حوثیوں کو جنیوا جانے کے لیے طیارہ دیا مگر انھوں نے انکار کردیا: عرب اتحاد

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th September 2018, 12:31 PM | عالمی خبریں |

صنعاء8ستمبر ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) یمن میں قانونی حکومت کی عمل داری کے قیام کے لیے کوشاں عرب اتحاد نے کہا ہے کہ اس نے حوثی ملیشیا کو سوئٹزر لینڈ کے شہر جنیوا میں امن مذاکرات میں شرکت کے لیے جانے کی غرض سے ایک طیارہ مہیا کیا تھا مگر انھوں نے اس پیش کش کو مسترد کردیا ہے۔

یمنی ذرائع نے بتایا ہےکہ سول ایوی ایشن اتھارٹی نےحوثیوں کے اس طیارے کی صنعاء کے ہوائی اڈے سے پرواز کے لیے اجازت نامہ بھی جاری کردیا تھا ۔انھوں نے ایران کے حمایت یافتہ حوثیوں کے اس دعوے کو مسترد کردیا ہے جس میں انھوں نے کہا تھا کہ انھیں صنعاء سے جنیوا پرواز کے لیے طیارہ مہیا نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے ان کی روانگی میں تاخیر ہوئی ہے۔

یمنی ذرائع نے اس بات کی بھی تصدیق کی ہے کہ حوثی وفد اقوام متحدہ کے زیر اہتمام جنیوا میں ہونے والے مذاکرات کو ناکام بنانے کے لیے مبہم وضاحتیں پیش کررہا ہے۔

اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی برائے یمن مارٹن گریفتھس کے ترجمان نے بدھ کو ایک بیان میں کہا تھا کہ سوئس شہر میں جمعہ کو تنازع کے فریقوں کے درمیان مذاکرات شروع ہوں گے۔ البتہ خود مارٹن گریفتھس نے کہا تھا کہ یہ مذاکرات کچھ وقت کے لیے تاخیر کاشکار ہوسکتے ہیں لیکن یہ ہوں گے ضرور۔

تاہم عرب اتحادی افواج کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے کہا ہے کہ حوثی جنیوا مذاکرات میں شرکت میں سنجیدہ ہیں اور نہ وہ اس معاملے کو سنجیدگی سے لے رہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ عرب اتحاد یمن میں جاری بحران کے سیاسی حل کے لیے ہر طرح کی امداد مہیا کرنے کو تیار ہے۔

دریں اثناء یہ بھی اطلاع سامنے آئی ہے کہ یمنی حکومت نے حوثی وفد کو جنیوا میں مذاکرات میں شرکت کے لیے 24 گھنٹے میں صنعاء سے سفر پر روانہ ہونے کا وقت دیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

متحدہ عرب امارات نے وزیر اعظم مودی کو اعلی ترین شہری اعزاز سے سرفراز کیا ۔ دنیا بھر میں یو اے ای کے اقدام کی مذمت

متحدہ عرب امارات نے ہندوستان کے وزیر اعظم نریندر مودی کو اپنے اعلی ترین شہری اعزاز سے سرفراز کردیاہے ۔ متحدہ عرب امارات نے چند دنوں قبل اعلان کیاتھا کہ وہ ہندوستان کے وزیر اعظم نریندر مودی کو اپنا اعلی ترین سول ایوارڈ دیں گے ۔

عوام نے نئے بھارت کی تعمیر کے لئے مضبوط مینڈیٹ دیا ہے: وزیر اعظم مودی

وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعہ کو کہا کہ 2019 کے لوک سبھا انتخابات میں واضح مینڈیٹ صرف ایک حکومت کو نہیں، بلکہ ایک ایسے ’نیو انڈیا‘ کی تعمیر کے لئے دیا ہے جو کاروبار کے بہتر انتظامات کے ساتھ بہتر زندگی بسر پر مرتکز ہو۔

مسئلہ کشمیر سے توجہ ہٹانے کی کوششیں: عمران خان

  جموں و کشمیر کو خصوصی حیثیت دینے والی دفعہ 370 کو ختم کرکے ریاست کو دو حصوں میں تقسیم کرنے کے فیصلے کے بعد پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے اس ضمن میں جمعہ کے روز عالمی برادری کو منتبہ کیا ہے کہ ہندوستان کی قیادت غالباً جموں و کشمیر میں بڑے پیمانے پر انسانی حقوق کی خلاف ورزی ...

جی -7 اجلاس میں کشمیر مسئلہ ٹرمپ کے ایجنڈے میں شامل کانفرنس میں ٹرمپ کشمیر پر مودی کا موقف سننا چاہیں گے

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ جی -7 چوٹی کانفرنس کے دوران عالمی لیڈروں کے ساتھ دو طرفہ ملاقاتوں میں مسئلہ کشمیر، یورپ کو روسی گیس کی فراہمی اور وینزویلا سمیت کئی اہم مسائل پر گفتگو کریں گے۔