کیرالہ میں زوردار بارش؛ چٹان کھسکنے کی وارداتیں؛ 22 ہلاک؛ مرکز سے مانگی گئی مدد

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 9th August 2018, 5:49 PM | ساحلی خبریں | ملکی خبریں |

تھیرووننتاپورم 9/اگست (ایس او نیوز) ریاست کیرالہ کے مختلف حصوں میں جمعرات کی صبح سے جاری زبردست بارش  کے نتیجے میں اب تک ملی اطلاع کے مطابق  22  لوگوں کی موت ہو گئی ہےاور حالات کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے ریاستی حکومت نے مرکزی حکومت سے آرمی ، نیوی اور ائرفورس کی مدد طلب کی ہے،تاکہ اِیڈوکّی  ڈیم سے پانی کا اخراج کیا جاسکے۔ بتایا جارہا ہے کہ ایشیاء کے اس سب سے بڑے ڈیم سے 26 سال بعد زائد پانی کا  اخراج کیا جارہا ہے۔یہ ڈیم 45 سال پرانا ہے۔

کوچین ائرپورٹ میں طیاروں کی   لینڈنگ پر روک
ادھر کوچین بین الاقوامی ہوائی اڈہ لمیٹڈ نے پیریار ندی میں بڑھ رہے آبی سطح کو دیکھتے ہوئے یہاں طیاروں کی لینڈنگ پر روک لگا دی تھی مگر دو گھنٹوں بعد  اسے کھول دیا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ  یہ ائرپورٹ ندی  کے قریب واقع اور آبی سطح کو بڑھتے دیکھ کر ائرپورٹ میں پانی جمع ہونے کے خدشہ کے پیش نظر احتیاطی طور پر لینڈنگ روکی گئی تھی۔ ائرپورٹ کے ایک ترجمان نے بتایا کہ احتیاطی  قدم اٹھاتے ہوئے ہم نے دوپہر ایک بج کر 10 منٹ کے بعد طیاروں کی لینڈنگ روک رکھی تھی۔ مگر دو گھنٹوں بعد ائرپورٹ کو دوبارہ کھولے جانے کی خبر ملی ہے۔

کیرالہ کے وزیراعلیٰ پینارائی وجئین نے اخبارنویسوں کو بتایا کہ زبردست بارش کے بعد  ریاست کی صورتحال کافی سنگین ہے، زبردست بارش کو دیکھتے ہوئے ہمیں ریاست کے 22 ڈیموں سے زائد پانی کو چھوڑنا پڑ رہا ہے، اس طرح کی صورتحال اس سے پہلے کبھی پیش نہیں آئی۔مزید بتایا کہ صورتحال کو دیکھتے ہوئے ہم نے ایمرجنسی میٹنگ کے بعد  آرمی، نیوی اور ائرفورس کی مدد طلب کی ہے۔ وزیراعلیٰ نے بتایا کہ چھ سب سے زیادہ  متاثرہ اضلاع میں ہم نے عوام کے لئے کنٹرول روم بھی قائم کئے ہیں۔

ریلوے ٹریک کو بھی پہنچا   نقصان
بھاری بارش کےچلتے  بدھ کو کالیکٹ  اور والائیر کے بیچ  ریلوے ٹریک کو بھی نقصان پہنچا ہے. اس روٹ پر ریل کی خدمات بند کردی گئی ہیں. ڈویژنل ریلوے مینیجر (ڈی آر ایم) اور دیگر حکام نے یہاں کا دورہ کیا ہے اور  اس روٹ  پر ٹریک کی مرمت کرنے کا کام جاری ہے۔

وائناڈ میں زبردست بارش کے نتیجے میں زمین کھسکنے کی واردات پیش آئی ہے، جس کے بعد اس پہاڑی ضلع سے روڈ کا رابطہ ٹوٹ گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ آرمی کی مدد سے سڑک کی مرمت کی جارہی ہے۔

میڈیا رپورٹوں کے مطابق پچھلے چوبیس گھنٹوں میں  22 لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے، دس لوگ لاپتہ ہیں۔ ایڈوکّی ضلع میں گیارہ لوگوں کی موت واقع ہوئی ہے، ملپّورم میں پانچ، وائیناڈ میں تین، کننّور میں دو اور کالیکٹ میں ایک شخص کی موت واقع ہوئی ہے۔

بارش  متاثرہ علاقوں سے لوگوں کو راحت دلانے کے لئے وائناڈ میں آرمی کی ایک یونٹ لگائی گئی ہے اور یہاں سے تین ہزار لوگوں کو محفوظ مقامات کی طرف منتقل کیا گیا ہے۔

رپورٹوں کے مطابق ریاست میں ایک ہزار سے زائد مکانات بارش  کی نذر ہوگئے ہیں۔

بارش کی وجہ سے چھ اضلاع میں تعلیمی اداروں کو چھٹی دے دی گئی ہے اورلوگوں کو ہدایت جاری کی گئی ہے کہ وہ  ریاست کے پہاڑی علاقوں کی طرف نہ جائیں۔ وزیراعلیٰ کی طرف سے عوام الناس سے بھی اپیل کی گئی ہے کہ وہ ڈیم والی جگہوں کا رُخ نہ کریں اور بالخصوص  سیلفی فوٹوز لینے سے احتراز کریں۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میونسپل پارک کی تجدیدکاری میں بدعنوانی کا الزام۔ ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم

