14؍سالہ لڑکی کے ساتھ جنسی ہراسانی کا معاملہ مجرموں کو 10سال جیل کی سزا، 25ہزار جرمانہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th February 2018, 12:38 PM | ریاستی خبریں |

ٹمکور:9؍فروری (ایس او نیوز) 14؍ سالہ لڑکی کی عصمت دری کے معاملے میں ملوث 2افراد کو یہاں کی تیسری ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنس عدالت نے سخت سزا اور جرمانہ عائد کرتے ہوے سزاء سنائی ہے۔ ضلع کے پاؤگڈھ تعلقہ کے ایک دیہات میں 2015میں تپے سوامی (60) اور ملپا (35) نامی دو افراد نے لڑکی کے ساتھ منہ کالا کیا تھا۔ اس خصوص میں پاؤگڈھ پولیس تھانے میں معاملہ درج ہوا تھا۔تحقیقاتی آفیسر گروسوامی نے عدالت میں چارج شیٹ داخل کی تھی، ٹمکور کی عدالت میں اس معاملے کی سماعت ہوئی۔ بچوں پر جنسی مظالم کنٹرول ایکٹ کے کالم 6 کے تحت 10سال جیل کی سزا اور 25ہزار روپئے جرمانہ عائد کرتے ہوئے سزا سنائی ہے۔ اس کے علاوہ درج فہرست ذات اور درج فہرست قبائلوں کے مظالم کنٹرول ایکٹ کے تحت عمر قید کی سزا اور 25ہزار روپئے جرمانہ عائد کیا ہے۔مجرم کی طرف سے جرمانہ کی رقم ادا نہ کئے جانے کی صورت میں مزید 2سال کی سزا کاٹنی ہوگی۔اس معاملے کے ایک ملزم کی تحقیقات کے دوران ہی موت ہوجانے کے سبب ملپا نامی مجرم پر یہ سزاء اور جرمانہ عائد ہوگا۔ اس معاملے کی حکومت کی جانب سے پوسکو عدالت کی خصوصی نمائندہ گائتری راجو نے وکالت کی۔

ایک نظر اس پر بھی

مڈکیری میں سیلاب سے متاثرہ علاقہ کے دورہ کے وقت ہی زمین کھسک گئی؛ ایم پی اور ایس پی بال بال بچ گئے

ضلع کورگ کے مڈکیری عرف مرکیرہ کے رکن اسمبلی اپاجو رنجن کے  بارش سے متاثرہ علاقوں کا  دورہ کرنے کے موقع پر اچانک زمین کھسکنے کی واردات پیش آئی ہے، بتایا گیاہے کہ ان کے ہمراہ ضلع کورگ کی ایس پی ڈاکٹڑ سومنا پنّیکر بھی موجود تھی۔

ریاست کرناٹک میں جاری موسلادھار بارش کی وجہ سے کئی اضلاع متاثر؛ مڈکیری میں قیامت صغریٰ کا منظر

بادل کے پھٹ پڑنے اور جگہ جگہ پہاڑاور زمینات کے کھسکنے سے کورگ ضلع کی حالت بہت ہی سنگین ہوگئی ہے۔ندیوں میں طغیانی ، تیز رفتار سے بہتا پانی ، کھسکتے پہاڑ و زمین کی وجہ سے کورگ ضلع  میں قیامت صغریٰ کا منظر ہے۔ جان ومال کے بھاری نقصان کو دیکھتے ہوئے راحت کاری کے لئے آرمی اور نیوی کے ...

بارش کے متاثرین کی بھرپور مدد کرنے شیوکمار کا مطالبہ

ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ومیڈیکل ایجوکیشن ڈی کے شیوکمار نے کہا ہے کہ ریاست کے کورگ ، ملناڈ اور پڑوسی ریاست کیرلا میں مسلسل بارش کے سبب سیلاب کی جو صورتحال پیدا ہوئی ہے اس سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کے لئے ریاستی عوام کو فراخدلی سے قدم بڑھانا چاہئے۔