عوام کے درمیان نفرت پھیلانے کی کوشش کوکامیاب نہیں ہونے دیں گے،یکجہتی ،ہم آہنگی اورمحبت کی فضاقائم کرناضروری، بابری مسجد کا سانحہ ناقابل فراموش :ممتا بنرجی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th December 2017, 10:08 PM | ملکی خبریں |

کولکاتہ، 06؍دسمبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) بابری مسجد کی 25ویں یوم شہادت کے موقع پر منعقد ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیرا علیٰ ممتا بنرجی نے ملک کے عوام سے اپیل کی ان طاقتوں کو یکسر مسترد کردیں جو ملک کو مذہب کے نام پر تقسیم کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔اس کے علاوہ ممتا بنرجی نے افواہوں اور غلط خبروں پر توجہ نہ دینے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ اس کے ذریعہ عوام کے درمیان نفرت پھیلانے کی کوشش کی جاتی ہے۔کولکاتہ کے میورڈوپرواقع گاندھی مورتی کے نزدیک منعقد پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی نے بابری مسجد کو جس طریقے سے منہدم کیا گیا اور اس کی وجہ سے ملک کی یکجہتی ، ہم آہنگی اور محبت کی فضا ء کو نقصان پہنچا اس کو کبھی بھی فراموش نہیں کیاجاسکتاہے۔مسلسل عوام کو تقسیم کرنے کی سیاست کی جارہی ہے مگر ملک کے حق میں ضروری ہے کہ اس کی روک تھام کیلئے کوشش کی جائے۔وزیر اعلیٰ نے مرکز کی ہندتو پالیسی کی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ یہ ہندو ازم کی نمائندگی نہیں کرتی ہے۔6دسمبر 1992کے سانحہ کو ممتا بنرجی یاد کرتے ہوئے کہاکہ میں 25سال پیش آئے اس واقعہ کو فراموش نہیں کرسکتی ہوں۔میں اس دن گھر ، محلہ محلہ گھوم گھوم کر اور رات بھر لوگوں کے درمیان جاکر امن و امان کی فضا کو بحال کرانے کی کوشش کی۔ممتا بنرجی نے کہا کہ ہندوستان مختلف مذاہب ، طبقات اور زبان کے بولنے والوں کا ملک ہے اور ہم کئی صدیوں سے مل جل کر رہتے ہوئے ہیں۔ہم ایک دوسرے کا احترام کرتے ہیں مگر مرکزی حکومت ہندتو کے تحت اپنی مرضی ایک دوسرے پر تھوپنے کی کوشش کررہی ہے۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ کسی بھی مذہب کے بھڑکانے کی کوشش کو برداشت نہیں کیا جاسکتا ہے اور یہ سیاست ناقابل قبول ہے۔میں ہندو ہوں اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ میں دیگر مذاہب سے نفرت کروں۔وزیر اعظم مودی کا نام لیے بغیر ممتا بنرجی نے کہا کہ کوئی بھی یہ فیصلہ نہیں کرسکتا ہے کہ ’’کون کیا کھائے گا اور کیا نہیں کھائے گا ‘‘اس ملک کے آئین نے تمام شہریوں اپنی مرضی کا کھانے اور پینے کی اشیاء4 کے انتخاب کی اجازت دی ہے اس لیے کوئی بھی اس پر پابندی عاید نہیں کرسکتا ہے۔مسلمانوں کی منھ بھرائی کا بی جے پی کے اعتراض کا ممتا بنرجی نے سخت جواب دیتے ہوئے کہا کہ بنگال میں 30فیصد مسلمان ہیں ،یہ ہماری ذمہ داری ہے کہ اس 30فیصد آبادی کی ترقی و فلاح بہبود کی اسی قدر کوشش کروں جتنی میں دوسرے مذاہب کے ماننے والوں کی کرتی ہوں۔

ایک نظر اس پر بھی

مندر وہیں بنائیں گے ،پر تاریخ راہل گاندھی بتائیں گے: کیشو پرساد موریہ 

یوپی کے نائب وزیر اعلی کیشو پرساد موریہ نے اتوار کو کہا کہ ’’رام للا ہم آئیں گے، مندر وہیں بنائیں گے، لیکن تاریخ راہل گاندھی ہی بتائیں گے‘‘۔ موریہ اتوار کو چندر شیکھر آزاد زرعی اور ٹیکنالوجی یونیورسٹی کیمپس میں منعقد بی جے پی کانپور آئی ٹی محکمہ کے بندیل کھنڈ شعبہ کے علاقائی ...

