قطری ہوائی جہازوں کو 9فضائی روٹس استعمال کرنے کی اجازت

Source: S.O. News Service | Published on 2nd August 2017, 6:17 PM | خلیجی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ریاض یکم اگست (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) سعودی عرب کی قیادت میں دہشت گردی کے خلاف چار عرب ممالک نے بین الاقوامی فضائی سروس کی سلامتی کے پیش نظر قطری مسافر بردار ہوائی جہازوں کو مخصوص فضائی روٹس استعمال کرنے کی اجازت دے دی ہے۔ سعودی عرب کی جنرل سول ایوی ایشن اتھارٹی نے اتوار کے روز جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات، بحرین مصر کے ساتھ مشاورت کے بعد قطری ہوائی جہازوں کو خلیجی ملکوں میں مخصوص نوروٹس اور فضائی گذرگاہوں کو استعمال کرنے کی اجازت دی ہے۔ اس سے قبل قطری فضائی سروس پر ان روٹس کے استعمال پرپابندی عاید تھی۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ قطری فضائی کمپنیوں کے مسافر بردار جہازوں کو مخصوص روٹس استعمال کرنے کی اجازت دینے کا مقصد بین الاقوامی فضائی سفر کو محفوظ بنانا اور اس ضمن میں فضائی سفری حقوق کے بین الاقوامی ادارے ایکاؤ کی سفارشات اور اس کے ساتھ طے پائے معاہدوں پر عمل درآمد کو یقینی بنانا ہے۔بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ قطری ہوائی جہاز مصر کے زیرانتظام بحیرہ روم کی ایک گذرگاہ کو یکم اگست کے بعد استعمال کرسکیں گے جب کہ دیگر گذرگاہیں خلیجی ملکوں کی فضائی حدود کے اندر ہیں جن سے قطری طیاروں کو گذرنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ  ڈیڑھ ماہ قبل سعودی عرب نے دوحہ کا سفارتی بائیکاٹ کردیا تھا اور اس بات کا الزام لگایا تھا کہ قطرملک؛  سعودی عرب، بحرین، متحدہ عرب امارات اور مصر میں  دہشت گردوں کی پشت پناہی کرتا ہے  اور انہیں مالی معاونت فراہم کرتا ہے۔ تاہم قطرنے  ان الزامات کو مسترد کردیا تھا۔
 

ایک نظر اس پر بھی

سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر وطن لوٹنے کے بعدساحلی علاقے میں ICSE اور انگریزی میڈیم اسکولوں میں بڑھ گئے بچوں کے داخلے 

سعودی عربیہ میں غیر وطنی باشندوں اور ملازمین کے تعلق سے نئے اور سخت قوانین سے پریشان ہو کر غیر رہائشی ہندوستانیوں کے وطن واپس لوٹنے کے بعد ان کے بچوں کو اسکولوں میں داخل کرانے  کا مسئلہ بھی کافی سنگین ہوگیا ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ ریاست کرناٹک کے کسی بھی اسکول میں داخل  کرنے کی ...

سعودی کے نئے قانون سے ہندوستانی عوام سخت پریشان؛ 15 ماہ میں 7.2 لاکھ غیر ملکی ملازمین نے سعودی عربیہ کو کیا گُڈ بائی؛ بھٹکل کے سینکڑوں لوگ بھی ملک واپس جانے پر مجبور

سعودی عرب میں ویز ے کے متعلق نئے قانون کا نفاذ ہوتے ہی بھٹکل کے ہزاروں لو گ اپنی صنعت کاری، تجارت اور ملازمت کو الوداع کہتے ہوئے وطن واپس لوٹنے پر مجبورہوگئے  ہیں۔ اترکنڑا ضلع کے اس خوب صورت شہر بھٹکل کے  قریب 5000 لوگ سعودی عربیہ میں برسر روزگار تھے جن میں سے کئی لوگ واپس بھٹکل ...

بھٹکل مسلم جماعت بحرین کا خوبصورت عید ملین پروگرام 

بھٹکل مسلم جماعت بحرین نے 28/جون 2018ء کو عید ملن کی تقریب مشہور ڈپلومیٹ ریڈیشن بلو(Diplomat  Radssion  Blu) فائیو اسٹار ہوٹل میں بنایا۔ محفل کاآغاز تقریباً رات 10بجے عزیزم محمد اسعدابن محمدالطاف مصباح کی خوبصورت قرآن سے ہوا۔ محمد عاکف ابن محمد الطاف مصباح نے قرآن کاانگریزی ترجمہ پیش ...

بھٹکل :صحافتی میدان کے بے لوث اورمخلص خادم  ساحل آن لائن کے مینجنگ ایڈیٹر  ایوارڈ کے لئے منتخب

اترکنڑا ضلع ورکنگ جرنالسٹ اسوسی ایشن کی طرف سے دئیے جانےو الےمعروف ’’جی ایس ہیگڈے  اجِّبل ‘‘ ایوارڈ کے لئے اپنی جوانی کی ابتدائی  عمر سے ہی سوشیل میڈیا کے ذریعے صحافت کی دنیا میں قدم رکھتے ہوئے ایمانداری کے ساتھ قوم وملت کی بے لوث اور مخلصانہ خدمات انجام دینے والے ساحل آن ...

سعودی عرب میں خواتین کی ڈرائیونگ پر پابندی ختم

سعودی خواتین پر لگی ڈرائیونگ  کی پابندی ختم ہوتے ہی خواتین رات کے بارہ بجتے ہی جشن مناتے ہوئے  سڑکوں پر نکل آئیں اور کار میں بلند آواز میں میوزک چلاکر  شہروں کا چکر لگاتے ہوئے اس پابندی کے خاتمے کا خیر مقدم کیا۔

ایران میں زلزلے کے شدید جھٹکے، 290 زخمی

ایران میں دو دنوں سے جاری زلزلہ کے تیز جھٹکوں کی وجہ سے زخمیوں کی تعداد بڑھ کر 290 ہو گئی ہے۔ پیر کو جنوب مشرقی ایران میں 5.8 شدت کے زلزلہ کے شدید جھٹکے محسوس کئے گئے.میڈیا رپورٹوں کے مطابق اتوار کو ایران کے مغربی علاقے میں 5.9 شدت کے زلزلہ کے جھٹکے محسوس کئے گئے تھے۔

بی جے پی کی شکست کے لیے ہم کسی بھی پارٹی سے اتحاد کے لیے تیارہیں : مایاوتی 

بی جے پی کو شکست دینے کے لئے بی ایس پی کسی بھی پارٹی سے اتحاد کو تیار ہے۔ اس فیصلے کا اعلان خود مایاوتی نے کیا۔ دہلی میں ان کے گھر پر ملک بھر سے آئے بی ایس پی کے کو آرڈنیٹر کی میٹنگ ہوئی۔ مایاوتی نے بی ایس پی لیڈروں کو میڈیا سے دور رہنے کی صلاح دی ہے۔ انہوں نے خبردار کرتے ہوئے کہا ...

الور موب لنچنگ واقعہ: اویسی نے کیا ٹویٹ، مودی حکومت کے چار سال ۔ لنچ راج

آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے صدر اور رکن پارلیمنٹ اسدالدین اویسی نے راجستھان کے الور میں پیش آئے موب لنچنگ کے تازہ واقعہ پر اپنے سخت ردعمل کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے ایک ٹویٹ کے ذریعہ اس واقعہ کو لے کر مرکز کی مودی حکومت پر سخت حملہ بولا ہے۔