پیسر امیش یادو کاخلاصہ، 20 کی عمر تک پتہ نہیں تھا کیا ہوتا ہے لیدر بال

Source: S.O. News Service | Published on 11th August 2017, 7:10 PM | ملکی خبریں | اسپورٹس |

نئی دہلی،11اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ٹیم انڈیا کے تیز گیندباز امیش یادو نے بین الاقوامی کرکٹ میں قدم رکھنے کے سات سال بعد بڑا انکشاف کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ جب 20 سال کی عمر میں فرسٹ کلاس کرکٹ میں انہوں نے آغاز کیا تھا، تو انہیں سرخ رنگ کی ایس جی ٹیسٹ گیند سے کھیلنے کا اندازہ نہیں تھا۔اب تک 33 ٹیسٹ اور 70 ون ڈے کھیل چکے امیش یادو نے کہا کہ اپنے بچپن سے کرکٹ کھیل رہے ہو تو آپ کو کھیل کے بارے میں کافی چیزیں پتہ چل جاتی ہیں لیکن اگر آپ کو اچانک کچھ مختلف چیز کرنے کو کہا جائے، تو آپ کے لئے مشکل ہو سکتا ہے۔ٹیسٹ میں 92 اور ون ڈے میں 98 وکٹ حاصل کر چکے اس پیسر نے کہا کہ میں نے ٹینس اور ربڑ کی گیند سے کھیلنا شروع کیا اور جب تک میں 20 سال کا نہیں ہو گیا، اس وقت تک میں نے کرکٹ میں عام طور پر استعمال کی جانی والی گیند نہیں پکڑی تھی۔ ایک تیز بالر کے لئے یہ کافی دیر سے ہوا تھا تو جب ایسا ہوا، تو مجھے نہیں پتہ تھا کہ اس گیند سے کیا کروں۔ اور اس کے ساتھ بولنگ کرنے کو سمجھنے میں ان کے قریب دو سال لگ گئے۔انہوں نے کہا کہ میں نہیں جانتا تھا کہ گیند کو کہاں پچ کروں، پہلے دو سالوں میں میں یہ نہیں سمجھ سکا کہ کب گیند باہر جائے گی اور کب اس کے اندر یا پھر براہ راست جائے گی۔ گزشتہ 12 ماہ کے اس کی کارکردگی سے امیش نے ان ناقدین کو خاموش کر دیا ہے جو ان کی لائن اور لینتھ کو لے کر کئی بار تنقید کرتے رہے تھے۔ اتنی تنقید کے باوجود اس 29 سالہ بولر نے اپنی رفتار سے سمجھوتہ نہیں کیا۔انہوں نے کہا کہ میں ہمیشہ تیز گیند بازی کرنا چاہتا تھا، جیسے جیسے میں بڑا ہوا، میں نے تیز گیند بازی کے بارے میں کافی چیزیں سیکھی، میں جس جگہ سے آتا ہوں، وہ تیز گیند بازوں کو پیدا کرنے کے لئے مشہور نہیں ہے۔یادو نے کہا کہ میں جانتا تھا کہ ایسے کئی بولر تھے جو 130-135 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے بولنگ کرتے تھے، میں جانتا تھا کہ اگر آپ ہر گیند 140 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے کرو گے، تبھی آپ کو کچھ مختلف ہو سکتے ہو اور تبھی آپ کو موقع مل سکتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی کی نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کا اثر گجرات انتخابات کے نتائج میں نظر آئے گا: اکھلیش یادو 

سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے کہا ہے کہ نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی وجہ سے تاجروں پر کافی برا اثر پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کسان مخالف اور تاجر مخالف پالیسیوں کی وجہ سے بی جے پی کا گراف نیچے آتا جا رہا ہے۔

گجرات میں سات انتخابات میں دو بار ووٹنگ کے فیصدی میں کمی، دونوں بار بی جے پی کو نقصان تو کانگریس کا فائدہ 

گجرات میں ہفتہ کو پہلے مرحلہ میں19ضلعوں میں کی89نشستوں پرتقریباً 68فیصدی ووٹنگ ہوئی اس بار 2012کے اسمبلی انتخابات سے تقریباً 3فیصدی ووٹنگ ہوئی۔ 2012 میں پہلے مرحلے میں19 میں سے15 اضلاع میں ووٹنگ ہوئی تھی۔

خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ ہوئی چھیڑ خانی کو بتایا انتہائی شرمناک فعل 

قومی خواتین کمیشن نے زائرہ وسیم کے ساتھ شرمناک حادثہ قرار دیا ہے ۔زائرہ وسیم نے سوشل میڈیا کے ذریعے وستارا ایئر لائنزکی فلائٹ سے دہلی سے ممبئی جانے والی پرواز میں جس طرح ہراساں کیے جانے کی بات کہی ہے وہ بھارتی تہذیب و ثقافت کے شرم کی بات ہے ۔

ہندوستان نے مسلسل نویں سیریز جیتی، عالمی ریکارڈ کی برابری کی

سری لنکا نے دھننجے ڈيسلوا (119 ریٹائرڈ ہرٹ) کی ذمہ دارانہ اننگز کی بدولت ہندوستان کے خلاف دوسرا اور آخری کرکٹ ٹسٹ بدھ کو یہاں ڈرا کرا لیا جبکہ دنیا کی نمبر ایک ٹیم ہندوستان نے مسلسل نویں ٹسٹ سیریز جیتنے کے ساتھ عالمی ریکارڈ کی برابری کر لی۔

ایڈیلیڈ میں آسٹریلیا 120رنز سے فاتح، ایشز سیریز میں دو صفر کی برتری

دوسری اننگز میں جیت کے لیے انگلینڈ کو 354رنز کا ہدف درکار تھا تاہم جو روٹ کی ٹیم صرف 233رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔ آسٹریلیا کی جانب سے مچل اسٹارک نے پانچ، ہیزل وڈ اور لیون نے دو دو جبکہ پال کمنگز نے ایک وکٹ حاصل کی۔

ہندوستان نے دوسرے ٹیسٹ میں سری لنکا کو ایک اننگ اور 239 رنوں سے شکست دی

اسپنروں اور تیز گیندبازوں کے شاندار کھیل کی بدولت ہندستان نے سری لنکا کی ٹیم کو دوسرے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن ہی لنچ سے تھوڑی دیر بعد 166 رن کے معمولی اسکور پر آؤٹ کرکے میچ ایک باری اور 239 رنوں سے جیت لیا

ہندوستان اور سری لنکا کے درمیان پہلا ٹیسٹ میچ ڈرا

ہندوستان اور سری لنکا کے درمیان تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز کا پہلا ٹیسٹ بغیر کسی نتیجے کے اختتام پذیر ہوگیا، آخری روز سری لنکا کی ٹیم 231 رنز کے تعاقب میں سات وکٹوں کے نقصان پر 75 رنز بنا سکی اور کم روشنی کی وجہ سے میچ مقررہ وقت سے پہلے ختم کر دیا گیا جس کی بدولت سری لنکا یقینی شکست سے ...