الٰہ آباد میں لاء کے طالب علم کا پیٹ پیٹ کر قتل ، احتجاجاً مسافر بس نذرِ آتش

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th February 2018, 8:21 PM | ملکی خبریں |

الہ آباد12 فروری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) الہ آباد میں لاء اسٹوڈنٹ کے پیٹ پیٹ کر قتل کے معاملہ کے بعد سنگم نگری کا ماحول مکمل طور پر گرما گیا ہے۔ 26 سال کے دلیپ سروج کی موت اتوار کو ہو گئی تھی۔ دلیپ کے قتل کے خلاف الہ آباد میں احتجاج میں اشتعال پیدا ہوگیا ۔ طالب علم کے قتل کی مخالفت میں ایک بس کو آگ کی نذر کردی گئی ۔ پیر کو طالب علموں نے قتل کی مخالفت میں نعرے لگائے اور پر اشتعال احتجاج بھی کئے ۔ اس کے بعد تشدد کو کنٹرول کرنے کے لئے پولیس کو بھی بلایا گیا ہے۔پولیس نے اس درمیان قتل کے اہم ملزم وجے شنکر سنگھ کے ڈرائیور کو بھی حراست میں لے لیا ہے۔ اس معاملہ میں اب تک دوکی گرفتاری بھی ہو چکی ہے۔ واضح ہوکہ اس معاملہ میں پہلی گرفتاری اس ریستوران کے ویٹر منا چوہان کی ہوئی ہے، جس نے دلیپ کے سر پر ہاکی ا سٹیک سے حملہ کیا گیا تھا۔ پولیس کے مطابق اہم ملزم وجے شنکر سنگھ کے ڈرائیور کو بھی حراست میں لیا جا چکا ہے، الہ آباد کے اسسٹنٹ ایس پی سکرتی مادھو نے کہا کہ ہم لوگ خصوصی ملزم وجے شنکر کی گرفتاری کے لئے مہم چلا رہے ہیں اور امید ہے کہ اسے بہت جلد حراست میں لے لیا جائے گا ۔غور طلب ہے کہ 9 فروری کی شام دلیپ (26) اپنے دو ساتھیوں کے ساتھ کرنل گنج واقع ایک ہوٹل میں کھانا کھانے گیا تھا اور وہاں لگژری کار سے آئے کچھ لوگوں سے اس کی نوک جھونک ہو گئی تھی۔ اس کے بعد ان لوگوں نے دلیپ کو لاٹھی ڈنڈوں سے پیٹ کر بری طرح زخمی کر دیا تھا۔ ضلع کے سینئر پولیس سپرنٹنڈنٹ آکاش کلہری نے بتایا کہ دلیپ کے بھائی کی تحریر پر تین نامعلوم افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کیا گیا تھا، سی سی ٹی وی فوٹیج اور اس واقعہ کے وائرل ہوئے ویڈیو کی بنیاد پر اہم ملزم کے طور پر وجے شنکر سنگھ کی شناخت کی گئی تھی جو ہندوستانی ریلوے میں ٹی ٹی کے عہدے پر ملازم ہے، وہ ابھی فرار ہے ۔ پولس اس کی گرفتاری کے لیے ممکنہ مکانات پر چھاپہ ماری کررہی ہے ۔ طالب علم کے قتل پر گہرے دکھ اور تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے کہا کہ استحصال شدہ دلت سماج کے ایک ذہین ایل ایل بی کے طالب علم کا قتل پورے سماج کے لئے بڑے دکھ اور تشویش کی بات ہے۔ اس واقعہ سے سماجی تانے بانے مجروح ہوئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ الہ آباد میں دلت طالب علم کا اس طرح ظالمانہ قتل واقعی اتر پردیش کے بی جے پی حکومت میں کوئی شرم اور کوئی نیا واقعہ نہیں ہے، بلکہ ایسے دردناک واقعات مسلسل واقع ہورہے ہیں ۔ اس قتل کا مجرم کوئی اور نہیں ہے ؛ بلکہ بی جے پی کی تنگ نظری، نسل پرستی اور نفرت کی سیاست ذمہ دار ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اس وجہ سے ہی صرف یوپی ہی نہیں ؛ بلکہ پورے ملک میں ماحول کافی زیادہ ہی زہر رآلود ہو گیا ہے۔علاوہ ازیں مارکس وادی کمیونسٹ پارٹی کی اترپردیش اکائی نے الہ آباد میں دلت طالب علم کی بے رحمانہ قتل کی سخت مذمت کرتے ہوئے طالب علم کے خاندان کیلئے تعزیت کا اظہار کیا اور کہا کہ ریاست میں یوگی حکومت آنے کے بعد جاگیردارانہ عناصر کا حوصلہ اتنا بڑھ گیا ہے کہ آئے دن دلتوں پر سفاکانہ حملے ہو رہے ہیں، یقینی طور پر دبنگوں کو کہیں نہ کہیں سیاسی تحفظ حاصل ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پہلے للت، پھر مالیا، اب نیرو بھی ہوا فرار، کہاں ہے ملک کا چوکیدار ؟ راہل گاندھی کا مودی حکومت پرپھر حملہ

