کیرالہ میں آئے سیلاب سے اب تک 29 لوگوں کی موت، 54,000سے زیادہ ہوئے بے گھر

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th August 2018, 11:01 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی ،11اگست (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)کیرالہ میں آئے سیلاب کی وجہ سے اب تک 29 لوگوں کی موت ہو چکی ہے اور بتایا جا رہا ہے کہ تقریباََ 54,000 لوگ بے گھر ہو گئے ہیں۔کیرالہ میں آئے سیلاب کی وجہ سے اب تک 29 لوگوں کی موت ہو چکی ہے اور بتایا جا رہا ہے کہ تقریباََ 54,000 لوگ بے گھر ہو گئے ہیں۔ بتا دیں کہ ریاست میں بھاری بارش کے سبب شمالی حصے میں کئی لینڈ سلائڈ ہوئے ہیں جس میں 29 لوگوں کی موت ہو گئی۔

سی ایم پنرائی وجین نے حالات کو سنگین قرار دیا ہے۔ افسران نے بتایا کہ فوج اور قومی تباہی پر سرگرم رہنے والی فورس کو ای ڈکی ، کوجھی کوڈ ، وائیناڈ اور ملپپورم ضلع کے متاثر علاقوں میں راحت مہم میں انتظامیہ کا ساتھ دینے کے لئے تعینات کیا گیا ہے۔

وزارت کے ذرائع نے بتایا کہ صورت حال کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے راحت اور بچاؤ مہم میں مدد کے لئے بنگلور سے فوج متاثرہ علاقوں میں بھیجی گئی ہے۔ اس کے علاوہ نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ کی چار ٹیموں کو چنئی سے کیرالہ کے لئے روانہ کیا گیا ہے۔ مرکزی حکومت کی ایک ٹیم بھی متاثرہ علاقوں کا دورہ کررہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

جے پی سی سے جانچ کرانے کا راستہ ا بھی کھلا ہے، عام آدمی پارٹی نے کہا،عوام کی عدالت اورپارلیمنٹ میں جواب دیناہوگا،بدعنوانی کے الزام پرقائم

آپ کے راجیہ سبھا رکن سنجے سنگھ نے کہا ہے کہ رافیل معاملے میں جمعہ کو آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود متحدہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی) سے اس معاملے کی جانچ پڑتال کرنے کا اراستہ اب بھی کھلا ہے۔

رافیل پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ، راہل گاندھی معافی مانگیں: بی جے پی

فرانس سے 36 لڑاکا طیارے کی خریداری کے معاملے میں بدعنوانی کے الزامات پر سپریم کورٹ کی کلین چٹ ملنے کے بعد کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے بی جے پی نے جمعہ کو کہا کہ کانگریس پارٹی اور اس کے چیئرمین راہل گاندھی ملک کو گمراہ کرنے کیلئے معافی مانگیں۔

بھٹکل کے مرڈیشور میں دو لوگوں پر حملے کی پولس تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں

تعلقہ کے مرڈیشور میں کل جمعرات کو  دو لوگوں پر حملہ اور پھر جوابی حملہ کے تعلق سے آج مرڈیشور تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں درج کی گئی ہیں اور پولس نے دونوں پارٹیوں کی شکایت درج کرتے ہوئے چھان بین شروع کردی ہے۔