم نے حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے لیکن ایران کے سرکاری ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ حملے میں مبینہ تکفیری عناصر ملوث ہیں۔ واضح ہو کہ ایران کی حکومت’ تکفیریcase دہشت گرد‘کی اصطلاح ملک میں سرگرم مبینہ’ سنی شدت پسندوں‘ کے لیے استعمال کرتی ہے۔واضح رہے کہ اہواز شہر عراق کی سرحد سے متصل ایرانی صوبے خوزستان کا دارالحکومت ہے جہاں عربوں کی بڑی تعداد آباد ہے۔ اہواز ماضی میں ایران کی عرب اقلیت کے مظاہروں کا مرکز بھی رہا ہے۔ایرانی فوج 'پاسدارانِ انقلاب' کے ایک ترجمان نے خبر رساں ادارے 'اسنا' کے ساتھ گفتگو میں حملے کا الزام عرب قوم پرستوں پر عائد کیا ہے جنہیں ترجمان کے بقول سعودی عرب کی حمایت حاصل ہے۔ایران عراق جنگ کے آغاز کی سالگرہ کی مناسبت سے ہفتے کو دارالحکومت تہران سمیت کئی اور شہروں میں بھی فوجی پریڈز منعقد کی جارہی ہیں۔ اہواز میں پیش آنے والے واقعے کے بعد ملک بھر میں ہونے والی تقریبات کی سکیورٹی سخت کردی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

امریکی رپورٹ کا خلاصہ؛ ہندوستان کی حکومت مسلم مخالف ! مسلم اداروں کے خلاف اقدامات؛ بی جے پی قائدین کی اشتعال انگیز تقاریر کا سلسلہ جاری؛ شہروں کے مسلم نام بدلنے کا بھی حوالہ

مذہبی آزادی سے متعلق  امریکہ کے اسٹیٹ  ڈپارٹمنٹ کی تازہ رپورٹ میں ہندوستان میں ہجومی تشدد، تبدیلی مذہب کی صورتحال، اقلیتوں کے قانونی موقف اور سرکاری پالیسیوں کا احاطہ کیا گیا  ہے۔ رپورٹ میں واضح کیا گیا ہے کہ  ہندوستان میں سال 2018 کے دوران ہندو انتہا پسند تنظیموں کی جانب سے ...

امریکہ اور ایران کے درمیان حالات انتہائی دھماکہ خیز ،خطے میں جنگ کا خطرہ،ہندوستان سمیت مختلف ممالک نے کیاہرمز سے پروازوں کا ر استہ تبدیل، سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس

گزشتہ چنددنوں سے ایران اور امریکہ کے درمیان جاری کشیدگی میں اس وقت مزید شدت آگئی جب ایران نے امریکہ کے ڈرون کو مارگرایا۔

امریکہ کی طرف سے ہندوستان کو دھمکی روس سے ڈیل کی صورت میں دفاعی امداد محدود ہوجائے گی

امریکہ کی وزارت خارجہ کی افسر ایلس جی ویلس نے جمعہ کو کہا کہ ان کا ملک ہندوستان کی دفاعی ضروریات پورا کرنے کے لئے تیار ہے، لیکن روسی ایس-400 نظام اس میں رکاوٹ بن رہا ہے- ہندوستان-روس ڈیل سے امریکہ کا تعاون محدود کردیا جائے گا -

جانوروں پر حکومت کی مہربانی۔اب دوپہر 12تا3بجے کے دوران رہے گی کھیتی باڑی کی مشقت پر پابندی

کھیتی باڑی اور دیگر محنت و مشقت کے کاموں میں استعمال ہونے والے مویشیوں پر ریاستی حکومت نے بڑے مہربانی دکھاتے ہوئے ایک سرکیولر جاری کیا ہے کہ گرمی کے موسم میں تپتی دھوپ کے دوران دوپہر 12سے 3بجے تک کسان اپنے جانوروں کو کھیت جوتنے یا دوسرے مشقت کے کاموں میں استعمال نہیں کرسکیں گے۔

دُبئی میں 18 برس سے کم عمر بچوں کی ویزہ مفت؛ 15 جولائی سے 15 ستمبر تک رہے گی سہولیت

 متحدہ عرب امارات میں سیاحتی سیزن کے دوران غیر مُلکی سیاحوں کے 18 برس سے کم عمر بچوں کے لیے مفت ویزے کی سہولت فراہم کی جا رہی ہے۔ یہ اعلان فیڈرل اتھارٹی فار آئیڈینٹٹی اینڈ سٹیزن شپ کی جانب سے کیا گیا ہے۔ دُبئی میں ہر سال سیاحتی سیزن کا آغاز 15 جولائی سے ہوتا ہے جو 15 ستمبر تک جاری ...