پی این بی گھوٹالے پر کانگریس صدر راہل گاندھی نے پیر کو وزیر اعظم نریندر مودی حملہ بولا ہے۔ راہل نے ٹوئٹ کرتے ہوئے  کہا ہے کہ پہلے للت مودی پھر وجے مالیا اور اب نیرو بھی ہوا فرار۔ اس سے پہلے راہل نے پی ایم مودی اور اور وزیر خزانہ ارون جیٹلی سے اس معاملے پر بولنے اور گناہگار کی طرح ...

راجستھان میں اپوزیشن لیڈر کی وضاحت کولے کرہنگامہ

 راجستھان اسمبلی میں آج اپوزیشن لیڈر رامیشور دویدی کی طرف سے خود پر لگے الزامات پر وضاحت دینے کے دوران بجٹ اعلانات کو لے کر کے گئے تبصرہ کو لے کر ہنگامہ ہوا۔ ہنگامہ کے دوران صدر کیلاش میگھوال نے اپوزیشن لیڈر کو سمجھاتے ہوئے قانون سازی کام نپٹانا شروع کر دیا۔

راجستھان میں افرازالاسلام کا قاتل شبمھو لال ریگر نے سسٹم کو دکھایا ٹھینگا، جیل کے اندر بنایااشتعال انگیز ویڈیو

راجستھان کے راجسمندمیں افرازالاسلام کے وحشیانہ قتل کا ملزم شبمھو لال ریگر اس وقت جودھپور کی جیل میں ہے۔نجی ٹی ویNDTVنے دعویٰ کیاہے کہ اسے ایک خصوصی ویڈیوہاتھ لگاہے۔ جس میں شبمھو لال ریگر نفرت پھیلانے والی باتیں کررہاہے۔

مظفر نگر میں علامہ اقبال پر غزل و نظم سرائی کے مقابلے کا انعقاد؛ تحسین علی کو ’’نشان اقبال ‘‘ اور ارمیلہ شرما کو ’’تعلیمی خدمات ایوارڈ‘‘

عوامی ایکتا ویلفیئر سوسائٹی دہلی و علامہ اقبال اکیڈمی دہلی کے اشتراک سے آج ایک عظیم الشان پروگرام بعنوان کلام اقبال غزل و نظم سرائی کے مقابلے کا انعقاد ایم.آر.ڈی. پبلک اسکول سانجک میں کیا گیاجس میں مختلف مدارس کے طلباء وطالبات نے حصہ لیا۔

بنگلور میں جے ڈی ایس کا شاندار اجلاس؛ مایاوتی کی شرکت؛ کہا مودی حکومت اب آخری سانس لے رہی ہے؛ کمارسوامی نے جاری کی 126 اُمیدواروں کی پہلی فہرست

شہر کے یلہنکا میں جنتادل (ایس) کا  شاندار جلسہ کمارا پرو یاترا کنونشن کے نام پر سنیچر شام کو منعقد ہوا ، جس میں ریاست کے مختلف گائوں اور دیہاتوں سے کثیر تعداد میں لوگوں نے   شرکت کی۔ اس موقع پر سابق وزیراعلیٰ  کماراسوامی نے  ریاست کرناٹک میں آئندہ دو  تین ماہ بعد ہونے والے ...