کرناٹک: جب 3 سال کے بچے نے دلوائی باپ کو سزا ، کورٹ نے 13 دن میں سنایا فیصلہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th July 2018, 12:07 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی ،10؍جولائی (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)کرناٹک کے ایک  سیشن کورٹ نے قتل کے معاملے میں صرف 13 دنوں میں فیصلہ سنا دیا۔اس معاملے کی زیادہ چرچا ا سلئے بھی ہے کیونکہ گنہگار کو سزا دلوانے والا کوئی اور نہیں بلکہ اس کے اپنے ہی تین سال کے بیٹے کا اہم کردار رہا ہے۔سیشن کورٹ جج ایس بی وسترمٹ نے اس کیس کی فاسٹ ۔ٹریک سماعت کی۔چتر درگ شہر کے ایس پی شری ناتھ جوشی نے نیوز 18 کو بتایا،" اس کیس میں بچے کےبیان کا خاصہ کردار تھا۔حالانکہ دیگر 36 شاہدین کے بھی بیان لئے گئے تھے"َ۔

ملی جانکاری کے مطابق ، معاملہ 27 جون کو چلاکیرے تالوکا کے بگالرنگاون ہلی گاؤں میں پیش آیا۔ پیشے سے مزدور شری گھر (35) نے اپنی بیوی سکما 31 سالہ کے کردار پر شک کی وجہ سے اس کا قتل کر دیا۔واقعے کے دوران ان کا سال کا بچہ سو رہا تھا اور تین سال کا بیٹا وہیں موجود تھا۔

واقعے کے فور بعد آدھی رات میں ہی وہ بچہ بھاگ کر باہر نکلا اور پڑوس میں رہنے والی خاتون منجولا کو اس کی جانکاری دی۔ جب منجولاکے شوہر بچے کے گھر پہنچے تو انہوں نے خون سے سنی سکما کی لاش کو دیکھا۔ اس کے بعد انہوں نے فورا پولیس کو جانکاری دی۔29 جون کو شری گھر کے خلاف چارج شیٹ فائل کی گئی۔

پیر(2 جولائی) کو سماعت کے دوران کورٹ نےبچے کو بھی بلایا۔ اس دوران والد کو سامنے دیکھتے ہوئے بچہ رونے لگا اور اس نے پوچھا کہ آپ نے ماں کو کیوں  مارا ؟  اہم گواہ کے اس سوال کو کورٹ نے اہم اہم ثبوت مانا اور 13 دن کے اندر فیصلہ سنا دیا۔جج نے قصوروار شری گھر کو صلاح دی کی جیل سے باہر آنے کے بعد وہ بچے کیلئے اچھا رویہ رکھے۔

ایک نظر اس پر بھی

شمالی کینرا پارلیمانی امیدوار آنند اسنوٹیکر کی انتخابی مہم میں وزیراعلیٰ کمارا سوامی اور ضلع انچارج وزیر دیشپانڈے کی شرکت

ضلع شمالی کینرا کی پارلیمانی سیٹ پرمرکزی وزیر اور بی جے پی امیدواراننت کمار ہیگڈے کے خلاف جنتادل ایس اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار آنند اسنوٹیکر کی تشہیری مہم میں اس وقت تیزی آگئی جب ریاستی وزیراعلیٰ کماراسوامی اور ضلع انچارج وزیر آر وی دیشپانڈے نے مختلف مقامات پر انتخابی ...

ملک میں مجبور پی ایم چاہتی ہے کانگریس، کرناٹک میں ریلیوں میں پھرپاکستان کے حوالے سے مودی کاخطاب

معلق لوک سبھاکے تجزیئے کے درمیان اب بی جے پی نے واضح اکثریت مانگنی شروع کردی ہے ۔وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعرات کو دعوی کیا کہ کانگریس ملک میں ایک مجبور وزیر اعظم بنوانا چاہتی ہے۔انہوں نے لوگوں سے مرکز میں قومی سلامتی پر زور دینے والی مضبوط حکومت بنوانے کی اپیل بھی کی۔شمالی ...

لوک سبھا انتخابات کا دوسرا مرحلہ ؛کشمیر سے کنیا کماری تک ہورہی ہے پولنگ؛ شام تک 61 فیصد پولنگ؛ جموں و کشمیر میں سب سے کم ووٹنگ

  لوک سبھا انتخاب کے دوسرے مرحلے کے لیے صبح 7 بجے سے ووٹنگ شروع ہو گئی ہے۔ دوسرے مرحلے میں ملک کی 12 ریاستوں کی 95 لوک سبھا سیٹوں پر ووٹنگ ہو رہی ہے، جس کے لئے 1.78 لاکھ پولنگ بوتھ بنائے گئے ہیں۔ اس میں 1629 امیدوار اپنی قسمت آزمائی کر رہے ہیں۔ دوسرے مرحلے کے دوران اتر پردیش کی 8، مغربی ...

لوک سبھا انتخابات: کیا اُترکنڑا میں انکم ٹیکس کے مزید چھاپے پڑنے والے ہیں؟

پارلیمانی الیکشن کے پس منظر میں محکمہ انکم ٹیکس اور انتخابی نگراں اسکواڈ کی طرف سے مختلف ٹھکانوں پر جو چھاپے مارے جارہے ہیں، اس تعلق سے خبر ملی ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں مزیدکئی سیاسی لیڈروں اورتاجروں کے ٹھکانوں پر چھاپے پڑنے والے ہیں۔

مودی نوجوان نسل کو گمراہ کرنے میں ملوث ہیں : اشوک گہلوت

راجستھان کے وزیراعلیٰ اشوک گہلوت نے جمعرات کو کہا کہ آزادی کے بعد ملک کے عوام اور کانگریسی حکومتوں کی طرف سے کئے گئے کاموں کے باعث بھارت آج سپر پاور بننے کی جانب بڑھا ہے۔ اس کے ساتھ ہی گہلوت نے سابقہ کانگریسی حکومتوں کے کاموں پر سوال اٹھانے کو لے کر وزیر اعظم نریندر مودی پر ...

ضلع شمالی کینرا میں محکمہ انکم ٹیکس کے چھاپے۔ بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے قریبی افراد پر۔87.70لاکھ روپے ہوئے ضبط

ضلع ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمار کی طرف سے جاری کی گئی رپورٹ کے مطابق مصدقہ اطلاعات کی بنیا د پر انتخابی ضابطہ اخلاق لاگو کرنے پر تعینات فلائی اسکواڈ اور محکمہ انکم ٹیکس نے سرسی اور سداپور میں بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے شناسا افراد پر چھاپہ ماری کی اوراس کے نتیجے میں ...

بی جے پی کا حصہ بن چکی ہیں سرکاری ایجنسیاں:کنی موجھی

گزشتہ چند دنوں میں محکمہ انکم ٹیکس نے ملک کے مختلف حصوں میں چھاپہ ماری کی ہے۔حکام نے منگل کو ڈی ایم کے لیڈر کنی موجھی کے گھر پر چھاپہ ماری کی تھی۔رپورٹوں کے مطابق ان کے پاس سے بڑی مقدار میں نقد رقم جمع ہونے کی اطلاع ملی تھی،اسے لے کر کنی موجھی نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر ...