آسٹریلیا نے سڈنی میں انگلینڈ کو اننگز اور123رنز سے شکست دےکر ایشنز سریز 4-0سے جیت لی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th January 2018, 12:03 PM | اسپورٹس |

سڈنی،8؍جنوری (ایس او نیوز) آسٹریلیا نے انگلینڈ کی مزاحمت کو بے رحمی کے ساتھ پسپا کرتے ہوئے سڈنی میں آج کھیلے گئے پانچویںایشنز  ٹسٹ میچ کے آخری دن ایک اننگز سے فتح حاصل کرلی۔ اس طرحایشنز سیریز بھی 4-0 سے جیت لی۔ پریشان حال مہمان ٹیم کے چار کھلاڑی لنچ کے بعد آؤٹ ہوگئے۔ پیٹ میں در سے متاثر کپتان بیٹنگ نہیں کرسکے۔ آسٹریلیا کے کپتان اسٹیو اسمتھ نے کہا کہ ’’حالیہ دو ماہ بہت اچھے رہے۔ بالخصوص ان دو ماہ کے دوران ہم نے جو کھیلا ہے وہ بہت خوب رہا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ’’ان کلیدی لمحات میں ہم سبقت پانے اور کامیاب ہونے کے قابل رہے اور انہیں (حریفوں) کو کھیل میں دوبارہ واپس نہیں ہونے دیا اور ایسا کرنا ضروری تھا‘‘۔ سڈنی میں پیٹ کیونس نے آسٹریلیائی بولنگ کی قیادت کی اور 34 رن کے بدلے چار وکٹس لیکر مین آف دی میچ قرار دیئے گئے۔ کیومنس اس سیریز میں سب سے زیادہ 23 وکٹس لئے ہیں۔ کیومنس نے خوشی کے ساتھ کہا ک ’’گھریلو میدان پر پانچ ٹسٹ میچوں اور سیریز کے اختتام کے بعد مجھے مزید مانگنے کی ضرورت نہیں تھی‘‘۔ انگلینڈ کی ٹیم 881 اوورس میں 180 رن پر آل آؤٹ ہوگئی۔ آسٹریلیا کو ایک اننگز اور 123 رن سے فتح حاصل ہوگئی۔ انگلینڈ کو برسبین، ایڈیلیڈ اور پرتھ میں شکست کے بعد آج پھر ناکامی ہوئی ۔ ملبورن میں کھلا گیا چوتھا ٹسٹ ڈرا ہوگیا تھا۔ انگلینڈ کے کپتان لنچ کے بعد بیٹنگ نہیں کرسکے کیونکہ کل رات پیٹ کے درد کے بعد وہ ہنوز بے چینی محسوس کررہے تھے۔ انگلینڈ کے نائب کپتان جمی اینڈرسن نے میچ کے بعد اخباری نمائندوں سے کہا کہ ’’وہ (جوروٹ) محوخواب ہیں۔گیس کے سبب ان کے پیٹ میں درد تھا اور رات بھر وہ ٹھیک نہیں رہے۔ گذشتہ روز کی گرمی بھی ان کی زیادہ مدد نہیں کرسکی۔ وہ صحتیاب ہونے کی کوشش کے ساتھ ڈریسنگ روم میں سورہے ہیں‘‘۔ جمی اینڈرسن نے مزید کہا کہ ’’دیانتداری کے ساتھ ہمیں یہ کہنا ہوگا کہ ہر کھیل (میچ) کے کلیدی لمحات میں ہم اچھا نہیں کھیل پائے۔ کسی حد تک ہم کھیلوں میں رہے لیکن کسی بھی موقع کا فائدہ نہیں اٹھا سکے۔ اس سیریز میں آسٹریلیا نے بہترین کھیل کا مظاہرہ کیا‘‘۔

ایک نظر اس پر بھی

پہلے ٹیسٹ میں   جنوبی افریقہ نے ہندوستان کو 72رنز سے شکست دی؛ سریز میں1-0کی سبقت

 جنوبی افریقہ نے اپنی فاسٹ گیندبازی سے ہندوستان کو شکست دینے کے بعد دوسرے ٹیسٹ میچ کے لیے ڈیل اسٹین کی عدم دستیابی کے باعث ٹیم میں مزید دو فاسٹ بولروں دواننے الیور اور 21سالہ لونگی نگیڈی کو کو شامل کر لیا۔

کولن منرو کی شاندار سنچری کی بدولت نیوزی لینڈ نے ویسٹ انڈیز کو 119 رنز سے شکست دے کر سیریز دو صفر سے جیت لی

کولن منرو کی شاندار سنچری اور پھر بولرز کی نپی تلی بولنگ کی بدولت نیوزی لینڈ نےویسٹ انڈیز کو سیریز کے تیسرے اور آخری ٹی 20 میچ میں 119 رنز سے شکست دے کر سیریز دو صفر سے جیت لی ہے۔