امسال سے چوتھی تا ساتویں جماعت پبلک امتحان ہوگا: تنویر سیٹھ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th July 2017, 3:44 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،13؍ جولائی(ایس او نیوز) ریاستی وزیر برائے بنیادی وثانوی تعلیمات تنویر سیٹھ نے کہاکہ چوتھی سے ساتویں جماعت تک کے طلبا کی تعلیمی صلاحیتوں کو بہتر بنانے اور معیار تعلیم کو بلند کرنے کیلئے ان کو سالانہ پبلک امتحان کروانے پر سنجیدگی سے غور کیاجارہا ہے۔آج ایس ایس ایل سی سپلیمنٹری امتحان کے نتائج کا اعلان کرتے ہوئے انہوں نے بتایاکہ حال ہی میں رام نگرم میں بچوں کی تعلیمی صلاحیتوں کی جانچ کی گئی، جس میں بہت سارے بچے کامیاب نہیں ہوپائے اور یہ بات سامنے آئی کہ ان بچوں کا معیار تعلیم بہت ہی گھٹیا ہے، اسی مقصد کے تحت ریاستی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ چوتھی سے ساتویں جماعت اب پبلک امتحان لیا جائیگا۔ رواں سال ہی پبلک امتحان کیلئے چوتھی جماعت کو شامل کیا جاچکا ہے۔اس امتحان میں اگر بچے ناکام رہے تو انہیں مناسب تربیت سے آراستہ کرکے سپلیمنٹری امتحان میں کامیاب بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ اس امتحان میں لکھے جانے والے پرچوں کی جانچ متعلقہ بی ای او زون میں آنے والے مختلف اسکولوں کے اساتذہ کے ذریعہ اسکول بدل کر کروائی جائے گی۔ انہوں نے بتایاکہ شمالی کرناٹک میں اسکولوں کے معیار کو بلند کرنے کیلئے سائنس اور میتھس کے دس ہزار اساتذہ کا تقرر کیاجارہا ہے۔ 6826 اساتذہ کو خاص طور پر حیدرآباد کرناٹک کے علاقوں میں متعین کیاجائے گا اور باقی اساتذہ ریاست بھر میں خدمات انجام دیں گے۔ اساتذہ کے تبادلوں کے متعلق سیٹھ نے بتایاکہ امسال تبادلوں کے ضوابط میں ترمیم لائی گئی ہے، اور نئی ترمیمات کے مطابق 22 دنوں تک کونسلنگ کے ذریعہ تبادلے مکمل کرلئے جائیں گے۔ وزیر موصوف نے بتایاکہ مرکزی یونیورسٹیوں اور مرکزی نصاب کے تحت تعلیم دینے والے اسکولوں سمیت تمام انگریزی اسکولوں میں کنڑا کی تعلیم لازمی قرار دی جاچکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان تمام اسکولوں میں کنڑا کو ایک سبجکٹ کے طور پر پڑھانا لازمی ہوگا۔اسی طرح تمام کنڑا اسکولوں میں انگریزی کو ایک سبجکٹ کے طور پر سکھانا لازمی قرار دیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر کسی اسکول نے کنڑا سکھانے سے انکار کیا تو آئندہ سال اسے اسکول چلانے کی منظوری نہیں دی جائے گی۔ سرکاری اسکولوں اور کالجوں میں ایک موضوع کے طور پر انگریزی سکھائی جائے گی، انہوں نے کہاکہ حق تعلیم قانون کے تحت کوئی اسکول اگر داخلے سے انکار کرے تو ان اسکولوں کی منظوری اسی وقت رد کردی جائے گی۔ ایس ایس ایل سی امتحان میں صد فیصد ناکامی حاصل کرنے والے اسکولوں کو نوٹس جاری کی جاچکی ہے، جن اسکولوں میں بنیادی سہولیات دستیاب نہ ہوں ان کی منظوری بھی رد کی جاچکی ہے۔وزیر موصوف نے بتایاکہ آر ٹی ای سے متعلق شکایات کے اندراج کیلئے محکمۂ تعلیمات میں ایک الگ شعبہ قائم کیاجاچکا ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

رکن کونسل بائرتی سریش کی امیر شریعت سے ملاقات

سینئر کانگریس لیڈر اور رکن کونسل بائرتی سریش نے دارالعلوم سبیل الرشاد پہنچ کرامیر شریعت مفتی محمد اشرف علی سے ملاقات کی اور ان سے دعائیں لیں، پچھلے اسمبلی ضمنی انتخابات میں ہبال اسمبلی انتخاب میں کانگریس کی ٹکٹ کیلئے کوشش کرنے والے بائرتی سریش بحیثیت رکن کونسل اپنے حلقہ کے ...

فروغ ہنر سے استفادہ کرنے انجینئروں کو آواز

وشویشوریا ٹیکنیکل یونیورسٹی کی طرف سے دو سو کروڑ روپیوں کی لاگت پر فروغ ہنر مرکز قائم کیاگیا ہے ،جہاں ڈگری یافتہ انجینئرس مختلف فنون کی تربیت کا استفادہ کرسکتے ہیں اور اپنی تعلیم کے ساتھ منتخب ہنر میں غیر معمولی مہارت حاصل کرسکتے ہیں۔ یہ بات آج اس فروغ ہنر سنٹر کے وائس چانسلر ...

بی بی ایم پی کی طرف سے اندراکینٹین کی بروقت شروعات مشکوک

ریاستی حکومت کی طرف سے برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی حدود میں یوم آزادی کے موقع پر بڑے پیمانے پر اندرا کینٹین کی شروعات کرکے یہاں پر پانچ روپیوں میں ناشتہ اور دس روپیوں میں دوپہر اور شام کا کھانا مہیا کرانے کا اعلان کیا گیا ہے ، ایسا نہیں لگتا کہ وہ یوم آزادی تک جامۂ حقیقت پہن ...

بی بی ایم پی کے اگلے میئر کے انتخاب کی تیاریاں

برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی موجودہ میئر جی پدماوتی کی میعاد 10ستمبر کو پوری ہوجائے گی۔اس کے ساتھ ہی شہر کے اگلے میئر کی تلاش بھی زور پکڑ چکی ہے۔ آنے والی میعاد میں جو بھی میئر بنے گا اس پر انتخابی سال کا دباؤ کافی زیادہ رہے گا۔ جنتادل (ایس) اور آزاد اراکین کے ساتھ کی بدولت پچھلے ...

لنگایت فرقہ کو الگ مذہب کا درجہ دینے کی مانگ، بی جے پی اور آر ایس ایس کے پیروں تلے زمین کھسکنے لگی

ریاست میں لنگایت طبقے کو الگ مذہب کا درجہ دینے کے مطالبے سے پریشان آر ایس ایس نے مطالبہ کیا ہے کہ اس تنازعہ کو سلجھانے کیلئے ایک غیر سیاسی کمیٹی تشکیل دی جائے۔ آر ایس ایس کی طرف سے ریاستی حکومت کے موقف کی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہاگیا ہے کہ لنگایت طبقہ کو علیحدہ مذہب کا درجہ دینے ...

کرناٹک کو بی جے پی سے پاک ریاست بنایا جائے گا: سدرامیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا نے آج یہ بات دہرائی کہ ریاست میں انتخابات کے بعد ایک بار پھر کانگریس حکومت ہی برسر اقتدار آئے گی اور کرناٹک میں بی جے پی کو پنپنے نہیں دیا جائے گا۔ ہاویری میں سرکاری پروگراموں میں شرکت کیلئے روانگی سے قبل ہبلی میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے سدرامیا ...