آخر ارجن رنتتگا نے 2011ورلڈ کپ فائنل کو کیوں بتایا فکس ؟

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th July 2017, 3:40 PM | اسپورٹس |

نئی دہلی،16؍جولائی (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) سری لنکا کے سابق کپتان ارجن رنتنگا نے دو دن پہلے 2011ورلڈ کپ فائنل کے فکس ہونے کی بات کہی تھی، لیکن بڑا سوال یہ ہے کہ رنتنگا سری لنکا کی اس شکست پر 6سال بعد بیان کیوں دے رہے ہیں؟اگر انہیں اس فائنل کے فکس ہونے کا شک تھا، تو انہوں نے اب تک اس کی جانچ کروانے کی کوشش کیوں نہیں کی۔اس کے پیچھے جو وجہ ہے ،وہ ہم آپ کو بتاتے ہیں کہ آخر رنتنگا نے اتنے دن بعد یہ مسئلہ کیوں اٹھایا ہے؟دراصل یہ دو کپتانوں کے آپس کی جنگ ہے ،جو اب کھل کر سامنے آ رہی ہے۔دراصل ،سری لنکا کی زمبابوے کے ہاتھوں ون ڈے میچوں کی سیریز میں شکست کے بعد ملک میں الزام تراشیوں کا دور جاری ہے۔رنتنگا کا یہ الزام ٹیم کے سابق کپتان کمار سنگاکارا کے 2009میں پاکستان کے دورے پر دئیے گئے بیان کے بعد آیا ہے۔اس دورے پر سری لنکا کی ٹیم پر دہشت گرد انہ حملہ ہوا تھا،سنگاکارا نے کہا کہ اس کی جانچ ہونی چاہیے کہ یہ دورہ کس کے کہنے پر ہوا تھا۔2011ورلڈ کپ میں سری لنکا کے کپتان کمار سنگاکارا تھے۔انہوں نے کہا ہے کہ جب پاکستان میں سیکورٹی اچھی نہیں تھی، تو وہاں ٹیم کو کیوں بھیجا گیا تھا۔اس کے بعد رنتنگا نے کہا کہ اگر سنگاکارا پاکستان دورے کی جانچ چاہتے ہیں تو یہ ہونا چاہیے ۔میرا خیال ہے کہ 2011ورلڈ کپ فائنل میں سری لنکا کے ساتھ جو ہوا، اس کی بھی جانچ ہونی چاہیے ۔

ایک نظر اس پر بھی