چھتیس گڑھ اسمبلی انتخابات 2018 : پہلے مرحلے میں 18 نشستوں کے لیے ووٹنگ ختم، 70فی صدپولنگ ہوئی

چھتیس گڑھ میں سخت سیکورٹی کے درمیان پہلے مرحلے کی ووٹنگ ختم ہو گئی ہے ۔ پہلے مرحلے میں کل 70 فیصد ووٹنگ ہوئی۔ کونڈا گاؤں میں61.47%، کیش کال 63.51%، کانکیر میں62%، بستر میں58%، دنتے واڑہ میں49%، خیرا گڑھ میں70.14%، ڈونگرگڑھ میں 71 فیصد اور کھجی میں72%فیصد لوگوں نے اپنے ووٹ کے حق کا استعمال کیا۔ ...

جسٹس مدن بی لوکر اور جسٹس یویوللت کا بنچ ہی کرے گا سماعت

منی پور فرضی انکاؤنٹر کیس میں سپریم کورٹ نے فوج کے تقریبا 300 جوان ، سابق فوجی اہلکاروں اور مرکز کی درخواست مسترد کر دی ہے۔ جسٹس مدن بی لوکر اور جسٹس یو یو للت کا بنچ ہی اس معاملے کی سماعت کرتا رہے گا ۔ دراصل سپریم کورٹ کو یہ طے کرنا تھا کہ سماعت کر ر ہے بنچ ہی معاملے کی سماعت جاری ...

کْولنگ ٹیکنالوجی میں اہم اختراعات کے تین ملین امریکی ڈالر انعام کا اعلان 

آج نئی دہلی میں دو روزہ گلوبل کْولنگ انوویشن سمٹ کے افتتاحی اجلاس کے دوران معیاری روم ایئر کنڈیشننگ(آر اے سی)کے مقابلے میں پانچ گنا کم ماحولیاتی اثرات کی حامل رہائشی کولنگ ٹیکنالوجی میں اختراع اور ترقی کو ترغیبات فراہم کرنے کے لیے ایک بین الاقوامی مسابقہ گلوبل کولنگ پرائز کا ...

آر ایس ایس پر پابندی لگانے کی بات نہیں کہی:کانگریس 

آر ایس ایس پر پابندی کو لے کر سیاسی گہما گہمی کے درمیان کانگریس نے صفائی دی ہے۔ مدھیہ پردیش کانگریس کے سربراہ کمل ناتھ نے کہا کہ ’’وچن پتر ‘‘ (انتخابی منشور) میں پارٹی نے یا انہوں نے آر ایس ایس پر پابندی لگانے کی بات نہیں کہی۔ کمل ناتھ نے کہا کہ پارٹی کا ایسا کوئی منشا بھی نہیں ...

ایودھیا میں مسجد بن بھی گئی تو نماز پڑھنا ممکن نہیں ہو گا:غیورالحسن رضوی

قومی اقلیتی کمیشن کے سربراہ بھی اب ایودھیا میں متنازع مقام پر رام مندر کی حمایت میں اتر آئے ہیں۔ کمیشن کے سربراہ غیورالحسن رضوی کا کہنا ہے کہ کئی ساری مسلم تنظیم ایودھیا میں رام مندر بنائے جانے کے حق میں ہیں۔ انہوں نے یہ بھی دلیل دی ہے کہ ایودھیا میں رام مندر بن جانے سے امن قائم ...