20فروری سے اسکول میں بچوں کے مفت داخلوں کا آغاز

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th February 2018, 11:39 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،11؍فروری(ایس او نیوز)سرکاری اور خانگی اسکولوں دونوں طرح کی اسکولوں میں 25 فیصدی آن لائن داخلوں کی کارروائی کا آغاز اب20 فروری سے کرنے کے لئے محکمہ تعلیم نے تیاریاں شروع کردی ہیں۔اس سے قبل15فروری کی تاریخ ہی سے داخلوں کی شروعات کا اعلان کیا گیا تھا لیکنکچھ تکنیکی ضروریات کے تحت 19 تاریخ کو پانچ دنوں کے لئے آگے بڑھا دیا گیا ہے، واضح رہے کہ پچھلے سال سے ہی آدھار کارڈ کو داخلوں کے لئے لازمی قرار دیا جا چکا ہے اور اس میں درج پن کوڈ نمبر کی بنیاد پر ہی وارڈوں کی تقسیم اور داخلہ کے لئے اسکولوں کی فہرست کی تیاری ہوئی ہے۔اب والدین یا سرپرستان کو آن لائن درخواست جمع کرنے میں کوئی پریشانی نہیں ہوگی، درخواست جمع کرنے کے وقت ہی ان کی وارڈ حدود میں کون کون سی اسکولس موجود ہیں اور کن اسکولوں میں داخلہ حاصل کیا جا سکتا ہے اس کی تفصیلات مل جائیں گی اور مزید برآں ضروری دستاویزات کی جانچ بھی آن لائن ہی ہو جائے گی۔ پچھلے سال وارڈ سے باہر رہنے والے کئی افراد نے غلط دستاویزات بنا کر اپنی پسند کی اسکولوں میں داخلہ لے لیا تھا لیکن اس مرتبہ یہ ممکن نہیں ہوگا اس لئے کہ آن لائن رجسٹریشن کے موقع پر ایسی دستاویزات خود بخود مسترد کر دی جائیں گی۔محکمہ تعلیم کے ڈائرکٹر کے آنند نے بتایا کہ ،آن لائن میں آر ٹی ای کے تحت بچوں کے داخلہ کے سلسلہ میں محکمہ کی طرف سے کیا گیا تجربہ تقریباً کامیاب رہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک کی کانگریس حکومت پر نشانہ لگانے پر سدرامیا نے کیا پلٹ وار؛ کہا مودی میں وزیراعظم بننے کی صلاحیت ہی نہیں

کرناٹک کی کانگریس حکومت پر نشانہ سادھنے پر پلٹ وار کرتے ہوئے ریاست کے وزیر اعلیٰ سدرامیا نے وزیراعظم نریندر مودی کو جھوٹ کا پلندہ   قرار دیتے ہوئے    کہا  کہ نریندر مودی   میں وزیراعظم بننے کی صلاحیت ہی نہیں ہے

کانگریس لیڈر کی بی بی ایم پی دفتر کو آگ لگادینے کی دھمکی؛سی سی ٹی وی میں قیدہوا پورا منظر؛ سدارامیا نے دکھایا پارٹی سے باہر کا راستہ

کانگریس لیڈر نارائن سوامی کے  بی بی ایم پی دفتر میں گھس کر پٹرول چھڑکنے اوردفتر کو آگ لگادینے کی دھمکی کی وڈیو نیوز چینلوں میں نشر ہونے کے بعد فوری حرکت کرتے ہوئے سدرامیا نے نارائن سوامی کو   کانگریس پارٹی سے باہر کا راستہ دکھادیا ہے۔

این اے حارث نے فرزند کی حرکت پر اسمبلی میں کی معذرت خواہی

رکن اسمبلی این اے حارث کے فرزند نلپاڈ محمد کی طرف سے کل پیر کو ایک طالب العلم کو زودوکوب کرنے کا معاملہ سامنے آنے کے بعد آج این اے حارث نے ریاستی اسمبلی میں معذرت طلب کی اور کہا کہ ان کے بیٹے کی حرکت کی وجہ سے  اُنہیں جس طرح ندامت اُٹھانی پڑی، وہ وقت کسی باپ پر نہ آئے۔

بی جے پی صدر امت شاہ کا کرناٹک دورہ؛ کرناٹک سے کانگریس کو اُکھاڑ پھینکنے کا کیا دعویٰ

کرناٹک کے دورہ پر آئے  بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ نے کانگریس پر حملہ بولتے ہوئے کہا کہ کرناٹک حکومت لوگوں کی اُمیدوں پر پورا اُترنے میں بری طرح ناکام ہوگئی ہے۔جس کی بنا پر  آئندہ انتخابات میں یہاں بی جے پی کو شاندار جیت حاصل ہوگی۔ وہ یہاں مینگلور کے قریب سولیا میں منگل ...