جمہورریہ وسطی افریقہ میں دہشت گرد حملوں میں 6 امن کار ہلاک

Source: S.O. News Service | By Sheikh Zabih | Published on 16th May 2017, 7:10 PM | عالمی خبریں |

جوہانسبرگ،16مئی(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)جمہوریہ وسطی افریقہ میں اقوام متحدہ کے کثیر جہتی مشن یعنی ایم آئی این یو ایس سی اے نے کہا ہے کہ ری پبلک کے ایک دور افتادہ قصبے بن غاسومیں مسلمانوں کو ہدف بنانے والی مسلح ملیشیاؤں نے حالیہ دنوں میں 30 عام شہریوں اور اقوام متحدہ کے 6 امن کاروں کو ہلاک اور بہت سے دوسروں کو زخمی کر دیا ہے۔ ایم آئی این یو ایس سی اے کے سربراہ پرفیٹ اونانگا انیانگا نے کہا کہ مشن بن غاسو میں کمک بھیج رہا ہے جہاں بے گھر ہونے والے عام شہری ایک مسجد ، ایک کیتھولک چرچ اور ڈاکٹرز ود آؤٹ بارڈرز کے ایک اسپتال میں پناہ لینے کی کوشش کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ مشن کو اپنے 6 ارکان کی ہلاکت پر دکھ ہے۔ یہ انتہائی قابل افسوس ہے کہ کہیں 10 اور کہیں 11 لوگ زخمی ہوئے۔ تشدد کے اس واقعے کے بعد ابھی درست اعداد وشمار دینا بہت قبل از وقت ہے۔ لیکن یہ واضح ہے کہ ہمیں جو تعداد نظر آرہی ہے وہ 20 سے 30 تک ہو سکتی ہے۔ صورت حال انتہائی افسوسناک ہے اور ہم جتنی جلدی ممکن ہو سکے بن غاسو کا قبضہ واپس لینے کی کوشش کررہے ہیں۔یہ جمہوریہ وسطی افریقہ میں ایک ہفتے کے دوران ہونے والا ایسا دوسرا حملہ ہے جس میں امن کار ہلاک ہوئے۔
صدر فیسٹن ٹواڈیرانے اتوار کو ہونے والے اس حملے کی مذمت کی۔ انہوں نے کہا کہ امن مشن کے امن کاروں کے خلاف حملہ ان سنگین جرائم کے ضمرے میں آتا ہے جن کے لیے انہیں ملکی اور بین الاقوامی قانون کے سامنے جواب دہ ٹھہرایا جائے گا۔ میں ملک کے اس حصے میں زخمی ہونے والوں، اور ان وحشیانہ کارروائیوں کا نشانہ بننے والے بے گناہ متاثرین کے لیے اپنی بھر پور مدد دینے کے لیے جلد ہی وہاں جاؤں گا۔جمہوریہ وسطی افریقہ میں امدادی کارکنوں نے خبردار کیا ہے کہ ملک ایک بار پھر تنازعے کی لپیٹ میں آسکتا ہے۔گذشتہ چھ ماہ میں ہزاروں لوگ تشدد سے جانیں بچانے کے لیے دیہی علاقوں سے فرار ہو چکے ہیں۔اس ملک کی نصف سے زیادہ آبادی انسانی ہمددردی کی امداد پر انحصار کرتی ہے لیکن اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ امدادی کوششوں کے لیے فنڈز کی خطرناک حد تک قلت ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

انجلینا جولی کی عید پرعراق کے شہر موصل کے پناہ گزینوں سے ملاقات

اقوام متحدہ کی پناہ گزین کی خصوصی ایلچی انجلینا جولی نے عراق میں دہشت گردی سے سب سے متاثرہ علاقے موصل کا دورہ کیا اور عالمی برادری سے تباہ حال شہر کے بے گھر رہائشیوں کی دوبارہ اپنے گھروں میں آبادکاری کے لیے مدد کی اپیل کی ہے۔

ننگر ہار: طالبان پر خودکش حملے میں ہلاکتوں کی تعداد 36 ہو گئی

صوبہ ننگرہار میں کے محکمہ صحت کے ڈائریکٹر نجیب اللہ کماوال کے حوالے سے کہا ہے کہ ہفتہ کو ہونے والے اس حملے میں 65 افراد زخمی بھی ہوئے۔افغان حکام نے کہا ہے کہ جنگ بندی کے دوران مشرقی صوبہ ننگرہار میں افغان جنگجوؤں کے ایک اجتماع پر خودکش حملے میں ہلاکتوں کی تعداد 36 ہو گئی ہے۔

جاپان میں.1 6 شدت کا زلزلہ، تین افراد ہلاک

اوساکا اور اس کے گرد و نواح کا شمار جاپان کے اہم ترین صنعتی مراکز میں ہوتا ہے اور زلزلے کے بعد علاقے میں واقع بیشتر کارخانوں میں کام بند کردیا گیا ہے۔جاپان کے دوسرے بڑے شہر اوساکا میں آنے والے 6.1شدت کے زلزلے سے اب تک تین افراد کے ہلاک ہونے کی تصدیق ہوگئی ہے۔

نیو جرسی: آرٹ فیسٹول میں فائرنگ، حملہ آور ہلاک

امریکہ کی ریاست نیو جرسی میں ایک آرٹ فیسٹول کے دوران فائرنگ سے 22 افراد زخمی ہوگئے ہیں جب کہ ایک مبینہ حملہ آور مارا گیا ہے۔حکام کے مطابق واقعہ اتوار کو نیوجرسی کے شہر ٹرینٹن میں پیش آیا جہاں رات بھر جاری رہنے والے آرٹ فیسٹول کے دوران دو متحارب گروہ آپس میں لڑ پڑے۔

افغان طالبان کا جنگ بندی میں توسیع سے انکار

افغان طالبان نے کہا ہے کہ افغان سکیورٹی فورسز سے تین روزہ جنگ بندی کے خاتمے کے بعد اس میں مزید توسیع نہیں کی جائے گی۔فرانسیسی خبر رساں ادارے ’اے ایف پی‘ نے طالبان کے ترجمان ذبیع اللہ مجاہد کے حوالے سے کہا ہے کہ جنگ بندی 17 جون کی رات ختم ہو رہی ہے جس کے بعد طالبان کی کارروائیاں ...

ترک فوج کی عراق میں بمباری، 35 کرد جنگجو ہلاک

ترکی کی مسلح فوج نے ایک بیان میں دعویٰ کیا ہے کہ عراق کے شمالی علاقے جبل قندیل میں کرد علاحدگی پسند گروپ کردستان ورکرز پارٹی "PKK" کے ٹھکانوں پر بمباری کے نتیجے میں کم سے کم 35 کرد باغی ہلاک ہو گئے ہیں۔