کرناٹک کے تین ہزار سے زائد عازمین حج مکہ پہنچ گئے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 7th August 2018, 11:02 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،7؍اگست(ایس او نیوز) شہر سے عازمین حج کے قافلوں کی روانگی جاری ہے، آج صبح عازمین حج کا نواں اوردسواں قافلہ سوئے حرم پرواز کرگیا ۔تقریباً چھ سو عازمین سعودی ایر لائنز کے طیارے کے ذریعے اپنے سفر مقدسہ پر روانہ ہوگئے۔

آج صبح کی فلائٹ سے روانہ ہونے والے عازمین میں بنگلور اربن کے 111، بنگلور رورل کے چھ ، چکمگلور کے دو ، چترادرگہ کے دو، ہاسن کے 24؍ ہاویری کے 36 ؍ کورگ کے 21؍ کولارکے چار، کوپل کے سات ، منڈیا کے 18میسور کے 67 اور ٹمکور کے دو ۔ جملہ 300عازمین روانہ ہوئے۔ کل صبح روانہ ہونے والی گیارھویں فلائٹ سے 302 عازمین روانہ ہوں گے، ان میں بنگلور رورل کے 21؍ بنگلور اربن کے 81 ، بلاری کے آٹھ وجیا پور کے چھ ، چامراج نگر کے چار ، چکبالاپور کے آٹھ ، چترادرگہ کے 14؍ دکشن کنڑا کے 27؍ داونگیرے کے 9؍ دھارواڑ کے تین ، ہاویری کے 14؍ گدگ کے چار ، گورک کے تین ، کولار کے آٹھ ، کوپل کے چار ، میسور کے22؍ رام نگرم کے گیارہ، شیموگہ کے دس ، ٹمکور کے 42؍ اور اڈپی کے تین عازمین روانہ ہوں گے۔

عازمین حج کو روانہ کرنے کے لئے حسب معمول حج کیمپ میں مختلف شعبوں کی خدمت جاری ہے۔ 15اگست کو آخری فلائٹ کی روانگی تک بھی ان انتظامات کا سلسلہ جاری رہے گا۔ عازمین حج کو حج بھون سے خصوصی بسوں میں کیمپ گوڈا انٹرنیشنل ایرپورٹ پر قائم خصوصی ٹرمینل تک پہنچایا جاتا ہے اور حج ٹرمینل پر عازمین حج امیگریشن اور دیگر تقاضوں کی تکمیل کے بعد بآسانی طیارے میں سوار ہوتے ہیں۔ ساڑھے تین گھنٹوں میں طیارہ تقریباً ڈھائی ہزار کلومیٹر کا سفر مکمل کرکے جدہ کے شاہ عبدالعزیز ایر پورٹ پہنچتا ہے۔

ایر پورٹ پر حکومت سعودی عرب کی طرف سے کئے گئے انتظامات کو کرناٹک کے عازمین حج نے قابل رشک قرار دیا ہے۔ امیگریشن ، پاسپورٹ، اور معلم کے شعبوں میں جس تیزی سے عازمین حج کو منظوری مل رہی ہے اس انتظام کو پہلے کے مقابل کافی آسان بتایاجارہاہے۔ گزشتہ سالوں میں جدہ ایرپورٹ پر عازمین حج کو اپنی آمد سے عمارت پہنچنے تک چھ سے دس گھنٹوں کا وقفہ لگتا ، اس میں اب کافی کمی آگئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پانچ حلقوں کے لئے آج نامزدگیوں کی جانچ ہوگی

ریاست کے تین لوک سبھا اور دو اسمبلی حلقوں کے لئے ضمنی انتخابات کے لئے آج نامزدگیو ں کے داخلوں کی تکمیل کے ساتھ ہی تینوں اہم سیاسی جماعتوں کے امیدوار آمنے سامنے آگئے ہیں۔

حکومت گر جانے کے متعلق یڈیورپا کے بیان پر سدر امیا کا طنز، اقتدار کی حوس میں سابق وزیراعلیٰ اپنا دماغی توازن کھو بیٹھے ہیں: سدرامیا

سابق وزیراعلیٰ اور ریاستی بی جے پی صدر بی ایس یڈیورپا کا یہ دعویٰ کہ آج دوپہر تین بجے تک ریاست کی سیاست میں بہت بڑی تبدیلی ہونے والی ہے ایک بار پھر جھوٹا ثابت ہوا۔