بھٹکل بلدیہ کے حدود میں بندر روڈ پر واقع سردار ولبھ بھائی پٹیل پارک کی تجدید کاری میں بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے  آسارکیری کے عوام  نے بلدیہ انجینئر کو پارک میں طلب کرکے ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم دیا جس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ یہاں ہورہی بدعنوانی کی تحقیقات کروائی جائے۔

کاروار کے ہوم گارڈس دفتر اورکیگا شہری تحفظ مرکز میں یوم ِآزادی کی خصوصی تقریب

شہر میں ہوم گارڈس دفتر میں 72واں یوم ِ آزادی کا جشن پرچم کشائی کے ساتھ منایاگیا ۔ ضلعی آفیسر دیپک گوکرن  نے جھنڈا لہرانے کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ہمیں یہ آزادی کئی ایک مہان ہستیوں کی قربانی کے بعد ملی ہے۔ یہ ملک تکثریت میں وحدت پیش کرنے والا ایک انوکھا ملک ہے۔انہوں نے کہاکہ ...

کاروار : ضلع پنچایت اورمیڈیکل کالج میں یوم ِ آزادی کا جشن :ایمانداری سے اپنے فرائض کو انجام دینا  سچی دیش بھگتی  

اترکنڑا ضلع کے مرکزی مقام کاروار میں اترکنڑا ضلع پنچایت اور میڈیکل سائنس سنٹر میں  جوش و خروش کے ساتھ یوم آزادی کا جشن منایا ۔ جس کی مختصر تفصیل ذیل میں دی جارہی ہے۔ ...

بھٹکل میں یوم آزادی کا جشن پورے جوش وخروش کے ساتھ منایا گیا؛ تعلقہ انتظامیہ کی جانب سے اسسٹنٹ کمشنر نے لہرایا جھنڈا

ہر سال کی طرح امسال بھی بھٹکل میں پورے جوش و خروش کے ساتھ  یوم آزادی کی تقریب منائی گئی اور تعلقہ انتظامیہ سمیت مختلف سرکاری اور غیر سرکاری اداروں سمیت تعلیمی اداروں میں بھی  ترنگا جھنڈا لہرایا گیا۔

بی جے پی آفس کے پاس پھر سوامی اگنی ویش کی پٹائی

بی جے پی آفس کے پاس جمعہ کو سوامی اگنی ویش کی پھر سے پٹائی ہوئی ۔ ایک خاتون نے ان کے اوپر چپل پھینک کر مارا جبکہ کئی لوگ انہیں مارنے کی کوشش کر رہی رہے تھے کہ پولس نے بچاو کرتے ہوئے انہیں اپنی گاڑی میں بیٹھا کرلے کر چلی گئی۔

کووند ،مودی ،پرنب ،منموہن ،سونیا نے واجپئی کو خراج عقیدت پیش کیا

صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند،وزیراعظم نریندرمودی ،سابق صدرجمہوریہ پرنب مکھرجی ،سابق وزیراعظم منموہن سنگھ ،سابق نائب وزیراعظم لال کرشن اڈوانی ،ترقی پسند اتحاد کی چیئرپرسن سونیاگاندھی ،مرکزی وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ ،وزیرخارجہ سشما سوراج ،کئی وزرائے اعلی ،رہنماؤں اور سرکردہ ...

بتیامیں شرپسندوں کے ذریعہ مسجدومدرسہ پر حملہ قابل مذمت:مولانااسرارالحق قاسمی

ممبرپارلیمنٹ مولانا اسرارالحق قاسمی نے یوم آزادی کے موقع پر چمپار ن کے بتیاکی ہاتھی خانہ مسجد ومدرسہ پرشرپسندوں کے ذریعہ کئے گئے حملے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کامطالبہ کیاہے۔انہوں نے کہاکہ آج کے دن جبکہ پورا ملک آزادی کا جشن منارہاہے اور ہر ...

وینکیانائیڈونے واجپئی کوآزادہندوستان کاسب سے بڑالیڈربتاکرخراج عقیدت پیش کیا

نائب صدر ایم وینکیا نائیڈونے سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کے انتقال پر گہرے غم کا اظہار کرتے ہوئے ان کے انتقال کوملک کے لیے ناقابل تلافی نقصان بتایا ہے۔نائیڈو نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہاکہ یہ خبرانتہائی افسوسناک ہے کہ اٹل جی نہیں رہے۔میں آج صبح ہی ان کی صحت کی معلومات لینے ...

ڈاکٹر ستیہ پال سنگھ نے شکرتال گھاٹ پر بہاؤ میں تیزی لانے پر تبادلہ خیال کی خاطر میٹنگ کی 

آبی وسائل، دریا کی ترقی اور گنگا کے احیاء کے وزیر مملکت ڈاکٹر ستیہ پال سنگھ نے آج شکرتال گھاٹ پر پانی کے بہاؤ میں تیزی لانے کے معاملے پر ایک میٹنگ کی صدارت کرتیہوئے اترپردیش اور اتراکھنڈ کے آبپاشی کے محکموں کے عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ دریائے گنگا کی معاون ندی سلونی میں ...